உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں و کشمیر  : عارف محمد خان نے بیجنگ سرمائی اولمپکس 2022 کے لیے کیا کوالیفائی

    جموں و کشمیر  : عارف محمد خان نے بیجنگ سرمائی اولمپکس 2022 کے لیے کیا کوالیفائی

    جموں و کشمیر  : عارف محمد خان نے بیجنگ سرمائی اولمپکس 2022 کے لیے کیا کوالیفائی

    اکتیس سالہ عارف محمد خان نے دوہزار پانچ سے بین الاقوامی اسکیئنگ میں ہندوستان کی نمائندگی کرتے آئے ہیں ۔ اب تک ہندوستان کے لئے 122ریس کرچکے ہیں۔جن میں ایشین گیمز اور ساوتھ ایشین گیمز اور ورلڈ اسکیئی چمپئین شپ جیسے بڑے بڑے ٹورنامنٹ شامل ہیں۔

    • Share this:
    سری نگر : کشمیر کے الپائن اسکئیر عارف محمد خان نے بیجنگ میں منعقد ہونے والے آئندہ سرمائی اولمپکس 2022 کے لیے کوالیفائی کرلیا ہے ۔ عارف کا تعلق شمالی کشمیر ضلع بارہمولہ کے ٹنگمرگ کے حاجی بل سے ہے ۔ عارف ہندوستان کے واحد سکئی ریسر ہیں ، جنہوں نے بیجنگ سرمائی اولمپکس کے لیے کوالیفائی کیا ہے۔ عارف نے دبئی میں کوالیفائنگ الپائن اسکیئنگ ایونٹ کے دوران گیمز میں جگہ حاصل کی۔ عارف کی کامیابی پر ملک بھر کی مختلف شخصیات نے انہیں مبارکباد پیش کی۔ جموں وکشمیر کے لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے اپنے ٹویٹ کے ذریعے عارف کو مبارکباد پیش کی۔ انہوں نے لکھا ہے کہ یہ پورے ملک کے لئے قابل فخر لمحہ ہے کہ عارف اولمپکس کے لئے منتخب ہوئے۔

    گونر کے مشیر فاروق احمد خان نے بھی عارف خان جو مبارکباد پیش کی۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ بیجنگ سرمائی اولمپکس میں ان کی کارکردگی تمغہ جیتنے والی ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ تربیت اور کوچنگ کی سہولیات کے ساتھ عالمی معیار کے کھیلوں کے انفراسٹرکچر کی تشکیل کے نتائج سامنے آنا شروع ہو گئے ہیں اور زیادہ سے زیادہ کھلاڑی قومی اور بین الاقوامی کھیلوں کے مقابلوں کے لیے منتخب ہو رہے ہیں۔

    اکتیس سالہ عارف محمد خان نے دوہزار پانچ سے بین الاقوامی اسکیئنگ میں ہندوستان کی نمائندگی کرتے آئے ہیں ۔ اب تک ہندوستان کے لئے 122ریس کرچکے ہیں۔جن میں ایشین گیمز اور ساوتھ ایشین گیمز اور ورلڈ اسکیئی چمپئین شپ جیسے بڑے بڑے ٹورنامنٹ شامل ہیں۔ عارف نے بین الاقوامی سطح کے ٹورنامنٹس میں ہندوستان کی نمائندگی کی۔ عارف کی تمنا تھی کہ وہ ایک بار اولمپک میں ہندوستان کی نمائندگی کرکے ملک کا نام روشن کرسکیں۔آج عارف کا وہ خواب شرمندہ تعبیر ہوا اور 2022میں بیجنگ میں ہونے والے اولمپکس میں ملک کی نمائندگی کریں گے۔

    جنوری 2018 میں عارف خان ونٹر اولمپکس کے لئے کوالیفائی نہیں کرپائے۔ اولمپکس میں اسکیئنگ کے لئے کوالیفائی کرنے کے لیے پانچ ریس کوالیفائی کرنی ہوتی ہے ، یہ پانچوں ریسں دنیا کے الگ الگ حصوں میں ہوتی ہے۔ دوہزار اٹھارہ میں عارف نے چار ریس کوالیفائی کی تھی ، لیکن سوئٹزر لینڈ والی پانچویں ریسں میں نہیں جاپائے ۔ اس کی وجہ یہ تھی کہ عارف کے پاس سوئٹزر لینڈ جانے کے لیے پیسے نہیں تھے۔عارف کے والد بھی ایک اچھے اسکیئنگ کرتے ہیں ۔ عارف کے مطابق ان کے والد کو کہا گیا کہ امریکہ میں انہیں وہاں کی شہریت دی جائے اور امریکہ میں ایک اسکیئنگ کلب بنائیں لیکن عارف کے والد نے اپنی سرزمین یعنی عالمی شہرت یافتہ گلمرگ پر ہی رہنے کو ترجیح دی۔

    عارف کی اس کامیابی پر پورے کشمیر بلکہ ملک بھر میں خوشی کی لہر دوڑ گئی۔ ہرطرف سوشل میڈیا پر عارف کو مبارکبادی کے پیغامات موصول ہورہے ہیں۔ نیوز18اردو کی بھی دعا ہے کہ بیجنگ میں 2022 میں ہونے والے اولمپکس میں وہ میڈل حاصل کرکے ملک کا نام روشن کرے۔ واضح رہے کہ بیجنگ سرمائی اولمپکس 2022 کا انعقاد 4 سے 20 فروری تک ہونا ہے۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: