உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: فدائین دہشت گرد کا اعتراف، پاکستانی فوج کے کرنل نے ہندوستانی فوج پر حملہ کیلئے دئے 30 ہزار روپے

    J&K News: فدائین دہشت گرد کا اعتراف، پاکستانی فوج کے کرنل نے ہندوستانی فوج پر حملہ کیلئے دئے 30 ہزار روپے ۔ تصویر : News18

    J&K News: فدائین دہشت گرد کا اعتراف، پاکستانی فوج کے کرنل نے ہندوستانی فوج پر حملہ کیلئے دئے 30 ہزار روپے ۔ تصویر : News18

    Jammu and Kashmir : جموں و کشمیر کے راجوری میں ایل او سی کے پاس سے پکڑے گئے فدائین دہشت گرد تبارک حسین نے پوچھ گچھ میں بتایا ہے کہ اس کو پاکستانی فوج کے ایک کرنل نے ہندوستانی فوج پر حملہ کرنے کیلئے 30 ہزار روپے دئے تھے ۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir | Jammu | Srinagar | Delhi
    • Share this:
      جموں و کشمیر کے راجوری میں ایل او سی کے پاس سے پکڑے گئے فدائین دہشت گرد تبارک حسین نے پوچھ گچھ میں بتایا ہے کہ اس کو پاکستانی فوج کے ایک کرنل نے ہندوستانی فوج پر حملہ کرنے کیلئے 30 ہزار روپے دئے تھے ۔ اس نے بتایا کہ اس کے ساتھ چھ دہشت گرد اور تھے اور وہ سبھی بڑے حملے کی سازش کررہے تھے ۔ لشکر سے وابستہ اس دہشت گرد نے کہا کہ اس نے فوج کی ایک پوسٹ پر حملہ کی پوری تیاری کرلی تھی، لیکن اس کے ساتھیوں نے ہی اس کو دھوکہ دیدیا اور وہ پکڑا گیا ۔

       

      یہ بھی پڑھئے:  ایل او سی پر مشتبہ سرگرمی، ناکام دراندازی کے بعد سرحد پر دھماکہ، دیکھئے ویڈیو


      ہندوستانی فوج کے مطابق بتارک حسین 21 اگست کو نوشیرہ سیکٹر میں دراندازی کے دوران پکڑا گیا تھا ۔ دراصل سیکورٹی فورسیز سے ہوئی جھڑپ میں وہ زخمی ہوگیا تھا اور راجوری میں فوج کے اسپتال میں اس کا علاج چل رہا ہے ۔ یہاں اس نے کئی باتوں کا انشاف کیا ہے ۔

       

      یہ بھی پڑھئے: انسانیت شرمسار، جموں و کشمیر کے کٹھوعہ میں پولیس اہلکار نے کیا حاملہ بیوی کا قتل


      دہشت گرد نے بتایا کہ اس کو آئی ایس آئی کے کرنل چودھری یونس نے ایل او سی پر ریکی کا کام دیا تھا اور اس کے بعد ہندوستانی فوج کی چوکی پر حملہ کرنا تھا ۔ اس کام کیلئے تیس ہزار روپے کی رقم بھی دی تھی ، لیکن وہ دراندازی کرتے وقت ہی پکڑا گیا ۔

      تبارک حسین نے بتایا کہ ایل او سی کے پاس جیسے ہی ہندوستانی فوج دکھائی دی، سبھی دہشت گرد بھاگ نکلے ۔ تبارک نے اپنے ساتھیوں کو رکنے کیلئے کہا اور مدد کیلئے پکارا، لیکن کوئی نہیں آیا ۔ تبارک نے بتایا کہ سبھی دہشت گردوں کو ہتھیار دئے گئے تھے اور ہندوستانی فوج پر حملہ کرنے کا حکم دیا گیا تھا۔
      Published by:Imtiyaz Saqibe
      First published: