உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر: بھائی نے اپنے ہی بھائی کا کیا قتل، وجہ جان کر انسانیت بھی ہوئی شرمسار، 26 فروری کو آئے گا عدالت کا فیصلہ

    جموں وکشمیر: بھائی نے اپنے ہی بھائی کا کیا قتل

    جموں وکشمیر: بھائی نے اپنے ہی بھائی کا کیا قتل

    پرنسپل ڈسٹرکٹ سیشن جج اننت ناگ کی عدالت نے جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع کے مل اکڈ عیش مقام علاقہ کے غلام نبی بٹ کو اپنے ہی بھائی محمد شفیع بٹ کے قتل کا اصل مجرم قرار دیا۔ اننت ناگ کے پرنسپل ڈسٹرکٹ سیشن جج، نصیر احمد ڈار نے ثبوتوں اور شواہد کی بنیاد پر غلام نبی کو اپنے بھائی کا قاتل قرار دے کر مجرم کی سزا کا فیصلہ سنیچر یعنی 26 فروری کے لئے محفوظ رکھا ہے۔

    • Share this:
    اننت ناگ: پرنسپل ڈسٹرکٹ سیشن جج اننت ناگ کی عدالت نے جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع کے مل اکڈ عیش مقام علاقہ کے غلام نبی بٹ کو اپنے ہی بھائی محمد شفیع بٹ کے قتل کا اصل مجرم قرار دیا۔ اننت ناگ کے پرنسپل ڈسٹرکٹ سیشن جج، نصیر احمد ڈار نے ثبوتوں اور شواہد کی بنیاد پر غلام نبی کو اپنے بھائی کا قاتل قرار دے کر مجرم کی سزا کا فیصلہ ہفتہ کے روز یعنی 26 فروری کے لئے محفوظ رکھا ہے۔ عدالت کے جج نصیر احمد ڈار نے ورچوئل موڈ کے ذریعہ مجرم و دیگر متعلقین کی موجودگی میں اپنا فیصلہ سنایا اور غلام نبی بٹ کو اپنے ہی بھائی کے قتل میں ملوث مجرم قرار دیا۔

    تفصیلات کے مطابق سال 2013 میں پولیس اسٹیشن مٹن کو اطلاع ملی کہ محمد شفیع بٹ کی لاش اس کے ہی گاؤ خانے میں خون میں لت پت پڑی ہوئی ہے۔ اطلاع کا فوری نوٹس لیتے ہوئے ایس ایچ او مٹن کی قیادت میں پولیس ٹیم نے لاش کو بر آمد کرکے اپنی تحویل میں لے لیا اور پوسٹ مارٹم کی بنا پر پولیس نے معاملے کو ایک سمت دے کر مہلوک محمد شفیع کے سگھے بھائی غلام نبی بٹ کو شک کی بنا پرگرفتارکرلیا اور مزید تحقیقات کے دوران ملزم نے اپنے ہی بھائی کے قتل کا انکشاف کیا۔ کورٹ میں ملزم کو پیش کرنے کے بعد تاحال اسے عدالتی احکامات کی بنا پر ڈسٹرکٹ جیل اننت ناگ میں مقید رکھا گیا۔

    چیف پراسیکیٹنگ افسر ایڈوکیٹ پیر آفاق کے مطابق مجرم نے اپنے بھائی کے ساتھ جائیداد کے معاملے کو لے کر تنازعہ کھڑا کیا تھا اور یہ تنازعہ اتنا گہرا ہوگیا کہ مجرم نے ایک دن موقع پا کرکلہاڑی سے اپنے بھائی پر حملہ کر دیا، جس کی وجہ سے وہ خون میں لت پت ہوکر اپنی جان سے ہاتھ دھو بیٹھا۔

    ایڈوکیٹ پیر آفاق نے مزید کہا کہ معاملے کی سنگینی کو دیکھ کر تمام گواہوں اور ثبوتوں کو مدنظر رکھ کر اور مہلوک کی اپنی بیٹی کی گواہی پر عدالت نے تعزیرات ہند دفعہ 302 کے تحت غلام نبی بٹ کو اپنے بھائی محمد شفیع بٹ کے قتل کا اصل مجرم قرار دیا۔ جبکہ مجرم کی سزا کا فیصلہ پرنسپل ڈسٹرکٹ سیشن جج اننت ناگ کی عدالت میں 26 فروری کو سنایا جائے گا۔ دوسری جانب، مہلوک کے افراد خانہ نے عدالت کے فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہوئے مجرم کو سخت سے سخت سزا دینے کی امید ظاہر کی ہے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: