ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں وکشمیر: کپواڑہ میں پھر ٹوٹی خاموشی، پاکستان کی جانب سے فائرنگ

جموں وکشمیر کے سرحدی علاقے کپواڑہ ضلع میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے نزدیک آباد علاقہ سیماری کرناہ میں آج پاکستان نے اس پار زیر زمین بنکر تعمیرکرنے کے دوران اچانک فائرنگ کی، جس کے نتیجے میں دو عام شہری شدید زخمی ہوگئے۔

  • Share this:
جموں وکشمیر: کپواڑہ میں پھر ٹوٹی خاموشی، پاکستان کی جانب سے فائرنگ
جموں وکشمیر: کپواڑہ میں پھر ٹوٹی خاموشی، پاکستان کی جانب سے فائرنگ

کپواڑہ: جموں وکشمیر کے سرحدی علاقے کپواڑہ ضلع میں لائن آف کنٹرول (ایل او سی) کے نزدیک آباد علاقہ سیماری کرناہ میں آج پاکستان نے اس پار زیر زمین بنکر تعمیرکرنے کے دوران اچانک فائرنگ کی، جس کے نتیجے میں دو عام شہری شدید  زخمی ہوگئے۔ فوجی ذرائع کے مطابق سیماری سکٹر میں لوگ زیر زمین بنکر کی تعمیر کررہے تھےکہ اس دوران ان پر پاکستان کی جانب سے فائرنگ کی گئی۔


پاکستان کی جانب سے فائرنگ میں جو دو عام شہری زخمی ہوگئے ان کی  شناخت 22 سالہ صداقت حسین اور 24 سالہ ضمیر احمد کے طور ہوئی ہے۔ دونوں زخمیوں کو علاج معالجہ کےلئے سری نگر کے صدر اسپتال منتقل کیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ پہلا موقع ہے جب بنکروں کی تعمیر کرنے والوں پر فائرنگ کی گئی۔ وہی سرحد پار سے فائرنگ کی وجہ سے ایل او سی کے نزدیک آباد علاقوں میں تشویش پائی جارہی ہے۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Jul 09, 2020 04:40 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading