உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں و کشمیر : سرینگر میں ڈل جھیل کے پاس 13 سال کے بعد ہندوستانی فضائیہ نے کیا ائیر شو کا اہتمام

    جموں و کشمیر : سرینگر میں ڈل جھیل کے پاس 13 سال کے بعد ہندوستانی فضائیہ نے کیا ائیر شو کا اہتمام

    جموں و کشمیر : سرینگر میں ڈل جھیل کے پاس 13 سال کے بعد ہندوستانی فضائیہ نے کیا ائیر شو کا اہتمام

    Jammu and Kashmir News : جموں و کشمیر کے لیفٹینٹ گورنر منوج سنہا اس تقریب کے مہمان خصوصی تھے۔ ایئر افسر کمانڈنگ ان چیف ہیڈکوارٹر ویسٹرن ایئر کمانڈ ایئر مارشل بی آر کرشنا تقریب کے میزبان تھے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Share this:
    سری نگر : آزادی کا امرت مہوتسو کے سلسلے میں جاری تقریبات کے ایک حصے کے طورپر ایئر فورس اسٹیشن سرینگر نے چھبیس ستمبرکو سری نگر کی ڈل جھیل پر ایک ایئر شو کا اہتمام کیا ۔ جموں و کشمیر کے لیفٹینٹ گورنر منوج سنہا اس تقریب کے مہمان خصوصی تھے۔  ایئر افسر کمانڈنگ ان چیف ہیڈکوارٹر ویسٹرن ایئر کمانڈ ایئر مارشل بی آر کرشنا تقریب کے میزبان تھے۔ منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے لیفٹیننٹ گورنر نے آئی اے ایف کے جوانوں کی جرات اور بہادری کو سلام پیش کیا اور ملک کی دفاع کرنے کے دوران ائیر فورسز جوانوں کی عظیم قربانیوں کو یاد کرتے ہوئے  فضائیہ کے ان شہداء کو خراج تحسین پیش کیا۔

    اس موقع پر لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ قوم کے نوجوانوں کو ہمارے ان  بہادر جوانوں سے حوصلہ لینا چاہئے اور اپنے سماجی ، اخلاقی فرائض کو بڑی ذمہ داری کے ساتھ ادا کرنا چاہئے اور قوم کی تعمیر وترقی کے لیے اپنے عزم کو دھرانا چاہئے ۔ انہوں نے جموں وکشمیر کے نوجوانوں پر زور دیا کہ وہ انڈین ایئر فورس میں شمولیت اختیار کریں تاکہ ان کے خوابوں کو حقیقی تعبیر مل سکے۔ لیفٹیننٹ گورنر نے نوجوان کو جدید ٹیکنالوجی میں بھی اپنی صلاحیتوں کو بروئے کار لانے پر زور دیا۔ انہوں نے اس میدان میں راہنمائی کی ترغیب دینے کی ضرورت پر بھی زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ سائنسی اور تکنیکی علم سے ترقی کی راہ پر آگے بڑھنے کے لیے کلیدی رول ادا کرسکتے  ہیں۔

    لیفٹیننٹ گورنر نےکہا کہ وزیر اعظم  نریندر مودی کی رہنمائی میں ہم ہندوستان کو علمی اور معاشی طور سے مضبوط کرنے اور اپنے نوجوانوں کو مستقبل کی دنیا کے چیلنجوں سے نمٹنے کے لیے تیار کر رہے ہیں ۔ لیفٹیننٹ گورنر نے مزید کہا کہ قوم پرستی ، امن اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی کا جذبہ پیدا کرنے کے علاوہ ، ایئر شو نے علاقے کے نوجوانوں کو ہندوستانی فضائیہ کی حاصل کردہ نئی تکنیکی ترقی سے بھی روشناس کرایا ہے۔ جموں و کشمیر کی سماجی و اقتصادی ترقی میں خواتین کے کردار کو ضروری قرار دیتے ہوئے لیفٹیننٹ گورنر نے کہا کہ خواتین کو بااختیار بنانے سے معاشرے میں انقلابی تبدیلیاں آئیں گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ تعلیم سے لے کر انٹرپرینیورشپ تک ، ہم ان کے لیے ایک ٹھوس پلیٹ فارم بنا رہے ہیں تاکہ وہ کامیابی کی نئی بلندیوں کو حاصل کریں۔ انہوں نے کہاکہ ہماری لڑکیاں ہر میدان میں مثالی بن کر آگے ہیں۔

    راجوری ضلع سے انڈین ایئر فورس میں پہلی خاتون فائٹر پائلٹ ماویا سودن ، اور راجوری سے طاہرہ رحمن جو کہ آئی اے ایف میں فلائنگ افسر کے طور پر منتخب ہوئی ہیں ، انہوں نے جموں و کشمیر کی دیگر نوجوان لڑکیوں کو ان کے نقش قدم پر چلنے کی تلقین کی۔ لیفٹیننٹ گورنر نے جموں و کشمیر کے نوجوانوں کو بھی مبارکباد دی جنہوں نے یو پی ایس سی امتحان دو ہزار بیس میں کامیابی حاصل کی ہے ۔اس موقع پر لیفٹیننٹ گورنر نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ ماحولیاتی چیلنجوں پر قابو پانے اور ماحولیاتی توازن کو برقرار رکھنے میں حکومت کی کوششوں کی تعمیل کریں جو کہ آزادی کا امرت مہواتسو کی بنیادی روح میں سے ایک ہے۔ لیفٹیننٹ گورنر اور دیگر شخصیات نے اس موقع پر منعقدہ آئی اے ایف کی فوٹو نمائش کا مشاہدہ بھی کیا۔ ائیر فورس میں شامل تمام فضائیہ کے جوانوں نے براہ راست مظاہرہ کرکے  تماشائیوں کو مسحور کیا۔

    اس ائیر شو کا آغاز پیرا موٹر پیراہینگ گلائیڈ مقابلے سے ہوا ۔ اس شو کے دوران ائیر فورس کے جنگی طیاروں کے ذریعہ سے مختلف کرتب دکھائے گئے۔ آئی اے ایف کی اسکائی ڈائیونگ ٹیم آکاش گنگا نے ڈل جھیل پر ایم آئی 17 ہیلی کاپٹر سے چھلانگ لگا کر حاضرین کو مسحور کیا۔  اس کے بعد ایس یو 30 ایم کے آئی نے بھی اپنے کرتب دکھائے ۔ تقریب  کی اہم توجہ 'سوریاکیرن اور ہندوستانی فضایہ کی ایروبیٹک ٹیم کی نمائش تھی۔ چینوک ہیوی لفٹ ہیلی کاپٹر کے ذریعے چلائے گئے ایئر شو کا اختتام ہوا۔

    پنڈال میں ایک تصویری نمائش نے کے ذریعہ آئی اے ایف کی تاریخ پر روشنی ڈالی گئی تھی ، جبکہ آئی اے ایف میں کیریئر کے مواقع کے بارے میں بھی آگاہی دی گئی۔ تقریب میں لگ بھگ دس ہزار افراد نے شرکت کی جن میں مقامی اسکولوں کے پانچ ہزار طالب علم شامل تھے۔ واضح رہے کہ سرینگر میں تیرہ سال کے وقفے کے بعد اس طرح کا ائیر شو منعقد کیا گیا۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: