ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

کٹھوعہ میں بین الا قوامی سرحد پر فائرنگ، ہندوستان اور پاکستان کی فوج کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ

جموں و کشمیر کے ضلع کٹھوعہ میں بین الاقوامی سرحد پر ہندوستان اور پاکستان کی فوج کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ ہوا۔ تاہم کسی بھی جانب کسی قسم کے نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔

  • UNI
  • Last Updated: Aug 18, 2020 07:29 PM IST
  • Share this:
کٹھوعہ میں بین الا قوامی سرحد پر فائرنگ، ہندوستان اور پاکستان کی فوج کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ
کٹھوعہ میں بین الا قوامی سرحد پر فائرنگ، ہندوستان اور پاکستان کی فوج کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ۔ فائل فوٹو

سری نگر: جموں و کشمیر کے ضلع کٹھوعہ میں بین الاقوامی سرحد پر ہندوستان اور پاکستان کی فوج کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ ہوا تاہم کسی بھی جانب کسی قسم کے نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔ سرکاری ذرائع نے بتایا کہ ضلع کٹھوعہ کے ہیرا نگر سیکٹر میں بین لاقوامی سرحد پر چنڈوا اور کرول متریا علاقوں میں قائم بھارتی چوکیوں کو پاکستانی فوج نے نشانہ بنا کر فائرنگ کی۔ انہوں نے کہا کہ وہاں تعینات فوجی جوانوں نے اس حملے کا بھر پور جواب دیا۔ انہوں نے بتایا کہ فائرنگ کے تبادلے میں کسی بھی جانب کسی جانی یا مالی نقصان کی کوئی اطلاع نہیں ہے۔





قابل ذکر ہے کہ سال 2003 میں دونوں ممالک کے درمیان جنگ بندی معاہدہ طے پانے اور سال رواں کے اوائل سے پھوٹنے والے کورونا وبا کے باوجود بھی طرفین کے درمیان بین الاقوامی سرحد اور ایل او سی پر نوک جھونک کا سلسلہ تھمنے کا نام ہی نہیں لے رہا ہے جس کے باعث آر پار کی سرحدی بستیوں کے لوگوں کا جینا دو بھر ہو کے رہ گیا ہے۔ سرکاری اعداد شمار کے مطابق سال رواں کے دوران اب تک سرحد پر فائرنگ یا گولہ باری کے تبادلے کے ازئد از پچیس سو واقعات رونما ہوئے ہیں۔

Published by: Nisar Ahmad
First published: Aug 18, 2020 07:06 PM IST