ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر : اننت ناگ میں کشمیری پنڈت سرپنچ کا دہشت گردوں نے گولی مار کر کیا قتل ، سیکورٹی فورسیز نے علاقہ کو گھیرا

اجے بھارتی کے مسلمان پڑوسی اور دوست انہیں مضبوط معاشرتی تعلقات اور دور اندیشی کے ساتھ اصولوں کا مالک قرار دیتے ہیں ۔ متعدد پنڈت تنظیموں ، سماجی سیاسی شخصیات نے بھارتی کے قتل کی مذمت کی ہے ۔

  • Share this:
جموں و کشمیر : اننت ناگ میں کشمیری پنڈت سرپنچ کا دہشت گردوں نے گولی مار کر کیا قتل ، سیکورٹی فورسیز نے علاقہ کو گھیرا
پاکستانی فوج نے کی جنگ بندی کی خلاف ورزی، ایل او سی پر گولہ باری

اننت ناگ : جنوبی کشمیر میں اننت ناگ کے  لوک بھون لارکی پورہ میں مسلح ملیٹینٹوں نے ایک کشمیری پنڈت سرپنچ کو ہلاک کردیا ۔ سرپنچ کی شناخت اجے پنڈتا بھارتی کے طور پر ہوئی ہے۔ تفصیلات کے مطابق سرپنچ اجے پنڈتا بھارتی پر مسلح ملیٹینٹوں نے ان کے گھر کے قریب ایک پوائنٹ بلینک رینج سے فائرنگ کی ، جس کی وجہ سے وہ شدید طور پر زخمی ہو گئے۔ انہیں اسپتال منتقل کیا گیا ، لیکن ڈاکٹروں نے انہیں مردہ قرار دیا ۔ ادھر سکیورٹی فورسز نے پورے علاقے کو گھیرے میں لے لیا ہے اور ملی ٹینٹوں کو گرفتار کرنے کیلئے ایک آپریشن شروع کردیا ہے۔


اجے بھارتی ایک کشمیری پنڈت تھے ، جو کچھ سال قبل کشمیری پنڈتوں کی بڑے پیمانے پر نقل مکانی کے بعد وادی واپس آئے تھے اور سال 2000 کے بعد صورتحال میں بہتری کے ساتھ  وہ ان پہلے چند پنڈتوں میں شامل تھے ، جنھوں نے جنوبی کشمیر میں اپنے ہی گاؤں میں رہائشی مکان تعمیر کرایا تھا ۔ بھارتی ان کشمیری پنڈتوں میں شامل تھے ، جنھوں نے وادی میں کشمیری پنڈتوں کی بازآبادکاری کے عمل میں پہل کی تھی اور دو فرقوں کے مابین پائے جانے والے فرق کو ختم کرنے کے لئے اجے بھارتی نے اہم کردار ادا کیا ۔


اجے بھارتی ایک کشمیری پنڈت تھے ، جو کچھ سال قبل کشمیری پنڈتوں کی بڑے پیمانے پر نقل مکانی کے بعد وادی واپس آئے تھے ۔
اجے بھارتی ایک کشمیری پنڈت تھے ، جو کچھ سال قبل کشمیری پنڈتوں کی بڑے پیمانے پر نقل مکانی کے بعد وادی واپس آئے تھے ۔


بھارتی کے مسلمان پڑوسی اور دوست انہیں مضبوط معاشرتی تعلقات اور دور اندیشی کے ساتھ اصولوں کا مالک قرار دیتے ہیں ۔ متعدد پنڈت تنظیموں ، سماجی سیاسی شخصیات نے بھارتی کے قتل کی مذمت کی ہے ۔ سابق وزیر اعلی عمر عبداللہ نے اس حملہ کو دہشت گردوں کی طرف سے بزدلانہ کارروائی قرار دیا اور بھارتی کے اہل خانہ اور سکون روح کی دعا کی ہے ۔ جے کے پی سی سی کے صدر جی اے میر نے اجے بھارتی کے قتل پر گہرے غم و غصے کا اظہار کیا اور اجے بھارتی کو فراہم کردہ سیکیورٹی پر سوالات اٹھائے ۔ میر نے واقعہ کی اعلی سطحی تحقیقات کا مطالبہ کیا اور کہا کہ مجرموں کو انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے ۔

بھارتیہ جنتا پارٹی کے قومی ایگزیکٹو ممبر اور سابق ایم ایل سی صوفی محمد یوسف نے اجے بھارتی کے قتل کو دہشت گردوں کی بزدلانہ کارروائی قرار دیا ۔ صوفی نے ایک بیان میں کہا کہ اس واقعہ سے کشمیر میں امن عمل میں کوئی رکاوٹ نہیں آئے گی اور حکومت کو جلد از جلد مجرموں کو انصاف کے کٹہرے میں لانا چاہئے ۔

اسی دوران سکیورٹی فورسز نے اجے بھارتی کے قتل میں ملوث ملی ٹینٹوں کی گرفتاری کے لئے ایک بڑے آپریشن کا آغاز کیا ہے ۔ پولیس نے اس سلسلے میں ایک مقدمہ درج کرلیا ہے اور ذرائع کے مطابق پولیس کو سرپنچ کے قتل میں ملوث ملی ٹینٹوں کے بارے میں ایک اہم سراغ مل گیا ہے ۔

 
First published: Jun 08, 2020 09:04 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading