ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر گورنر کے مشیر کی پاکستان کو وارننگ ، عقل سے نہیں لیا کام تو سکھادیں گے سبق

جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق احمد خان نے کہا کہ ہم اپنے پڑوسی ملک کو کہنا چاہتے ہیں کہ ابھی عقل سے کام لو۔ اس وقت پوری دنیا میں انسانیت کے دشمن کے خلاف لڑائی چل رہی ہے ۔

  • UNI
  • Last Updated: Apr 17, 2020 07:13 PM IST
  • Share this:
جموں و کشمیر گورنر کے مشیر کی پاکستان کو وارننگ ، عقل سے نہیں لیا کام تو سکھادیں گے سبق
فائل فوٹو

جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق احمد خان نے کہا کہ پاکستان کو عقل سے کام لیتے ہوئے سرحدوں پر گولہ باری بند کرنی چاہیے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان نے جب بھی سرحدیں گرم کی ہیں ، اسے منہ کی کھانی پڑی ہے ۔ مشیر موصوف نے یہ باتیں جمعرات کو ضلع پونچھ میں نامہ نگاروں کی جانب سے سرحدوں پر گولہ باری کے نہ تھمنے والے سلسلے کے متعلق ایک سوال کے جواب میں کہیں ۔


انہوں نے کہا کہ ہم اپنے پڑوسی ملک کو کہنا چاہتے ہیں کہ ابھی عقل سے کام لو۔ اس وقت پوری دنیا میں انسانیت کے دشمن کے خلاف لڑائی چل رہی ہے ۔ اس لڑائی کی طرف دھیان دو ۔ اپنے لوگوں کی طرف دھیان دو ۔ سرحد کو گرم کرکے اپنے لوگوں کا دھیان اصلیت سے مت ہٹائو ۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ پاکستان نے سرحد کو جب بھی گرم کیا ہے ، اس کو منہ کی کھانی پڑی ہے اور آئندہ اگر ضرورت پڑی تو ایسا ہی ہوگا ۔


قابل ذکر ہے کہ کورونا وائرس کے قہر کے درمیان ہندوستان اور پاکستان کی افواج کے درمیان سرحد پر آئے روز گولہ باری کے تبادلے نے سرحدی لوگوں کا جینا مشکل کر دیا ہے ۔ سرحدی لوگوں نے دونوں ممالک کے حکمرانوں سے آپسی مسائل بات چیت کے ذریعے حل کرکے گولہ باری کے تبادلے کے سلسلہ بند کرنے کی اپیل کی ہے ۔ قابل ذکر ہے کہ طرفین کے درمیان سال 2003 میں جنگ بندی معاہدی طے ہوا تھا ، لیکن وہ کاغذوں تک ہی محدود ہوکر رہ گیا ہے ۔


کشتواڑ میں تصادم ، 2 دہشت گرد ہلاک

ادھر جموں وکشمیر پولیس نے ضلع کشتواڑ کے دچھن علاقے میں چار دن قبل دو اسپیشل پولیس افسرس (ایس پی اووز) پر تیز دھار والے ہتھیاروں سے حملہ کرنے والے دو مقامی دہشت گردوں کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ آئی جی پولیس جموں کے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل پر ایک ٹوئٹ میں کہا گیا کہ کشتواڑ کے ایک دور افتادہ علاقہ دچھن میں دہشت گردوں کے چھپنے کی اطلاع ملنے پر فوج، سی آر پی ایف اور پولیس کی ایک ٹیم علاقے میں تعینات تھی ، جس دوران طرفین کے درمیان تصادم آرائی ہوئی جس میں دو دہشت گرد ہلاک اور ان کی تحویل سے دو ہتھیار بھی بر آمد کئے گئے ۔

سرکاری ذرائع نے بتایا کہ مہلوکین وہی دو افراد ہیں جنہوں نے ماہ رواں کی 13 تاریخ کو دچھن علاقے میں جموں و کشمیر پولیس کے دو ایس پی اوز پر تیز دھار والے ہتھیاروں سے حملہ کرکے ایک کو شہید اور دوسرے کو زخمی کردیا تھا اور ان سے دو بندوق چھین لئے تھے ۔ شہید ایس پی او کی شناخت باسط اقبال جبکہ زخمی کی شناخت وشال سنگھ کے طور پر ہوئی تھی ۔
First published: Apr 17, 2020 07:13 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading