ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات جلد سے جلد کرانے کے مطالبے نے پکڑا زور

جموں وکشمیر میں اپوزیشن پارٹیوں کا کہنا ہے کہ بی جے پی نے جب یہاں ڈی ڈی سی کے انتخابات کرائے ہیں تو اسمبلی انتخابات کرانے میں کیا حرج ہے ۔

  • Share this:
جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات جلد سے جلد کرانے کے مطالبے نے پکڑا زور
جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات جلد سے جلد کرانے کے مطالبے نے پکڑا زور

جموں وکشمیر میں آرٹیکل 370 اور 35 اے کی منسوخی کے بعد جموں وکشمیر کو یوٹی کا درجہ دیا گیا ۔ لیکن یوٹی کا درجہ دئے جانے کے ساتھ ہی انتخابات کرانے کی جتنی بھی امیدیں تھیں وہ اس وقت ختم ہوگئی تھیں ۔ جموں وکشمیر میں دوہزار سترہ سے جب محبوبہ مفتی کی سرکار گری تھی ، اسمبلی معطل ہے ۔ تب سے ہی لوگ نئی اسمبلی انتخابات کرانے کے حق میں ہیں اور اسی کے منتظر ہیں ۔ ادھرآج تک بی جے پی یہ کہتی آرہی ہے کہ جموں وکشمیر میں اسمبلی انتخابات جلد سے جلد کرائیں گے ۔ تاہم اس میں کوئی پیش رفت نہیں ہوئی ہے ۔ جموں وکشمیر کی اپوزیشن پارٹیاں یہ کہتی ہیں کہ بی جے پی نے جب یہاں ڈی ڈی سی کے انتخابات کرائے ہیں تو اسمبلی انتخابات کرانے میں کیا حرج ہے ۔


لیکن مرکزی سرکار نے صاف طور پر واضح کیا ہے کہ جب تک نہ جموں و کشمیر میں حد بندی مکمل نہ ہوگی ۔ تب انتخابات ہونا مشکل ہے ۔ اس کا کہنا ہے کہ جوں ہی حد بندی مکمل ہوگی ، تو اس کے بعد ہی انتخابات کرائیں گے ۔ جموں و کشمیر کے ایل جی نے بھی کہا ہے کہ حد بندی کا کام مکمل ہونے کے بعد جلد سے جلد اسمبلی انتخابات ہوں گے ۔ ذرائع کے مطابق یہاں اکتوبر اور نومبر میں انتخابات کرانے کے چرچے ہیں ۔ لیکن کوئی بات واضح طور پر سامنے نہیں آرہی ہے ۔


بی جے پی کے کویندر گپتا کا کہنا ہے کہ حد بندی ضروری ہے اور ان کی پارٹی بھی چاہتی ہے کہ حد بندی جلد سے جلد ہو اور اس کے بعد اسمبلی انتخابات ہوں گے ۔ کیونکہ جموں وکشمیر میں منتخب سرکار کا ہونا بہت ضروری ہے ۔ ساتھ ہی عوامی ترجمان کی سرکار لوگوں کی فلاح و بہبود کے لئے ضروری ہے ۔ ان کا ماننا ہے کہ جو انتظامیہ میں افسران ہیں ، ان کے ذریعہ سے کام کاج میں کافی سستی نظر آتی ہے ۔


دوسری طرف دیگر سیاسی پارٹیاں بھی یہ کہہ رہی ہیں کہ انتخابات نہ کرانے سے بی جے پی کے دعوے سراب ثابت ہورہے ہیں ۔ ان کا کہنا ہے کہ عوامی سرکار نہ ہونے کی وجہ سے یہاں افسر شاہی کا چلن عام ہوگیا ہے ، جس کی وجہ سے یہاں کوئی تعمیری کا م نہیں ہوپارہا ہے ۔ کانگریس کے رمن بلا ، نیشنل کانفرنس کے دیوندر سنگھ رانا اور ہرش دیو سنگھ کا بھی یہی کہنا ہے کہ یہاں افسر شاہی کا دور چل رہا ہے ۔ انہوں نے بھی زور دیا کہ جموں و کشمیر میں بہت جلد اسمبلی انتخابات کرائے جائیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Feb 23, 2021 09:18 PM IST