உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Earthquake: جموں۔کشمیر سے لیکر دہلی تک زلزلے کے جھٹکے، گھروں سے باہر نکلے لوگ

    earthquake

    earthquake

    نیشنل سینٹر فار سیسمولوجی کے مطابق ریکٹر اسکیل پر زلزلے کی شدت 5.7 تھی۔ زلزلے کا مرکز افغانستان تاجکستان کی سرحد پر بتایا جا رہا ہے۔ لوگ خوفزدہ ہو کر گھروں سے باہر نکل آئے۔ فی الحال اس زلزلے میں جانی و مالی نقصان کی اطلاع موصول نہیں ہوسکی ہے۔ زلزلے کے یہ جھٹکے صبح 9:45 پر محسوس کیے گئے۔

    • Share this:
      نئی دہلی: کچھ دیر پہلے جموں و کشمیر سے راجدھانی دہلی تک زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کیے گئے۔ نیشنل سینٹر فار سیسمولوجی کے مطابق ریکٹر اسکیل پر زلزلے کی شدت 5.7 تھی۔ زلزلے کا مرکز افغانستان تاجکستان کی سرحد پر بتایا جا رہا ہے۔ لوگ خوفزدہ ہو کر گھروں سے باہر نکل آئے۔ فی الحال اس زلزلے میں جانی و مالی نقصان کی اطلاع موصول نہیں ہوسکی ہے۔ زلزلے کے یہ جھٹکے صبح 9:45 پر محسوس کیے گئے۔

      پاکستان کے شہر پشاور میں بھی زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔ جیو نیوز کے مطابق اسلام آباد، راولپنڈی سمیت پنجاب اور خیبرپختونخوا کے کئی شہروں میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے۔ آپ کو بتاتے چلیں کہ گزشتہ ماہ بھی افغانستان کے مغرب میں واقع صوبے بادغیس میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے تھے۔ اس زلزلے کے نتیجے میں 26 سے زائد افراد ہلاک ہو گئے۔

      نیشنل سینٹر فار سیسمولوجی کا ٹویٹ



      بھارت میں مسلسل دوسرے روز بھی زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں۔ اس سے قبل جمعہ کی صبح گجرات کے کچے ضلع میں 3.1 شدت کا زلزلہ آیا تھا۔ زلزلے کا مرکز راپڑ گاؤں تھا۔ گاندھی نگر میں واقع انسٹی ٹیوٹ آف سیسمک ریسرچ (ISR) نے کہا، 'جمعہ کی صبح 10.16 بجے کچھ کے راپر میں 3.1 شدت کا زلزلہ ریکارڈ کیا گیا۔ زلزلے کا مرکز زمین کی سطح سے 19.1 کلومیٹر کی گہرائی میں تھا۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: