ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

World Happiness Day: خوش رہنا ہر انسان کی بہتر اور کامیاب زندگی گزارنے کا واحد ذریعہ ہے

ماہرین کے مطابق کچھ چیزیں ایسی ہیں جو ہمیں خوشی کا احساس دلاتی ہیں۔ نفسیاتی ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ اسپتالوں میں زیادہ تر مریض نفسیاتی بیماریوں اور ذہنی دباؤ کے شکار ہوتے ہیں ۔ یہ دیکھتے ہوئے اسپتالوں میں ایسے مریضوں کو ذہنی دباؤ سے نکالنے کے لئے کونسلنگ سینٹر قائم کئے جاچکے ہیں

  • Share this:
World Happiness Day: خوش رہنا ہر انسان کی بہتر اور کامیاب زندگی گزارنے کا واحد ذریعہ ہے
ماہرین کے مطابق کچھ چیزیں ایسی ہیں جو ہمیں خوشی کا احساس دلاتی ہیں۔

دنیا بھر میں آج خوشیوں کا عالمی دن (International Day of happiness) منایا جاتا ہے۔خوش رہنا ہر انسان کی بہتر اور کامیاب زندگی گزارنے کا واحد ذریعہ ۔خوشی آج کل کے دور میں ایک نایاب شے بن چکی ہے۔ کشمیر میں کثیر تعداد میں لوگ ذہنی تناؤ کےشکار پائے جاتےہیں۔ آ ج کے دن جگہ جگہ خوشیوں سے متعلق تقاریب منعقد ہوتی ہیں ۔ خوش World Happiness Day رہنا ہر انسان کی بہتر اور کامیاب زندگی گزارنے کا واحد ذریعہ ہے تاہم آج کے دور میں زیادہ تر لوگ ذہنی دباؤ کے شکار نظر آتے ہیں ۔خوشی اور خوش رہنا انسان کا بنیادی مقصد ہے۔ تاہم خوشی آج کل کے دور میں ایک نایاب شے بن چکی ہے۔ ہرطرف مسئلے مسائل، پریشانیاں خوش ہونے کا موقع ہی نہیں دیتے۔ جب ہم ناخوش ہوتے ہیں تو اس کا اثر ہماری زندگی اور تعلقات پر بھی پڑتا ہے۔ یہ ہماری صلاحیتوں، ہمارے کام کرنے کے جذبہ پر بھی اثر انداز ہوتی ہے۔

ماہرین کے مطابق کچھ چیزیں ایسی ہیں جو ہمیں خوشی کا احساس دلاتی ہیں۔ نفسیاتی ڈاکٹروں کا کہنا ہے کہ اسپتالوں میں زیادہ تر مریض نفسیاتی بیماریوں اور ذہنی دباؤ کے شکار ہوتے ہیں ۔ یہ دیکھتے ہوئے اسپتالوں میں ایسے مریضوں کو ذہنی دباؤ سے نکالنے کے لئے کونسلنگ سینٹر قائم کئے جاچکے ہیں جہاں ان کی کوسلنگ کی جاتی ہے ۔کشمیر میں بھی کثیر تعداد میں لوگ ذہنی دباؤکے شکار ہوتےہیں۔


یہاں آئے روز ذہنی تناؤمیں شکار لوگ پائے جاتے ہیں۔ ماگام اسپتال میں حفصہ نامی سائیکیٹک کونسلر نے نیوز ایٹین اردوکوبتایاکہ اسپتال میں آئے روز ایسے مریض آتے ہیں جن میں جسمانی بیماریاں نہیں ہوتی ہے ان میں صرف ذہنی تناؤپایا جاتاہے۔ ذہنی تناؤکی وجہ سے وہ جسمانی بیماریوں کے شک میں مبتلارہتے ہیں۔


انہوں نے بتایا کہ یہ دیکھتے ہوئے وہ انہیں مختلف طریقوں سے اس ذہنی دباؤسے نکالنے کی کوشش کرتےہیں۔نفسیاتی ماہر ڈاکٹرشوکت نے نیوز 18اردوکوبتایا کہ خوش رہنے کے بھی کچھ اچھے اور اہم طریقے ہیں انہوں نے بتایا کہ خوشگوار زندگی گزارنے میں سب سے پہلے شکر گزاری سے کام لیں، رات کو نیند اچھے سے پوری کریں، اپنے دماغ کو کسی بھی دباؤ سے پاک کریں، صرف ان لوگوں کے ساتھ تعلق رکھیں جو آپ کو پسند ہوں اور سوشل میڈیا سے کچھ وقت کے لیے قطع تعلق کرلیں۔ اپنے دوستوں اور گھروالوں کے ساتھ زیادہ وقت بِتائیں۔


ڈاکٹر شوکت نے مزید بتایا کہ نفسیاتی ڈاکٹرس ذہنی دباؤ کے شکار ہوئے مریضوں کو اس دباؤ سے نکالنے کےلئےمختلف طرح کی مشق کرواتے ہیں ۔خوشی حاصل کرنے کے لئے ہمیں اپنے ساتھ ساتھ معاشرے کی خوشیوں کا بھی خیال رکھنا چاہیے خوش رہنے کے لئے مثبت سوچ اور مثبت لوگوں کے اردگرد ررہنا چاہے۔اچھی بات یہ ہے کہ ہم خوشی کو پیدا بھی کر سکتے ہیں۔
Published by: Sana Naeem
First published: Mar 20, 2021 09:42 PM IST