உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر میں نے دو جونئیر انجینئیر و ایک انسپکٹر کو 2لاکھ 60 ہزار روپیے رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑا

    مقامی لوگوں نے رشوت کے خلاف اے سی بی کی کاروائی کی ستائش کی۔بتایا جاتاہے کہ کنزر میں ایک نجی فیکٹری کے مالک کو ان ملازمین نے بجلی ٹرانسفارمر اور تار دینے کے عوض اتنی رقم مانگی تھی جس پر مزکورہ شخص نے اے سی بی کو مطلع کیا اور بعد میں یہ کارروائی انجام عمل میں آئی۔

    مقامی لوگوں نے رشوت کے خلاف اے سی بی کی کاروائی کی ستائش کی۔بتایا جاتاہے کہ کنزر میں ایک نجی فیکٹری کے مالک کو ان ملازمین نے بجلی ٹرانسفارمر اور تار دینے کے عوض اتنی رقم مانگی تھی جس پر مزکورہ شخص نے اے سی بی کو مطلع کیا اور بعد میں یہ کارروائی انجام عمل میں آئی۔

    مقامی لوگوں نے رشوت کے خلاف اے سی بی کی کاروائی کی ستائش کی۔بتایا جاتاہے کہ کنزر میں ایک نجی فیکٹری کے مالک کو ان ملازمین نے بجلی ٹرانسفارمر اور تار دینے کے عوض اتنی رقم مانگی تھی جس پر مزکورہ شخص نے اے سی بی کو مطلع کیا اور بعد میں یہ کارروائی انجام عمل میں آئی۔

    • Share this:
    جموں وکشمیر میں اینٹی کرپشن  بیورو نے رشوت ستانی کے خلاف شکنجا کس لیا۔ گزشتہ کئی ہفتوں سے وادی کشمیر کے مختلف علاقوں میں چھاپہ مار کاروائیوں میں کئی افسران اور دیگر ملازمین کو رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑ لیاہے۔ یہ کاروائی جاری ہے۔ آج تیرہ اپریل دوہزار بائیس کواینٹی کرپشن بیورو کے افسران نے شمالی کشمیر کے ٹنگمرگ میں واقع  محکمہ بجلی کے دفتر پر چھاپہ مارا جس کے دوران دو جونئیر انجینئیر اور ایک انسپکٹر کو رشوت لیتے ہوئے رنگے ہاتھوں پکڑ لیا گیا۔

    اے سی بی نے ان تینوں ملازمین کو دولاکھ ساٹھ ہزار روپئے لیتے ہوئے موقع پر ہی دبوچ لیا گیا۔بعد میں اے سی بی نے تینوں کو اپنے ساتھ لیا۔ مقامی لوگوں نے رشوت کے خلاف اے سی بی کی کاروائی کی ستائش کی۔بتایا جاتاہے کہ کنزر میں ایک نجی فیکٹری کے مالک کو ان ملازمین نے بجلی ٹرانسفارمر اور تار دینے کے عوض اتنی رقم مانگی تھی جس پر مزکورہ شخص نے اے سی بی کو مطلع کیا اور بعد میں یہ کارروائی انجام عمل میں آئی۔

    ٹنگمرگ بلاک کے بلاک ڈیولپمنٹ کونسل کے چیئرمین عبدالغنی نے نیوز18اردو کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ یہ انتظامیہ کی طرف سے رشوت ستانی کے خلاف ایک اچھا قدم ہے تاکہ وادی کشمیر رشوت سے صاف وپاک ہوجائے۔ ایک اور مقامی نظیر احمد نے بتایا کہ یہ سلسلہ ہمیشہ کے لیے جاری رہنا چاہیے تاکہ دفاتر میں بغیر رشوت کے کام ہوسکے۔

    کشمیر میں کئی اسکولی بچے بیمار، موسمی Flu سے بیماری لیکن کووڈ کا بھی ہے کنکشن


    واضح رہے کہ کئی ہفتے پہلے بھی اے سی بی نے کنزر میں تحصیل آفس سے ایک ملازم کو رشوت لیتے ہوئے پکڑا وہی پٹن کے ہاگرپورہ اور سنگھ پورہ میں بھی ملازمین کورشوت لیتے ہوئے گرفتار کیاگیا۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: