உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر: پلوامہ میں پولیس کی کارروائی، اغوا کیس کو 24 گھنٹے کے اندر حل کردیا گیا

    جموں وکشمیر: پلوامہ میں پولیس کی کارروائی، اغوا کیس کو 24 گھنٹے کے اندر حل کردیا گیا

    جموں وکشمیر: پلوامہ میں پولیس کی کارروائی، اغوا کیس کو 24 گھنٹے کے اندر حل کردیا گیا

    جموں وکشمیر کے پلوامہ ضلع میں پولیس نے 24 گھنٹے کے اندر اغوا کیس کو حل کرکے اغوا شدہ لڈکی کو بازیاب کیا ہے۔ اس سلسلے میں ایف آئی آر نمبر 38/22 U/S 366 آئی پی سی تھانہ لیتر میں درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئی۔

    • Share this:
    پلوامہ: جموں وکشمیر کے پلوامہ ضلع میں پولیس نے 24 گھنٹے کے اندر اغوا کیس کو حل کرکے اغوا شدہ لڈکی کو بازیاب کیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق، جموں وکشمیر پولیس کے لاسی پورہ پولیس پوسٹ کو ضلع پلوامہ کے زاسو علاقے کے رہنے والے نظیر احمد موچی کی طرف سے سہیل احمد وانی ولد محمد سلطان کی طرف سے اپنی 22 سال کی بیٹی (نام ظاہر نہیں کیا گیا) کے اغوا کے حوالے سے تحریری شکایت موصول ہوئی۔

    اس سلسلے میں ایف آئی آر نمبر 38/22 U/S 366 آئی پی سی تھانہ لیتر میں درج کرکے تفتیش شروع کر دی گئی۔ اس حوالے سے جموں وکشمیر پولیس کے ضلع ہیڈکواٹر پلوامہ سے پریس ریلیز جاری کردیا گیا ہے، جس میں کہا گیا ہے کہ مغوی لڑکی کی تلاش کے لئے خصوصی پولیس ٹیم تشکیل دی گئی۔

    یہ بھی پڑھیں۔

    جموں وکشمیر: کولگام انکاونٹر میں لشکر طیبہ سے وابستہ دہشت گرد سمیت دو ہلاک

    تفتیش کے دوران پولیس کی خصوصی ٹیم نے برق رفتاری سے کام کرتے ہوئے مغوی لڑکی کی تلاش کے لئے مختلف مشتبہ مقامات پر چھاپے مارے۔ تلاشی کاروائی انجام دی گئی۔ پولیس ٹیم نے سخت کوششوں کے بعد مغوی لڑکی کو ٹہاب پلوامہ سے بازیاب کرایا اور ملزم کو بھی گرفتار کرلیا گیا۔ تمام طبی قانونی تقاضے پورے کرنے کے بعد مغوی کو قانونی ورثاء کے حوالے کر دیا گیا۔

    جموں وکشمیر پولیس کی اس کارروائی کی عوامی سطع پر جہاں کافی سراہنا کی گئی۔ وہیں مقامی لوگوں نے پولیس سے اپیل کی ہے کہ ایسے جرائم میں ملوث افراد کے خلاف سخت کارروائی انجام دی جائے۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: