ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کے اجرا میں تاخیر سے جموں میں لوگ پریشان

لوگوں کا الزام ہے کہ لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اگرچہ متعلقہ محکموں کو ڈومیسائل کی اجرا میں پانچ روزہ ڈیڈ لائن مقرر کر رکھی ہے، لیکن کہیں بھی اس حکم نامے کا اطلاق ہوتا نظر نہیں آرہا ہے۔

  • Share this:
ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کے اجرا میں تاخیر سے جموں میں لوگ پریشان
ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کے اجرا میں تاخیر سے جموں میں لوگ پریشان

جموں وکشمیر: جموں شہر میں لوگوں کو ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کے اجرا میں تاخیر کا لوگ الزام عائد کر رہے ہیں، چاہے عام لوگ ہوں، تاجر ہوں، طلبا ہوں یا مائیگرینٹ سبھی طبقوں سے وابستہ لوگوں کا الزام ہے کہ لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اگرچہ متعلقہ محکموں کو ڈومیسائل کی اجرا میں پانچ روزہ ڈیڈ لائن مقرر کر رکھی ہے، لیکن کہیں بھی اس حکم نامے کا اطلاق ہوتا نظر نہیں آرہا ہے، لوگ ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کی جلد از جلد اجرا کا مطالبہ کررہے ہیں، گرچہ حالیہ دنوں جموں وکشمیر کے لیفٹنٹ گورنر منوج سنہا نے سرکاری افسران کو ہدایت دی تھی کہ وہ لوگوں کو ڈومیسائل سرٹیفیکیٹ جلد از جلد اجرا کرنے کا انتظام کریں۔


ہدایت کے مطابق سرکار نے افسران کو اس بات کا پابند بنایا ہے کہ جتنے بھی ڈومیسائل سرٹیفیکیٹ کےلئے درخواستیں آئی ہوں، چاہے وہ آف لائن ہوں یا پھر آن لائن انہیں پانچ روز کے اندر اندر لوگوں کو جاری کی جانی چاہئے۔ دیکھا جائے تو سرکار نے سرکاری نوکریوں کے لئے ڈومیسائل سرٹیفکیٹ لازمی قرار دی ہے، اس کے علاوہ کسی بھی سطح کے ایڈمیشن چاہے وہ سرکاری یا پرائیویٹ کالجوں، انجینئرنگ کالجوں کا معاملہ ہو تو اس کے لئے یہ اسناد لازمی قرار دی گئی ہے۔ لہٰذا صرف 5 روز کے اندر اندر انہیں جاری کی جائے۔


لوگوں کا الزام ہے کہ لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اگرچہ متعلقہ محکموں کو ڈومیسائل کی اجرا میں پانچ روزہ ڈیڈ لائن مقرر کر رکھی ہے، لیکن کہیں بھی اس حکم نامے کا اطلاق ہوتا نظر نہیں آرہا ہے۔
لوگوں کا الزام ہے کہ لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اگرچہ متعلقہ محکموں کو ڈومیسائل کی اجرا میں پانچ روزہ ڈیڈ لائن مقرر کر رکھی ہے، لیکن کہیں بھی اس حکم نامے کا اطلاق ہوتا نظر نہیں آرہا ہے۔


تاہم لوگوں کا کہنا ہےکہ اس حکم نامےکا کوئی اطلاق نہیں ہورہا ہے۔ اس کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہےکہ لوگوں کی لمبی لمی قطاروں محکمہ مال اور دیگر متعلقہ محکموں میں لوگوں کی ہرجگہ دیکھی جارہی ہیں، جو ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کے اجرا کے انتطار میں کئی کئی گھنٹوں تک رہتے نظر آرہے ہیں۔ ان کا الزام ہے کہ محکمہ مال کے افسران اور اہلکار ٹال مٹول سے کام لے کرلوگوں کی پریشانیوں میں اضافےکا باعث بن رہے ہیں۔ جموں میں محکمہ مال کے تحصیل بلاکوں پرلمبی لمبی قطاریں دہکھی جارہی ہیں، لیکن تاخیر سے لوگ نالاں ہیں، اس حوالے سے نیوز 18کے ساتھ  کئی ایک لوگوں نے بات کی، جن میں راجندر جموال، سنیتا دیوی، بچن سنگھ ، بٹو سنگھ اور راجیو کمارشامل ہیں۔

ان لوگوں کا کہنا تھا کہ انہوں نے تحصیل دفاتر کے چکرکاٹے، لیکن بے سود، کووڈ، بارشوں اور لاک ڈاون کے ایام میں بھی وہ ان بلاکوں کے چکر لگا کر تھک گئے ہیں، لیکن انہیں سرٹیفکیٹ کی فراہمی میں ٹال مٹول کا معاوضہ ملا ہے۔ ان لوگوں سے نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے اگرچہ تحصیل بلاکوں میں درخواستیں دی ہیں، لیکن ابھی ا نہیں سرٹیفکیٹ فراہم نہیں ہورہی ہے، جس سے وہ پریشان ہوگئے ہیں۔ دوسری جانب مائیگرنٹ کی جانب سے بھی اسی طرح کی شکایات مسلسل موصول ہورہی ہیں۔

تاہم متعلقہ محکموں کے افسران نے نیوز 18 کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ مائیگرنٹ سمیت سبھی کو ڈومیسائل اجرا کرنے کی کوششیں جاری ہیں۔ تاہم لوگوں کا کہنا ہے کہ آف لائن ہوں یا پھر آن لائن ڈومیسائل سرٹیفکیٹ اجرا میں ٹال مٹول اور تاخیر ہو رہی ہیں۔ دوسری جانب کشمیر میں بھی اسی طرح کی شکایات آرہی ہیں، جس سے لوگوں میں ناراضگی پائی جارہی ہے۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ سرکار نے ہر معاملے میں ڈومیسائل سرٹیفکیٹ کو لازمی بنا دیا ہے اور دوسری طرف محکمہ کی جانب سے لوگوں کی کوئی شنوائی نہیں ہو رہی ہے، لہٰذا اس سلسلے میں سرکار معاملے کی حساسیت اور سنجیدگی کا احساس کرکے لوگوں کی مدد کرے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Sep 01, 2020 11:54 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading