ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں وکشمیر: سری نگر میں حراست میں لی گئیں محبوبہ مفتی کی بیٹی التجا مفتی

بتا دیں کہ جموں وکشمیر کا خصوصی ریاست کا درجہ ختم کئے جانے اور وہاں سے آرٹیکل 370 ہٹائے جانے کے مرکزی حکومت کے فیصلے کے ایک دن پہلے سے ہی ریاست کے کئی سارے لیڈروں کو نظربند کیا گیا ہے۔

  • Share this:
جموں وکشمیر: سری نگر میں حراست میں لی گئیں محبوبہ مفتی کی بیٹی التجا مفتی
محبوبہ مفتی کی بیٹی التجا مفتی: فائل فوٹو

 سری نگر۔ جموں وکشمیر کی سابق وزیر اعلیٰ اور پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی کی بیٹی التجا مفتی کو حراست میں لیا گیا ہے۔ انہیں ان کے گھر پر ہی نظربند رکھا گیا ہے۔ پی ٹی آئی کے مطابق، التجا جنوبی کشمیر میں اپنے نانا اور جموں وکشمیر کے سابق وزیر اعلیٰ مفتی محمد سعید کی قبر پر جا رہی تھیں لیکن انہیں ان کے گھر پر ہی حراست میں لے لیا گیا۔ حالانکہ پولیس نے اس طرح کے کسی بھی دعوے سے انکار کیا ہے۔




بتا دیں کہ جموں وکشمیر کا خصوصی ریاست کا درجہ ختم کئے جانے اور وہاں سے آرٹیکل 370 ہٹائے جانے کے مرکزی حکومت کے فیصلے کے ایک دن پہلے سے ہی ریاست کے کئی سارے لیڈروں کو نظربند کیا گیا ہے۔ محبوبہ مفتی بھی فی الحال نظربند ہیں۔ اس دوران التجا ہی ان کے ٹوئٹر ہینڈل کو ان کی جگہ پر مینیج کر رہی تھیں۔

التجا مفتی: فائل فوٹو


ماں محبوبہ کی صحت کو لے کر پچھلے سال نومبر میں التجا نے انتظامیہ سے مانگ کی تھی کہ ان کی نظربند ماں محبوبہ مفتی کو گیسٹ ہاؤس کے بجائے کسی ایسی جگہ رکھا جائے جہاں وہ وادی کی زبردست سردی میں آرام سے رہ سکیں۔

التجا نے سری نگر کے ڈپٹی کمشنر کو لکھے ایک مکتوب میں کہا تھا کہ اگر پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی کو کچھ بھی ہوتا ہے تو اس کے لئے مرکزی حکومت ذمہ دار ہو گی۔
First published: Jan 02, 2020 06:01 PM IST