உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    شیر کشمیر یونیورسٹی میں کسان میلا آج سے، ایل جی سنہا کریں گے افتتاح، پانچ دن رہے گا جاری

     لیفٹننٹ گورنر منوج سنہا کی جانب سے بیک ٹو ویلیج پروگرام شروع کیا گیا ہے۔ اس میں کلسٹر بیسڈ بزنس آرگنائزیشن کی جانب سے ایف پی او کی تشکیل عمل میں لائی گئی ہے۔

    لیفٹننٹ گورنر منوج سنہا کی جانب سے بیک ٹو ویلیج پروگرام شروع کیا گیا ہے۔ اس میں کلسٹر بیسڈ بزنس آرگنائزیشن کی جانب سے ایف پی او کی تشکیل عمل میں لائی گئی ہے۔

    لیفٹننٹ گورنر منوج سنہا کی جانب سے بیک ٹو ویلیج پروگرام شروع کیا گیا ہے۔ اس میں کلسٹر بیسڈ بزنس آرگنائزیشن کی جانب سے ایف پی او کی تشکیل عمل میں لائی گئی ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir, India
    • Share this:
      شیر کشمیر یونویرسٹی آف ایگریکلچر سائنس اینڈ ٹکنالوجی (SKUAST) جموں کے مرکزی کیمپس چٹھہ میں منعقد کیا جائے گا۔ یہ میلہ 21 نومبر تک جاری رہے گا۔ پہلے یہ میلہ دو دن کا ہوتا تھا، لیکن اس بار لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا کی ہدایت پر پانچ دن کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔ لیفٹیننٹ گورنر آج جمعرات کو میلے کا افتتاح کریں گے۔

      اسکاسٹ جموں کے وی سی جے پی شرما نے بتایا کہ میلا نمائش اور تکنیک میں تبدیلی پر مرکوز رہے گا۔ میلے میں زیادہ تعداد میں کسان حصہ لیں گے۔ اس کے علاوہ صنعتی، دیہی نوجوان، خواتین اور دیگر موجود ہوں گے۔ ہر ایک کو زراعت، باغبانی اور مویشی پالن کے جدید طریقوں سے آگاہ کیا جائے گا۔ اس سے وہ اپنی آمدنی میں اضافہ کر سکیں گے۔

      اس میں پانچ پدم شری کسان کیشنا یادو، پوجا شرما، رام شرن اور دیگر حصہ لیں گے اور اپنے خیالات شیئر کریں گے۔ اسکولوں، کالجوں اور یونیورسٹی سے بھی طلبہ حصہ لیں گے۔ شہری علاقوں کے طلبہ بھی کھیتی کے بارے میں جانکاری لے سکیں گے اور شعبہ ذراعت میں کام کرپائیں گے۔

      یہ بھی پڑھیں:
      نوجوانوں میں ماحولیات و جنگلات کے بچاو کیلئے کی جارہی ہے پہل، شجرکاری کو کیا جارہا ہے عام

      یہ بھی پڑھیں:
      جموں و کشمیر خود اعتمادی کے جذبے کے تحت ترقی کی راہ پر آگے بڑھ رہا ہے: ‏منوج سنہا

      انہوں نے کہا کہ لیفٹننٹ گورنر منوج سنہا کی جانب سے بیک ٹو ویلیج پروگرام شروع کیا گیا ہے۔ اس میں کلسٹر بیسڈ بزنس آرگنائزیشن کی جانب سے ایف پی او کی تشکیل عمل میں لائی گئی ہے۔ ابھی تک 17 ایف پی او تشکیل دئیے گئے ہیں۔ رامبن اور کشتواڑ میں دو نئے کے وی کے کام کررہے ہیں۔ اسکاسٹ جموں کی جانب سے 50 سے زیادہ نئی ویرائیٹی لانچ کی گئی ہے۔ آخری دو سالوں میں باسمتی 118،123،138 کو لانچ کیا گیا ہے۔ اس سے 25 سے 35 فیصدی تک پیداوار میں اضافہ ہوگا۔
      Published by:Shaik Khaleel Farhaad
      First published: