உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    ڈی جی ہیمنت لوہیا کے قتل میں ملوث نوجوان ذہنی دباؤ کا تھا شکار، نہیں ملا دہشت گردی کا کوئی زاویہ

    پولیس نے تاہم یہ بھی بتایا ہے کہ ملزم ذہنی دباؤ کا شکار تھا اور اس کا رویہ کافی جارحانہ تھا۔  جیل خانہ جات کے ڈائیریکٹر جنرل ہیمنت لوہیا کے قتل کیس کی تحقیقات کے دوران ابھی تک دہشت گردی کا کوئی زاویہ سامنے نہیں آیا ہے۔

    پولیس نے تاہم یہ بھی بتایا ہے کہ ملزم ذہنی دباؤ کا شکار تھا اور اس کا رویہ کافی جارحانہ تھا۔ جیل خانہ جات کے ڈائیریکٹر جنرل ہیمنت لوہیا کے قتل کیس کی تحقیقات کے دوران ابھی تک دہشت گردی کا کوئی زاویہ سامنے نہیں آیا ہے۔

    پولیس نے تاہم یہ بھی بتایا ہے کہ ملزم ذہنی دباؤ کا شکار تھا اور اس کا رویہ کافی جارحانہ تھا۔ جیل خانہ جات کے ڈائیریکٹر جنرل ہیمنت لوہیا کے قتل کیس کی تحقیقات کے دوران ابھی تک دہشت گردی کا کوئی زاویہ سامنے نہیں آیا ہے۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu and Kashmir, India
    • Share this:
      جموں: جیل خانہ جات کے ڈائیریکٹر جنرل ہیمنت لوہیا کے قتل کیس کی تحقیقات کے دوران ابھی تک دہشت گردی کا کوئی زاویہ سامنے نہیں آیا ہے۔ یہ بات جموں زون کے ایڈیشنل ڈائیریکٹر جنرل پولیس مُکیش سنگھ نے بتائی ہے۔ مُکیش سنگھ نے ٹویٹ کیا ہے کہ اس قتل کے معاملے میں گرفتار کئے گئے ملزم سے پوچھ تاچھ جاری ہے اور پوچھ تاچھ کے دوران ایسی کوئی بات سامنے نہیں آئی ہے جس سے اس معاملے میں دہشت گردی کا کوئی زاویہ سامنے آیا ہو۔

      انہوں نے کہا کہ ملزم کی تفتیش جاری ہے۔ واضح رہے کہ ڈی جی پی پرزنز ایچ کے لوہیا کی گلا کٹی ہوئی لاش پولیس نے پیر کو رات دیر گئے انکی رہائیش گاہ سے برآمد کی تھی اور مقتول پولیس افسر کے گھریلو ملازم یاسر احمد کو منگل کو گرفتار کیا گیا تھا جو جائے واردات سے بھاگ کر کانا چک علاقے میں چھپا ہوا تھا۔

      ملزم یاسر نے کی خودکشی کی کوشش، بیلٹ سے پھندا لگایا لیکن وہ ٹوٹ گئی اور پھر۔۔۔

      گھر میں نظربند کرنے کے دعوے کو لیکر محبوبہ مفتی اور پولیس میں ٹویٹر پر چھڑا جھگڑا

      پولیس نے یاسر کو کانا چک کے ایک کھیت سے گرفتار کرلیا تھا پولیس کے مطابق یاسر ڈی جی پی پرزنز کے گھر میں گزشتہ چھ ماہ سے گھریلو ملازم کے طور پر کام کر رہا تھا اے ڈی جی پی جموں زون مکیش سنگھ نے کہا کہ کچھ دستاویزی ثبوتوں کے علاوہ جرم میں استعمال ہونے والے ہتھیار کو بھی قبضے میں لیا گیا ہے۔

      پولیس نے تاہم یہ بھی بتایا ہے کہ ملزم ذہنی دباؤ کا شکار تھا اور اس کا رویہ کافی جارحانہ تھا۔ اس سے پہلے جموں و کشمیر یو ٹی کے ڈائیریکٹر جنرل دلباغ سنگھ نے بھی ہیمنت لوہیا کے قتل میں دہشت گردی کا کوئی زاویہ ہونے کے امکانات کو مسترد کردیا تھا ۔ ہیمنت لوہیا کے اس طرح قتل کئے جانے سے پورے جموں و کشمیر خاص کر محکمہ پولیس میں تشویش پائی جارہی ہے۔
      Published by:Sana Naeem
      First published: