ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں کشمیر میں کووڈ19 کے بڑھتے معاملوں کے مد نظر ماہرین فکر مند، ٹیکے لگوانے کی تاکید

کووڈ ٹیکوں کو لیکر اندیشوں کے بارے میں پروفیسر محمد سلیم کہتے ہیں کہ ٹیکے لگنے کے بعد بیماری لگنے کا خطرہ کافی کم ہوجاتا ہے اور اگر کسی کو لگ بھی جائے تو جسم پر اس کا اثر بہت کم ہوتا ہے۔

  • Share this:
جموں کشمیر میں کووڈ19 کے بڑھتے معاملوں کے مد نظر ماہرین فکر مند، ٹیکے لگوانے کی تاکید
کووڈ ٹیکوں کو لیکر اندیشوں کے بارے میں پروفیسر محمد سلیم کہتے ہیں کہ ٹیکے لگنے کے بعد بیماری لگنے کا خطرہ کافی کم ہوجاتا ہے اور اگر کسی کو لگ بھی جائے تو جسم پر اس کا اثر بہت کم ہوتا ہے۔

جموں کشمیر میں آج یعنی 26 مارچ کو کووڈ 19 (Covid-19 pandemic) کے 210 نئے معاملے درج کئے گئے جن میں سے وادی کشمیر میں 169 اور جموں صوبہ میں 41 کووڈ مثبت کیس پائے گئے۔ جموں کشمیر میں چھلے دو مہینے سے کووڈ معاملوں میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے۔ پچھلے تین ہفتوں سے تو یہ تعداد کافی تیزی سے بڑھ رہی ہے ۔ پچھلے ایک ہفتے میں کووڈ19 کے 1164 نئے کیس درج کئے گئے ہیں جن میں سے 77 فیصد وادی کشمیر میں پائے گئے ۔ اس سے پہلے ہفتے یعنی 13 مارچ سے 19 مارچ تک 813 کووڈ مثبت معاملے پائے گئے تھے یعنی اس ہفتے 44 فیصد زیادہ کیس درج کئے گئے۔ 26 مارچ کو جموں کشمیر میں کووڈ ایکٹو پازیٹیو معاملوں کی تعداد 1681 ہوگئی ہے جن میں سے 1269 یعنی 76 فیصد کشمیر میں ہیں۔


کشمیر میں کووڈ ایکٹیو مثبت معاملوں کا 60 فیصد صرف سرینگر ضلع میں ہے۔ ماہرین اس صورتحال کو لیکر پریشان ہے۔ماہر امراض سینہ پروفیسر نوید نذیر کا کہنا ہےکہ ابھی یہ نہیں کہا جاسکتا کہ کووڈ کی دوسری لہر ہےلیکن بڑھتے معاملات تشویش ناک ہیں۔ نوید نذیر کہتے ہیں کہ پچھلی بار بھی کووڈ معاملات کیرالہ ،مہاراشٹر سے بڑھنے شروع ہوگئے تھے۔ کووڈ نوڈل افسر سرینگر پروفیسر محمد سلیم خان کہتے ہیں کہ اس صورتحال سے نکلنے کے لئے کووڈ کے ٹیکے لگوانے کے ساتھ ساتھ ایس او پی ایز پر سختی سے عمل کرنا ہوگا۔ کووڈ ٹیکوں کو لیکر اندیشوں کے بارے میں پروفیسر محمد سلیم کہتے ہیں کہ ٹیکے لگنے کے بعد بیماری لگنے کا خطرہ کافی کم ہوجاتا ہے اور اگر کسی کو لگ بھی جائے تو جسم پر اس کا اثر بہت کم ہوتا ہے۔


نیوز 18 اردو سے بات کرتے ہوئے ضلع ترقیاتی کمشنر سرینگر محمد اعجاز نے کہا کہ صورتحال پریشان کُن ہےاور اس سے نمٹنے کے لئے اقدامات کئے جارہے ہیں۔انھوں نے کہا کہ ماسک نہ پہننے والوں پر جرمانہ لگایا جارہا ہے اور جو لوگ کووڈ قواعد و ضوابط پر عمل نہیں کرتے اُن سے سختی سے نمٹا جارہا ہے۔

Published by: Sana Naeem
First published: Mar 27, 2021 11:20 AM IST