ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

شمالی کشمیر کے پٹن میں پہلی بار باڈی بلڈنگ مقابلوں کاانعقاد، نوجوانوں نے جسمانی قوت کا مظاہرہ کیا

گلمرگباڈی بلڈنگ جیسے مقابلے وادی کشمیرمیں دیکھنے نہ ہی سننےکو ملتے تھے، اس بار پہلی مرتبہ مقامی نوجوانوں کے درمیان باڈی بلڈنگ کے مقابلوں کا انعقاد کیا گیا۔ یہ انعقاد شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے پٹن میں فوج کی 29 آرآر کے زنگم کیمپ کی جانب سےکیا گیا۔

  • Share this:
شمالی کشمیر کے پٹن میں پہلی بار باڈی بلڈنگ مقابلوں کاانعقاد، نوجوانوں نے جسمانی قوت کا مظاہرہ کیا
شمالی کشمیر کے پٹن میں پہلی بار باڈی بلڈنگ مقابلوں کاانعقاد، نوجوانوں نے جسمانی قوت کا مظاہرہ کیا

گلمرگ: باڈی بلڈنگ جیسے مقابلے وادی کشمیرمیں دیکھنے نہ ہی سننےکو ملتے تھے، اس بار پہلی مرتبہ مقامی نوجوانوں کے درمیان باڈی بلڈنگ کے مقابلوں کا انعقاد کیا گیا۔ یہ انعقاد شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے پٹن میں فوج کی 29 آرآر کے زنگم کیمپ کی جانب سےکیا گیا۔ اس مقابلے میں کافی تعداد میں نوجوانوں نے حصہ لیا۔ نوجوانوں نے اس مقابلے میں اپنی جسمانی قوت کامظاہرہ کیا۔ فوج کے افسران نے نیوز18اردو سے بات کرتے ہوئے کہا کہ نوجوانوں کومنشیات کی لت سے دور رکھنے کی غرض سے اس طرح کے مقابلے منعقد کئے گئے۔ اس کا ایک فائدہ یہ بھی ہے وادی کے نوجوانوں کوکھیل کودجن میں باڈی بلڈنگ کی جانب توجہ ہوجائے کئی کھلاڑیوں نے نیوز 18 اردو کو بتایا کہ وہ فوج کی جانب سے شروع کردہ باڈی بلڈنگ کے مقابلوں کے سلسلے میں کافی خوش ہیں۔انہوں نے مزید بتایاکہ یہاں پہلی بار اس طرح کے مقابلے منعقد ہوئے ان مقابلوں میں وہ اپنی جسمانی قوت کامظاہرہ کرسکتے ہیں۔


انہوں نے مزید کہا کہ آج تک وہ دوسری کھیل مقابلوں میں حصہ لے رہے تھے، لیکن باڈی بلڈنگ جیسے کھیل کی جانب اتنارجحان نہیں ہوا کرتا تھا اب جبکہ کھیل کے نئے نئے مقابلے ہوتے ہیں، جنہیں زیادہ سے زیادہ فروغ دینے کی ضرورت ہے۔ تقریب میں فوج کے کئی افسران بھی موجود تھے۔ نوجوانوں کی باڈی بلڈنگ مقابلےکودیکھنے کے لیے کافی تعداد میں شائقین آئے ہوئے تھے۔ مقابلے میں پوزیشن حاصل کرنے والوں کوانعامات سے نوازا گیا۔ نوجوانوں نے پہلی بار باڈی بلڈنگ کے مقابلے کے انعقاد پرانتیس آر آرکا شکریہ ادا کیا اور اپنی جسمانی قوت دکھانے پرخوشی کابھی اظہارکیا۔ انہوں نے اس طرح کے مزید مقابلے منعقد کرنے کی اپیل کی۔ ان نوجوانوں نے دیگر نوجوانوں کو اس طرح کے مقابلوں میں حصہ لینے کے لیے کہا۔


29 آر آر کے ایک آفیسر نے نیوز 18 اردو کو بتایاکہ دیگر کھیلوں سے زیادہ نوجوان اس کھیل کوپسند کرتے ہیں۔ اس سے کئی فائدے ہیں ایک توجسمانی طورانسان باصلاحیت ہوتے ہیں۔ مختلف بیماریوں سے بھی چھٹکارا پاسکتے ہیں۔ کشمیرمیں یہ ضرور دیکھا گیا کہ جسمانی طور انسان کومضبوط رہنے کے لیے کھٹن مراحل سے گزرنا پڑتا ہے۔ دیگر کھیلوں میں یہاں کے لڑکوں نے قومی اور بین الاقوامی سطح پراپنالوہامنوایا۔ باڈی بلڈنگ میں نوجوان اپنی صلاحیتوں کوبروئے کار لاسکتے ہیں۔ یہاں کا نوجوان اپنی ہرصلاحیت کودنیا کے سامنےلاناچاہتے ہیں۔ ضرورت ہےکہ اس طرح کے مقابلوں کا جگہ جگہ انعقاد کیاجائے۔۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Nov 21, 2020 12:00 AM IST