உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں و کشمیر : بی جے پی حکومتیں جمہوری اقدار کو روند کر اپوزیشن کو خاموش کرنا چاہتی ہیں: جے اے میر

    جموں و کشمیر : بی جے پی حکومتیں جمہوری اقدار کو روند کر اپوزیشن کو خاموش کرنا چاہتی ہیں: جے اے میر

    جموں و کشمیر : بی جے پی حکومتیں جمہوری اقدار کو روند کر اپوزیشن کو خاموش کرنا چاہتی ہیں: جے اے میر

    Jammu and Kashmir News : کانگریس صدر جموں و کشمیر جی اے میر کو پولیس نے عارضی طور حراست میں لیا ۔ دھکا مکی کے دوران چند احتجاجیوں کو معمولی طور چوٹیں بھی آئیں۔

    • Share this:
    سری نگر : اتر پردیش میں کانگریس لیڈر پرینکا گاندھی کو حراست میں لئے جانے کے خلاف آج سرینگر کشمیر میں کانگریس پارٹی نے احتجاجی جلوس نکالا۔ احتجاجی کانگریس ورکرس پرینکا گاندھی کی گرفتاری کے ساتھ ساتھ لکھیم پور میں کسانوں کو مبینہ طور روندے جانے پر بھی سخت برہمی کا اظہار کر رہے تھے۔ کانگریس بھون سرینگر کے باہر سخت پولیس پہرے کے باوجود احتجاج کررہے کانگریس کارکنان سڑک پر نکلنے میں کامیاب ہوئے اور پولیس کے ساتھ گُتھم گُتھا بھی ہوئے ۔ دو سے تین ورکروں کو معمولی چوٹیں بھی آئیں۔

    پولیس نے احتجاج کی قیادت کررہے جموں کشمیر میں کانگریس کے صدر غلام احمد میر سے پہلے ہی کہا تھا کہ انہیں کانگریس بھون سے باہر سڑک پر نکلنے کی اجازت نہیں ہے ، لیکن اس کے باوجود احتجاجی کانگریس کارکُن اور لیڈرس دروازہ کود کر باہر مولانا آزاد روڈ پر نکل آئے اور لال چوک کی طرف مارچ کرنے کی کوشش کی ، لیکن پولیس نے اُنہیں روکا اور آگے نہیں بڑھنے دیا ۔

    کانگریس صدر جموں و کشمیر جی اے میر کو پولیس نے عارضی طور حراست میں لیا ۔ دھکا مکی کے دوران چند احتجاجیوں کو معمولی طور چوٹیں بھی آئیں۔ حراست میں لئے جانے سے پہلے کانگریس جموں کشمیر کے صدر جی اے میر نے مرکز میں بی جے پی اور اُتر پردیش کی حکومت پر غنڈہ گردی کا الزام لگایا ۔

    جی اے میر نے کہا کہ بی جے پی حکومتیں نہ صرف کسانوں پر ظلم کررہی ہیں بلکہ جمہوری اقدار کو روند کر اپوزیشن کو خاموش کرنا چاہتی ہیں۔ جی اے میر نے الزام لگایا کہ موجودہ بی جے پی سرکاریں ناتھو رام گوڈسے کا تشدد کا ایجنڈا چلا رہی ہیں جو ملک کے لئے خطرناک ہے۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: