ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات کو لے کر عمر عبد اللہ کا بڑا دعوی ، کہی یہ بات

نیشنل کانفرنس کے نائب صدر و سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے کہا کہ جموں و کشمیر میں اگلے ایک یا دو برس میں اسمبلی کے انتخابات ہونے کے کوئی امکانات نہیں ہیں ۔

  • UNI
  • Last Updated: Nov 08, 2020 09:56 PM IST
  • Share this:
جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات کو لے کر عمر عبد اللہ کا بڑا دعوی ، کہی یہ بات
جموں و کشمیر میں اسمبلی انتخابات کو لے کر عمر عبد اللہ کا بڑا دعوی ، کہی یہ بات

نیشنل کانفرنس کے نائب صدر و سابق وزیر اعلیٰ عمر عبداللہ نے کہا کہ جموں و کشمیر میں اگلے ایک یا دو برس میں اسمبلی کے انتخابات ہونے کے کوئی امکانات نہیں ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ اس کی وجہ یہ ہے کہ حد بندی کمیشن نے ابھی تک زمینی سطح پر اپنا کام شروع بھی نہیں کیا ہے ۔ عمر عبداللہ نے اتوار کو نامہ نگاروں کے سوالات کا جواب دیتے ہوئے کہا: 'اس وقت اسمبلی انتخابات کے انعقاد کی کوئی گنجائش ہی نہیں ہے ، اگر حد بندی کمیشن تشکیل نہیں دیا گیا ہوتا تو انتخابات کے امکانات تھے'۔


ان کا مزید کہنا تھا: 'کورونا وائرس کی وجہ سے حد بندی کمیشن نے اپنا کام زمینی سطح پر شروع بھی نہیں کیا ہے ۔ ابھی تو ان کو علاقوں کا دورہ کرنا ہے اور وفود سے بھی ملاقات کرنی ہے ۔ تجاویز مانگنی ہیں ۔ پھر جا کر اپنی رپورٹ حکومت کے سامنے پیش کرنا ہے ۔ مجھے نہیں لگتا ہے کہ اگلے ایک دو برس میں یہاں اسمبلی انتخابات کا ہونا ممکن ہوگا'۔


عمر عبداللہ نے جموں و کشمیر نیشنل پینتھرس پارٹی کی جانب سے پروفیسر بھیم سنگھ کو پارٹی سے نکالنے کی کارروائی پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا: 'پروفیسر بھیم سنگھ کو پارٹی سے نکالنا افسوس کی بات ہے ۔ ہم نے یہ کبھی نہیں کہا تھا کہ ہم صرف ان لوگوں سے ملیں گے جو ہماری بات کو مانتے ہیں ۔ ہم سب سے ملنے کے لیے تیار تھے ۔ یہاں تک ہم بی جے پی والوں کو بھی سننے کے لئے تیار ہیں'۔


انہوں نے کہا: 'ہم نے کبھی یہ نہیں کہا کہ ہم صرف ان لوگوں کو سنیں گے جو ہماری ہاں میں ہاں ملاتے ہیں ۔ بھیم سنگھ صاحب نے بھی ہماری سوچ سے ہٹ کر بات کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہم دفعہ 35 اے کو نہیں مانتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ ہم دفعہ 370 میں تبدیلی چاہتے ہیں ۔ مجھے نہیں لگتا کہ بھیم سنگھ صاحب نے کوئی ایسی بات کی جس کی بنا پر انہیں پارٹی سے بے دخل کرنے کی ضرورت تھی۔ اب جو کیا گیا ہے وہ ان کی پارٹی کا اندرونی معاملہ ہے'۔

عمر عبداللہ نے عوامی اتحاد برائے گپکار اعلامیہ کے دورہ جموں پر کہا: 'کل ہمارے ساتھ قریب 26 وفود نے ملاقات کی ۔ ان میں مختلف سوچ رکھنے والے لوگ شامل تھے'۔ ان کا مزید کہنا تھا: 'ہمارا جموں آنے کا مقصد ہی الگ الگ سوچ رکھنے والے لوگوں سے ملاقات کرنا تھا ۔ ہمیں اس میں کافی حد تک کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ ہم آگے اور لوگوں سے ملیں گے'۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Nov 08, 2020 09:56 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading