உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سی آر پی ایف کی ناکہ پارٹی پر ملیٹنٹنوں نے کیا گرینیڈ حملہ، دو CRPF اہلکار اور 4 شہری زخمی

    ملیٹنٹنوں نے کیا گرینیڈ حملہ

    ملیٹنٹنوں نے کیا گرینیڈ حملہ

    آئی جی کشمیر وجے کمار نے یہ واضح کردیا ہے کہ کئی ملیٹنٹوں کو بخشا نہیں جائے گا اور جو بھی اس صف میں شمولیت اختیار کرے اور ان کی مدد کرے اسے بھی کیفرکردار تک پہنچایا جائے گا۔

    • Share this:
    شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے پلہالن پٹن میں سی آر پی ایف Central Reserve Police Force (CRPF) کی ناکہ پارٹی پر ملی ٹنٹنوں نے گرنیڈ حملہ کیاہے جس کے نتیجے میں دو سی آر پی ایف اور چار شہری زخمی ہوگئے ہیں۔ زخمیوں کو طبی تشخیص کے لئے پہلے ٹراما اسپتال پٹن پہنچایا گیا جہاں سے انہیں سرینگر منتقل کیاگیا۔ واضح رہے یہ حملہ سرینگر بارہمولہ نیشنل ہائی وے پر پلہالن پٹن کے کرانسگ کے مقام پر گیا گیا۔ اس حملے کی زد میں ایک سومو گاڑی بھی آگئی۔ حملے کے فوراً بعد آرمی ،سی آر پی ایف اور جموں وکشمیر پولیس نے علاقے کا محاصرہ کیا اور ملی تلاش شروع کردی۔

    آئی جی ، ڈی آئی جی نارتھ ، سی آر پی ایف اور آرمی کے اعلی افسران نے جائے واردات کا دوہ کرکے جائزہ لیا۔ پٹن میں اس حادثے سے یہ پتہ چل پاتا ہے کہ ملی ٹنٹنوں نے شمالی کشمیر کے پٹن اور ملحقہ علاقوں میں اپنی موجودگی کا احساس دیا۔ کشمیر میں گزشتہ کئی مہینوں سے لگاتار سیکورٹی فورسز پر حملے ہورہے ہیں جس پر سیکورٹی فورسز نے بھی کاروائی کرتے ہوئے کئی ایک مقامات پر مختلف انکاؤنٹروں میں ملی ٹنٹنوں کو ہلاک کیا۔

    آئی جی کشمیر وجے کمار نے یہ واضح کردیا ہے کہ کئی ملیٹنٹوں کو بخشا نہیں جائے گا اور جو بھی اس صف میں شمولیت اختیار کرے اور ان کی مدد کرے اسے بھی کیفرکردار تک پہنچایا جائے گا۔ انہوں نے اپیل کی کہ جو بھی ملی ٹنٹنوں کے صفوں میں شامل ہی وہ مین اسٹریم جماعت میں شامل ہوجائیں اور اپنی زندگیوں کو سنواریں۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: