உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر پولیس سربراہ کا بڑا بیان، کہا- پاکستان اب جنگجو ہی نہیں کورونا کے مریض بھی ایکسپورٹ کرے گا

    پولیس جنرل ڈائریکٹر دلباغ سنگھ نے کہا کہ ایل او سی کے پار پاکستان کے قبضے والے کشمیر میں دہشت گردانہ ٹھکانے میں 300 سے زیادہ دہشت گرد موجود ہیں اور وہ ہندوستان میں دراندازی کرنے کی فراق میں ہیں۔

    جموں وکشمیر پولیس سربراہ دلباغ سنگھ نےکہا کہ پاکستان کشمیر میں اب صرف جنگجو ہی نہیں بلکہ کورونا وائرس کے مریض بھی ایکسپورٹ کرے گا اور کشمیر کے ہمارے لوگوں میں انفیکشن پھیلائے گا۔ انہوں نے کہا کہ اس کے چلتے بہت احتیاط برتنے کی ضرورت ہے۔

    • UNI
    • Last Updated :
    • Share this:

      سری نگر: جموں وکشمیر پولیس سربراہ دلباغ سنگھ نےکہا کہ پاکستان کشمیر میں اب صرف جنگجو ہی نہیں بلکہ کورونا وائرس کے مریض بھی ایکسپورٹ کرےگا اور کشمیر کے ہمارے لوگوں میں انفیکشن پھیلائےگا۔ انہوں نےکہا کہ اس کے چلتے بہت احتیاط برتنے کی ضرورت ہے۔


      پولیس سربراہ نے بدھ کو وسطی کشمیر کے ضلع گاندربل میں نامہ نگاروں کو بتایا: 'کچھ چیزیں سامنے آئی ہیں اور یہ بڑے تشویش کی بات ہے کہ پاکستان ابھی تک صرف دہشت گرد ایکسپورٹ کرتا تھا، لیکن اب وہ کورونا وائرس کے مریض بھی ایکسپورٹ کرے گا۔ کشمیر میں ہمارے لوگوں میں انفیکشن پھیلائےگا۔ یہ ایک بات ہے جس پر احتیاط برتنے کی ضرورت ہے اور یہ ہمارے لئے تشویش کی بات ہے'۔

      دلباغ سنگھ نےکہا کہ پاکستان کورونا کے ذریعہ کشمیر میں ہمارے لوگوں میں انفیکشن پھیلائےگا۔ فائل فوٹو
      دلباغ سنگھ نےکہا کہ پاکستان کورونا کے ذریعہ کشمیر میں ہمارے لوگوں میں انفیکشن پھیلائےگا۔ فائل فوٹو


      دلباغ سنگھ جنہوں نے آئی جی پی کشمیر وجے کمار کے ہمراہ گاندربل کا دورہ کیا، نے بتایا کہ ضلع پولیس لاک ڈائون پر عمل درآمد کو یقینی بنانے کے ساتھ ساتھ لوگوں کو راحت پہنچانےکےلئے بھی کام کررہی ہے۔ ان کا کہنا تھا: 'ہم نے یہاں ایک میٹنگ میں سیکورٹی صورتحال کا بھی جائزہ لیا۔ میٹنگ میرے اور آئی جی صاحب کے علاوہ ضلع مجسٹریٹ اور ایس پی گاندربل موجود تھے۔ نافذ لاک ڈائون اور اس دوران لوگوں کو راحت پہنچانے کا کام جو ضلع پولیس کررہی ہے اس کا بھی جائزہ لیا گیا۔ ہماری ضلع پولیس باقی فورسز کے ساتھ مل کر اچھا کام کررہی ہے'۔
      Published by:Nisar Ahmad
      First published: