உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ میں ہاف میراتھن کا اہتمام، 21 کلو میٹر کی میراتھن میں 200 نوجوانوں نے لیا حصہ

    شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے سنگھ پورہ پٹن میں ہاف میراتھن کا اہتمام

    شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے سنگھ پورہ پٹن میں ہاف میراتھن کا اہتمام

    فوج کی 29 راشٹریہ رائفلز کے کھن پیٹھ آرمی کیمپ نے شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے سنگھ پورہ پٹن میں ہاف میراتھن کا اہتمام کیا۔ 21 کلو میٹر کی اس میراتھن میں 200 نوجوانوں نے شرکت کی۔ یہ ریس کھن پیٹھ سے شروع ہوئی اور تاریخی مقام پری ہاس پورہ پٹن میں اختتام پذیر ہوئی۔

    • Share this:
    کشمیر: مقامی آبادی کے ساتھ آپسی تال میل اورنوجوانوں میں کھیل کے جذبے کو فروغ دینے کے سلسلے میں ہندوستانی فوج پُر عزم ہے۔ وادی کشمیر کے نوجوانوں کو کھیل کود میں بہتر پلیٹ فارم فراہم کرنے کے لئے مختلف طرح کی کھیل سرگرمیاں منعقد کرائی جاتی ہیں۔ اسی ضمن میں  فوج کی 29 راشٹریہ رائفلز کے کھن پیٹھ آرمی کیمپ نے شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ کے سنگھ پورہ پٹن میں ہاف میراتھن کا اہتمام کیا۔ 21 کلو میٹر کی اس میراتھن میں 200 نوجوانوں نے شرکت کی۔ یہ ریس کھن پیٹھ سے شروع ہوئی اور تاریخی مقام پری ہاس پورہ پٹن میں اختتام پذیر ہوئی۔

    اس ریس میں وسطی کمشیر کے ضلع بڈگام کے چک کاوسہ کے شکیل احمد ڈار نے پہلی، شمالی کشمیر کے ضلع بانڈی پورہ سنبل بالا کنگن کے محمد اشرف نے دوسری اور ساحل احمد غنائی نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔ پری ہاس پورہ میں منعقدہ تقریب پر ایس ڈی ایم پٹن سید فہیم نے فوج کے افسران کے ساتھ پوزیشن حاصل کرنے والے نوجوانوں کو انعامات سے نوازا۔ اس موقع پر پولیس اور سیول افسران بھی موجود تھے۔ نوجوانوں نے اس ریس کے انعقاد پر فوج کا شکریہ ادا کیا۔

    یہ بھی پڑھیں۔

    The Kashmir Files کے ڈائریکٹر ویویک اگنی ہوتری کے خلاف بھوپال میں احتجاج 

    نیوز 18 اردو سے بات کرتے ہوئے پہلی پوزیشن حاصل کرنے والے نوجوان شکیل احمد نے کہا کہ انہیں آج انتہائی خوشی ہے کہ اس منعقدہ ریس میں پوزیشن حاصل کی۔ شکیل نے کہا کہ انہوں نے اس دوڑ میں کافی محنت اور جوش لگایا۔ انہوں نے کہا کہ وہ فوج کے شکر گزار ہیں کہ وہ نوجوانوں کو دوسرے جرائم سے دور رکھنے کی غرض سے اس طرح کے پلیٹ فارم فراہم کررہے ہیں۔

    ایک اور نوجوان محمد اشرف نے نیوز 18 اردو کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ انہیں بانڈی پورہ ضلع سے آکر اس ریس میں حصہ لیا اور اپنی محنت سے انہوں نے دوسری پوزیشن حاصل کی۔ انہوں نے فوج کا شکریہ ادا کیا۔ ایک مقامی بزرگ نے نیوز 18 اردو کو بتایا کہ فوج کا یہ قدم نوجوانوں کے مستقبل کو بہتر بنانے اور جرائم سے دور رکھنے کے لئے انتہائی اہم ہے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: