ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر : کورونا وائرس کا قہر جاری ، جی ایم سی اننت ناگ نے معمول کے او پی ڈی کو کیا بند

Jammu and Kashmir News : جی ایم سی اننت ناگ کے میڈیکل سپرنٹینڈٹ ڈاکٹر شیخ اقبال کا کہنا ہے کہ جی ایم سی اننت ناگ کا اسپتال جنوبی کشمیر اور خطہ جموں کے کچھ علاقوں کے لیے اہم ترین اسپتال ہے اسلئے یہاں پر روزانہ بنیادوں پر ہزاروں کی تعداد میں مریض آتے ہیں ، جس کی وجہ سے کورونا کے پھیلاؤ کے مزید خدشات لاحق ہیں۔

  • Share this:
جموں و کشمیر : کورونا وائرس کا قہر جاری ، جی ایم سی اننت ناگ نے معمول کے او پی ڈی کو کیا بند
جموں و کشمیر : کورونا وائرس کا قہر جاری ، جی ایم سی اننت ناگ نے معمول کے او پی ڈی کو کیا بند

جموں و کشمیر: جنوبی کشمیر میں کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کی غرض سے گورنمنٹ میڈیکل کالج اننت ناگ میں معمول کی سرگرمیوں کو بند کر دیا گیا ہے۔ اس میں روزانہ او پی ڈی مریضوں کے رش پر قابو پانے کیلئے او پی ڈی خدمات کو فی الحال کے لیے بند کر دیا گیا ہے ۔ تاکہ کورونا کے بڑھتے معاملات پر روک لگانے کے لیے اقدامات کو مزید موثر بنایا جا سکے ۔ اس سلسلے میں جی ایم سی اننت ناگ کے میڈیکل سپرنٹینڈٹ ڈاکٹر شیخ اقبال کا کہنا ہے کہ جی ایم سی اننت ناگ کا اسپتال جنوبی کشمیر اور خطہ جموں کے کچھ علاقوں کے لیے اہم ترین اسپتال ہے اسلئے یہاں پر روزانہ بنیادوں پر ہزاروں کی تعداد میں مریض آتے ہیں ، جس کی وجہ سے کورونا کے پھیلاؤ کے مزید خدشات لاحق ہیں۔


ڈاکٹر شیخ اقبال نے کہا کہ انہی وجوہات کی بنا پر جی ایم سی انتظامیہ نے روزانہ معمول کے او پی ڈی کو فی الحال عارضی بنیادوں پر بند کرنے کا فیصلہ کیا ہے ۔ تاکہ کورونا کو مزید پھیلنے نہ دیا جائے ۔ تاہم انہوں نے واضح کر دیا کہ اسپتال میں ایمرجنسی خدمات جاری رہیں گی اور مریض صرف ایمرجنسی کی صورت میں ہی اسپتال آئیں ۔ ڈاکٹر شیخ اقبال نے مزید کہا کہ ایمرجنسی کی صورت میں اسپتال آنے والے تمام مریضوں و دیگر لوگوں کیلئے کووڈ ٹیسٹ لازمی ہوگا اور مرتب شدہ کووڈ پروٹوکولز پر ہر حال میں عمل پیرا ہونے کی ضرورت ہے۔


انہوں نے کہا کہ مریضوں کی مشکلات کے مدنظر اسپتال انتظامیہ نے ٹیلی کونسلنگ کا اہتمام کیا ہے ، جس کے تحت مریض متعلقہ ڈاکٹروں سے براہ راست طور پر ٹیلی فون پر رائے حاصل کر سکتے ہیں ۔ ڈاکٹر شیخ اقبال نے مزید کہا کہ یکم مئی سے 18 برس سے زائد عمر والے تمام افراد کو ویکسینیشن کے زمرے میں لانے کے لیے بھی اقدامات میں وسعت لائی گئی ہے ۔


دریں اثنا ڈی سی اننت ناگ ڈاکٹر پیوش سنگلا نے کورونا کی وبا پر قابو پانے کی غرض سے مذہبی و دینی رہنماؤں کی خدمات بھی طلب کی ہیں ۔ اس سلسلے میں ڈی سی نے براہ راست طور پر مختلف علما ، عالم دین ، مذہبی رہنماؤں ، خطیبوں اور مساجد کے ائمہ سے  ملاقات کی اور موجودہ صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔ اس دوران ڈی سی نے متعلقین کو مساجد و دیگر مذہبی مقامات پر کووڈ پروٹوکولز اور ایس او پیز کا نفاذ پر حال میں ممکن بنانے کے لیے تعاون طلب کیا ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Apr 28, 2021 10:02 PM IST