உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jammu and Kashmir: کورونا کے کیسز میں زبردست اضافہ، پھر سے ماسک پہننے کے احکامات جاری

    جموں وکشمیر میں روزانہ کورونا وائرس کے مثبت معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ آج یعنی 19 جولائی کو جاری کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق 19 جولائی کو 333 کورونا کے مثبت معاملات درج کئے گئے، جو پچھلے پانچ ماہ میں سب سے بڑا اضافہ ہے۔

    جموں وکشمیر میں روزانہ کورونا وائرس کے مثبت معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ آج یعنی 19 جولائی کو جاری کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق 19 جولائی کو 333 کورونا کے مثبت معاملات درج کئے گئے، جو پچھلے پانچ ماہ میں سب سے بڑا اضافہ ہے۔

    جموں وکشمیر میں روزانہ کورونا وائرس کے مثبت معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ آج یعنی 19 جولائی کو جاری کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق 19 جولائی کو 333 کورونا کے مثبت معاملات درج کئے گئے، جو پچھلے پانچ ماہ میں سب سے بڑا اضافہ ہے۔

    • Share this:
    سری نگر: جموں وکشمیر میں روزانہ کورونا وائرس کے مثبت معاملے تیزی سے بڑھ رہے ہیں۔ آج یعنی 19 جولائی کو جاری کئے گئے اعداد و شمار کے مطابق 19 جولائی کو 333 کورونا کے مثبت معاملات درج کئے گئے، جو پچھلے پانچ ماہ میں سب سے بڑا اضافہ ہے۔ کووڈ معاملوں میں اضافہ کے مدنظر ضلع انتظامیہ سری نگر نے تمام عوامی مقامات پر ماسک پہننا لازمی کردیا۔ سری نگر کے ساتھ ساتھ گاندربل، رامبن اور دیگر کچھ اضلاع میں بھی کووڈ قواعد و ضوابط پرسختی سے عمل کرنے کی ہدایات کرنے کے احکامات جاری کردیئے۔

    آج جاری کئے گئے کووڈ بلیٹن کے مطابق 333 کووڈ پازیٹیو کیسز میں 187  جموں صوبہ اور 146 کشمیر وادی میں پائے گئے ہیں۔ جموں ضلع میں سب سے زیادہ 137 اور سری نگر میں 95 نئے کووڈ کیس درج کئے گئے ہیں۔ڈائریکٹر ہیلتھ سروسز سری نگر مشتاق احمد راتھر نے عوام سے اپیل کی ہےکہ وہ کووڈ ضابطہ اخلاق پر عمل کریں۔

    یہ بھی پڑھیں۔

    Exclusive: پاکستان نے ‘مشن کشمیر‘ کے لئے پھر بنایا دہشت گرد گروپ، ریٹائر ISI آفیسر کا انکشاف

    معروف ماہر امراض سینہ پروفیسر نوید نذیر کا کہنا ہے کہ چسٹ ڈیزیزس اسپتال سری نگر میں پچھلے مہینے کے آخر تک کووڈ مریض برائے نام رہ گئے تھے، لیکن آج 12 مریض زیر علاج ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ پریشان ہونے کی کوئی بات نہیں ہے، لیکن عوام کو انفیکشن روکنے کے لئے کووڈ ضابطہ اخلاق پر عمل کرنا چاہئے۔ ڈایریکٹر ہیلتھ سروسز کشمیر مشتاق احمد راتھر کا کہنا ہے کہ انھوں نے تمام ضلع سطح کے افسران کو ہدایت دی ہے کہ کووڈ مریضوں کے لئے کم از کم 15 بستر مخصوص رکھیں۔

    انھوں نے کہا کہ لیکن بہت ہی کم کووڈ مثبت مریضوں کو اسپتال میں داخل ہونے کی ضرورت پڑتی ہے، لیکن احتیاط برتنا بہت ضروری ہے۔ جموں کشمیر میں فروری کے دوسرے ہفتے سے کووڈ مثبت معاملے کافی کم ہوگئے تھے، لیکن جون کے اخیر میں بتدریج کووڈ مثبت معاملے بڑھنے لگے۔ جولائی کے پہلے اور دوسرے ہفتے کا موازنہ کریں تو کووڈ معاملوں میں ڈیڑھ گُنا اضافہ ہوا ہے۔ جون کے مقابلے میں جولائی میں کووڈ کیس آٹھ گُنا کے قریب بڑھ گئے ہیں۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: