உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J&K News: ٹارگٹ کلنگ کیلئے ہائبریڈ دشت گردوں کو استمال میں لایا جارہا ہے: انٹلی جنس ذرائع

    J&K News: ٹارگٹ کلنگ کیلئے ہائبریڈ دشت گردوں کو استمال میں لایا جارہا ہے: انٹلی جنس ذرائع ۔ علامتی تصویر ۔

    J&K News: ٹارگٹ کلنگ کیلئے ہائبریڈ دشت گردوں کو استمال میں لایا جارہا ہے: انٹلی جنس ذرائع ۔ علامتی تصویر ۔

    Jammu and Kashmir: جموں و کشمیر میں دہشت گرد گروپوں کی سرگرمیوں میں ایک بڑی تبدیلی کا مشاہدہ کیا جا رہا ہے، جس میں ہائبریڈ دہشت گرد مرکز کے زیر انتظام علاقے کو دوبارہ خوف و ہراس اور بد امنی کی طرف کھینچنے کے لیے شہریوں کو نشانہ بنا رہے ہیں ۔

    • Share this:
    جموں : جموں و کشمیر میں دہشت گرد گروپوں کی سرگرمیوں میں ایک بڑی تبدیلی کا مشاہدہ کیا جا رہا ہے، جس میں ہائبریڈ دہشت گرد مرکز کے زیر انتظام علاقے کو دوبارہ خوف و ہراس اور بد امنی کی طرف کھینچنے کے لیے شہریوں کو نشانہ بنا رہے ہیں ۔ اعلی انٹلی جنس ذرائع نے نیوز 18 کو بتایا کہ ہائبریڈ دہشت گرد، ایک ایسی حکمت عملی اپنا رہے ہیں، جس میں حملے کرنے والے دہشت گردوں کو گروپوں میں شامل نہیں کیا جاتا، بلکہ انہیں مخصوص ہلاکتوں کے لیے بھرتی کیا جاتا ہے۔ پہلے انہیں سیکورٹی اہلکاروں کو نشانہ بنانے کے لیے بھرتی کیا جاتا تھا، لیکن اب وہ کشمیری پنڈتوں، غیر مقامی لوگوں اور پنچایت ممبروں و عوامی نمائندوں جیسے شہریوں کا پیچھا کر رہے ہیں۔

    انٹلی جنس ذرائع نے بتایا کہ یہ دہشت گرد گروپ جموں و کشمیر میں بیانیہ کو مسخ کرنے اور کمیونٹی میں خوف و ہراس پیدا کرکے نقل مکانی کو متاثر کرنے کے لیے کشمیری پنڈتوں کو نشانہ بنارہے ہیں۔ انٹلی جنس ایجنسیوں نے ان دہشت گردوں کے استعمال کیے جانے والے ہتھیاروں میں بھی تبدیلی دیکھی ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ "ایک اے کے 47 کے ساتھ چلنے کی بجائے، وہ ایک چھوٹی پستول کو جیب میں رکھنا بہتر سمجھتے ہیں، کیونکہ انہیں اسے لے جانے میں آسانی ہوتی ہے۔" پستول کا معیار بھی چائنیز فائبر سے بہتر ہو کر مزید جدید ہو گیا ہے۔

     

    یہ بھی پڑھئے : جموں وکشمیر: کشمیری پنڈتوں سے علمائے کرام کی بڑی اپیل، وادی چھوڑ کرنہ جائیں


    ایک بینک منیجر اور ایک مزدور جموں و کشمیر میں دہشت گردوں کا تازہ ترین شکار تھے، جس سے شہریوں کی ہلاکتوں کی تعداد نو ہو گئی۔ بینک منیجر وجے کمار، جن کا تعلق راجستھان سے تھا، پر جنوبی کشمیر کے کولگام میں علاقائی دیہاتی بینک کی شاخ کے اندر حملہ کیا گیا ۔ وہیں منگل کو ایک اسکول ٹیچر کا گولی مار کر قتل کر دیا گیا۔ کالعدم لشکر طیبہ گروپ کی سایہ دار تنظیم مزاحمتی محاذ نے جمعرات کے حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

     

    یہ بھی پڑھئے : جموں وکشمیرمیں ٹارگیٹ کلنگ: وزیرداخلہ امت شاہ نےکی دہلی میں ہائی لیول میٹنگ


    وہیں ان دہشت گردوں نے جمعرات کی رات ضلع بڈگام میں دو غیر کشمیری مزدوروں کو گولی مار دی۔ ادھر بڈگام کے چاڈورہ علاقے میں اینٹوں کے بھٹے پر کام کرنے والے دو بیرونی مزدوروں کو گولی مار دی۔ انہیں علاج کے لیے قریبی طبی مرکز میں منتقل کیا گیا ، جہاں ان میں سے ایک نے دم توڑ دیا۔ پولیس کے مطابق ٹارگٹ کلنگ کا سلسلہ اس سال مئی میں شروع ہوا تھا ، جس میں راہل بھٹ بھی شامل تھا، جسے بڈگام ضلع کی چاڈورہ تحصیل میں تحصیلدار کے دفتر کے اندر گولی مار کر ہلاک کر دیا گیا تھا۔

    یکم مئی سے کشمیر میں ٹارگٹ کلنگ کے آٹھ واقعات میں سے تین متاثرین آف ڈیوٹی پولیس اہلکار اور پانچ عام شہری تھے۔ تاہم سیکورٹی فورسز بھی اس گروپ کو بے نقاب کرنے میں جٹ گئے ہیں اور جلد ہی اس گروپ کو بے نقاب کیا جائے گا ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: