ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

کورونا کیسوں میں اضافہ ہونے کے ساتھ ہی پلوامہ میں لاک ڈاون دوبارہ نافذ

ضلع پلوامہ میں کورونا کیسوں کی تعداد میں اضافہ ہونے کے ساتھ ہی ضلع میں ریڈ زون علاقوں کی تعداد بھی بڑھ رہی ہے ۔ ضلع پلوامہ میں اس وقت 49 دیہات کو ریڈ زون قرار دیا گیا ہے جبکہ 17 گاؤں کو بفر زون میں رکھا گیا ہے ۔

  • Share this:
کورونا کیسوں میں اضافہ ہونے کے ساتھ ہی پلوامہ میں لاک ڈاون دوبارہ نافذ
کورونا کیسوں میں اضافہ ہونے کے ساتھ ہی پلوامہ میں لاک ڈاون دوبارہ نافذ

پلوامہ میں کورونا کے کیسوں میں اضافہ ہونے سے لاک ڈاون ایک بار پھر قیام عمل میں لایا گیا ہے ۔ ضلع پلوامہ میں اگرچہ پہلے ایام میں کورونا کے کیس دیگر اضلاع کے مقابلہ میں بُہت کم تھے ، لیکن لاک ڈاون کے کھلنے کے ساتھ ہی ضلع سے کورونا کے کیسوں میں اضافہ ہوگیا ہے ۔ کورونا کیسوں میں اضافہ دیکھتے ہوئے ضلع انتظامیہ نے پلوامہ میں لاک ڈاون دوبارہ نافذ کردیا ہے ۔ پہلے ایسے پانچ دن تک کیا گیا تھا ۔ تاہم اب لاک ڈاون کو 31 جولائی تک بڑھایا گیا ہے ۔


ضلع پلوامہ میں اب تک 774 کیسز سامنے آچکے ہیں ، جن میں چار سو کے قریب ابھی بھی کورنا متاثر ہیں ۔ جبکہ آٹھ افراد کی کورونا متاثر افراد کی موت بھی واقع ہوچکی ہے ۔  حال ہی میں ضلع پلوامہ کے نکلورہ گاؤں کے ایک فوت ہوئے شخض کا ایک ہفتہ کے بعد اسکمز سے کورونا ٹسٹ مثبت آیا ، جس کے بعد نکلورہ گاؤں کی بیشتر آبادی کو کوارنٹائن کردیا گیا اور عام لوگوں کے علاوہ انتظامیہ نے اس کو اسکمز کی لاپروائی سے تعبیر کیا ہے ۔


ضلع پلوامہ میں کورونا کیسوں کی تعداد میں اضافہ ہونے کے ساتھ ہی ضلع میں ریڈ زون علاقوں کی تعداد بھی بڑھ رہی ہے ۔ ضلع پلوامہ میں اس وقت 49 دیہات کو ریڈ زون قرار دیا گیا ہے جبکہ 17 گاؤں کو بفر زون میں رکھا گیا ہے ۔ ضلع میں کورونا کے مثبت معاملے سامنے کے آنے کے ساتھ ہی پورے ضلع میں دفعہ 144 نافذ کردی گئی ہے اور ماسک نہ پہنے والوں کے خلاف جُرمانہ بھی عاید کیا جارہاہے ۔


پلوامہ میں دیگر اضلاع کے مقابلہ میں کوارنٹائن سنٹروں کی تعداد بھی بہت زیادہ ہے  ۔ لیکن وادی کشمیر کے دیگر اضلاع کے مقابلہ میں پلوامہ سے کورونا متاثر افراد کے صحت یاب ہونے کی شرح بُہت کم ہے ، جو محکمہ صحت کی کارکردگی پر سوالیہ نشان ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jul 18, 2020 05:31 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading