ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر میں کووڈ کی صورتحال قابو میں رکھنے کی ہر ممکنہ کوشش جاری : ڈاکٹر مشتاق

Jammu and Kashmir News : ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز کشمیر ڈاکٹر مشتاق احمد راتھر کا کہنا ہے کہ وادی کشمیر میں کووڈ کی صورتحال کو قابو میں رکھنے کےلئے سرکار ہر طرح کا ممکنہ قدم اٹھا رہی ہے۔ جبکہ تمام اسپتالوں میں کووڈ سے نمٹنے کیلئے بنیادی ڈھانچے کو مزید فعال اور مستحکم بنانے کی بھی کوششیں جاری ہیں ۔

  • Share this:
جموں و کشمیر میں کووڈ کی صورتحال قابو میں رکھنے کی ہر ممکنہ کوشش جاری : ڈاکٹر مشتاق
جموں و کشمیر میں کووڈ کی صورتحال قابو میں رکھنے کی ہر ممکنہ کوشش جاری : ڈاکٹر مشتاق

جموں و کشمیر: مرکز کے زیر انتظام جموں و کشمیر میں جہاں کووڈ سے متاثرہ افراد کی تعداد 1,87,219 سے تجاوز کر گئی ہے ، وہیں یوٹی میں اس وقت ایکٹیو معاملات کی تعداد 34,567 ہے ۔ اس دوران ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز کشمیر ڈاکٹر مشتاق احمد راتھر کا کہنا ہے کہ وادی کشمیر میں کووڈ کی صورتحال کو قابو میں رکھنے کےلئے سرکار ہر طرح کا ممکنہ قدم اٹھا رہی ہے۔ جبکہ تمام اسپتالوں میں کووڈ سے نمٹنے کیلئے بنیادی ڈھانچے کو مزید فعال اور مستحکم بنانے کی بھی کوششیں جاری ہیں ۔ ڈاکٹر مشتاق کا کہنا ہے کہ وادی کے اسپتالوں میں اس وقت آکسیجن کی کمی نہیں ہے اور لوگ افواہوں پر دھیان دینے کی بجائے اگر احتیاطی تدابیر پر عمل پیرا ہوتے تو یہ حالات کو قابو میں کرنے کیلئے ایک سود مند قدم ثابت ہو سکتا تھا۔


ڈاکٹر مشتاق کا کہنا ہے کہ تمام ویلنیس اور کووڈ اسپتالوں میں آکسیجن کی مناسب فراہمی کو یقینی بنانے کیلئے متعلقین کو سخت ہدایت دی گئی ہے۔ انہوں نے لوگوں سے کووڈ پر قابو پانے کیلئے مرتب شدہ تمام گائیڈ لائنس اور قواعد و ضوابط پر عمل پیرا ہونے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ لوگوں کو اس وائرس کی سنگینیت سمجھنی چاہئے اور اس کے خاتمہ کیلئے فیس ماسک ، سینٹیشن کے استعمال کے علاؤہ گھروں سے بے وجہ باہر نکلنے سے گزیز کرنا لازمی ہے ۔


جموں و کشمیر میں سول انتظامیہ کے ساتھ ساتھ کووڈ پر قابو پانے کیلئے جموں و کشمیر پولیس بھی پوری متحرک نظر آرہی ہے ۔ کورونا وائرس کی دوسری لہر کے پھوٹ پڑنے کے بعد سے جموں و کشمیر پولیس نے انتہائی سنگین کورونا وائرس پر قابو پانے کے بارے میں عوام میں بیداری پیدا کرنے کی کوششوں میں اضافہ کیا ہے۔ کوویڈ ۔19 کے پھیلاؤ پر قابو پانے کیلئے پابندیوں کے تحت دفعہ 144 سمیت کئی اقدامات کو جگہ دی گئی ہے ۔


وادی کشمیر میں روزانہ کے واقعات میں ریکارڈ اضافے کے پیش نظر پولیس نے پوری وادی میں کووڈ 19 کے رہنما خطوط ، ایس او پیز اور  پابندیوں کو سختی سے نافذ کرنے کی کوششوں میں اضافہ کیا ۔  گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران پولیس نے وادی کشمیر بھر میں رہنما خطوط / قوانین کی خلاف ورزی کرنے پر 620 افراد پر 93,620 روپے کا جرمانہ عائد کیا ہے جبکہ 81 افراد کو گرفتار کیا گیا ہے ۔ اس دوران پولیس نے کووڈ ضوابط کی خلاف ورزی کی پاداش میں 46 ایف آئی آر درج کی ہیں ۔ اس کے علاوہ ہدایت نامہ / پابندیوں کی خلاف ورزی پر بڈگام میں بھی 03 گاڑیاں ضبط کی گئیں ۔

کوڈ 19 کے رہنما اصولوں و قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف خصوصی مہم  وادی کشمیر کے تمام اضلاع میں جاری ہے ۔ تاکہ لوگوں کو وبائی امراض کی روک تھام کے لئے حکومت کی طرف سے تصور کردہ ایس او پیز / ہدایات پر عمل پیرا ہونے کی ترغیب دی جا سکے۔

ایس ایس پی بڈگام طاہر سلیم نے  بڈگام کے ڈی ڈی سی کے ساتھ بات چیت کی جبکہ سماجی دوری کے اصولوں اور دیگر پروٹوکول کی پیروی کرتے ہوئے بات چیت کے دوران ، ایس ایس پی بڈگام نے ڈی ڈی پیز کو اپنے اپنے علاقوں میں کووڈ 19 میں اضافہ کی روک تھام کے لئے ان کے کردار اور ذمہ داریوں کے بارے میں آگاہ کیا۔

پولیس نے کمیونٹی ممبران سے ایک بار پھر عوامی تحفظ کے لئے ایس او پیز / رہنما خطوط / پروٹوکولز پر عمل کرتے ہوئے کورونا وائرس کے پھیلاؤ پر قابو پانے کےلئے تعاون کرنے کی درخواست کی ہے ۔ پولیس کے مطابق حفاظتی اقدامات کو مستحکم کرنے کے لئے وادی کشمیر کے تمام اضلاع میں خصوصی مہم جاری رکھی جائے گی۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 03, 2021 09:24 PM IST