ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر کے کاروباریوں کو بڑی راحت ، 1350 کروڑ روپے کے مالی پیکج کا اعلان

جموں و کشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اس یونین ٹریٹری کی تباہ حال معیشت کی بحالی کے لئے 1350 کروڑ روپے کے مالی پیکیج کا اعلان کر دیا ہے ۔

  • UNI
  • Last Updated: Sep 19, 2020 05:51 PM IST
  • Share this:
جموں و کشمیر کے کاروباریوں کو بڑی راحت ، 1350 کروڑ روپے کے مالی پیکج کا اعلان
جموں و کشمیر کے کاروباریوں کو بڑی راحت ، 1350 کروڑ روپے کے مالی پیکج کا اعلان

جموں و کشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اس یونین ٹریٹری کی تباہ حال معیشت کی بحالی کے لئے 1350 کروڑ روپے کے مالی پیکیج کا اعلان کر دیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ آج جو ہم یہ اعلان کر رہے ہیں ، اس پر مقررہ وقت کے اندر عمل درآمد ہونے کو یقینی بنایا جائے گا ۔ انہوں نے کہا کہ آتم نربھر بھارت ابھیان کے تحت جموں و کشمیر کے لئے جلد اس سے بھی بڑا اعلان ہونے والا ہے ۔ انہوں نے ان باتوں کا اظہار ہفتے کو راج بھون میں منعقدہ ایک پریس کانفرنس سے خطاب کے دوران کیا ، جس کا انہوں نے آغاز بھی اردو زبان کے ایک شعر سے کیا اور اختتام بھی اردو زبان کے ایک شعر سے ہی کیا ۔


انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر میں بلا کسی تفریق کے تجارتی شعبہ سے وابستہ تمام قرض داروں کو چھ ماہ تک سود میں 5 فیصد سبونشن دی جائے گی ، جس پر 950 کروڑ روپے خرچ ہوں گے اور اس سے لاکھوں بے روزگاروں کو روز گار بھی ملے گا ۔ منوج سنہا نے کہا کہ یونین ٹریٹری میں ایک سال کے لئے بجلی اور پانی کی بلوں میں 50 فیصد رعایت دی جائے گی۔


تاہم بعد ازاں یو ٹی انتظامیہ کے ترجمان روہت کنسل نے اس بارے میں وضاحت پیش کرتے ہوئے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا کہ یہ پچاس فیصد رعایت بجلی بلوں پر نہیں بلکہ صنعتی و کمرشیل صارفوں کے فکسڈ ڈیمانڈ چارجز پر دی گئی ہے ۔ انہوں نے ٹویٹ میں کہا کہ آج کے پیکیج میں جو بجلی اور پانی کی بلوں پر پچاس فیصد رعایت کا اعلان ہوا وہ دراصل صنعتی و کمرشل صارفین کے فکسڈ ڈیمانڈ چارجز پر پچاس فیصد رعایت ہے ۔ یہ بجلی بلوں پر رعایت نہیں ہے ۔


لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ انتظامیہ مشکلات سے دوچار ٹرانسپورٹروں، ہاؤس بوٹ مالکان، شکارہ والوں وغیرہ کی مالی مدد کے لئے ایک منظم میکانزم تیار کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کورونا کی وجہ سے مشکلات میں پھنسے ڈرائیوروں، آٹو ڈرائیوروں، ٹیکسی ڈرائیوروں، شکارہ والوں، ہاؤس بوٹ مالکان، ٹورسٹ گائیڈس، گھوڑے والوں وغیرہ کی مالی معاونت کے لئے ایک منظم میکانزم بنایا جا رہا ہے ۔ منوج سنہا نے کہا کہ جموں و کشمیر بینک شعبہ سیاحت سے وابستہ لوگوں کی مالی مدد کے لئے 'کسٹمائزڈ ہیلپ ٹورزم اسکیم بھی متعارف کرے گا۔

انہوں نے کہا دستکاروں کے کریڈٹ کارڈ کی حد کو ایک لاکھ روپے سے بڑھا کر دو لاکھ روپے کیا جائے گا اور انہیں بھی سود میں 7 فیصد رعایت دی جائے گی ۔ تاکہ دنیا میں مشہور کشمیری دستکاری کو مزید فروغ مل سکے۔ انہوں نے کہا کہ ایک لینڈ بینک بھی بنایا جا رہا ہے ، جس کی فوڈ پارک کے لئے اراضی بھی فراہم کی جائے گی اور مدد بھی کی جائے گی ۔ انہوں نے کہا کہ جموں و کشمیر بینک یکم اکتوبر سے یوتھ اور وومن انٹرپرائزرز کے لئے ایک اسپیشل ڈیسک کا قیام عمل میں لائے گا ، جس کے تحت ان کی پوری مدد کی جائے گی۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Sep 19, 2020 05:51 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading