உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    J and K News: جموں و کشمیر میں دہشت گردی کے خاتمے کیلئے منصوبہ بند حکمت عملی کی ضرورت، ڈی جی ایچ نے دیا بیان

    منشیات کی اسمگلنگ سے بھی دہشت گردی کی ایک بڑی رقم حاصل کی جا رہی ہے۔

    منشیات کی اسمگلنگ سے بھی دہشت گردی کی ایک بڑی رقم حاصل کی جا رہی ہے۔

    Jammu and Kashmir DGP: سنگھ نے پولیس ہیڈکوارٹر میں کرائم سے متعلق جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں جموں و کشمیر میں امن اور استحکام کی برقراری کے لیے مزید کوششیں کرنی ہوں گی۔

    • News18 Urdu
    • Last Updated :
    • Jammu | Ladakh | Lucknow | Bihat | Hyderabad
    • Share this:
      جموں و کشمیر (Jammu and Kashmir) کے ڈائریکٹر جنرل آف پولیس دلباغ سنگھ (Dilbag Singh) نے پیر کے روز کہا کہ مرکز کے زیر انتظام علاقے سے دہشت گردی کی لعنت کو ختم کرنے کے لیے دہشت گردی پر ایک منصوبہ بند انداز سے آخری حملہ کی ضرورت ہے۔ انھوں نے کہا کہ جموں و کشمیر میں سیکورٹی کی صورتحال میں گزشتہ تین سال میں واضح بہتری آئی ہے اور جموں و کشمیر میں بند کا کلچر تقریباً ختم ہو چکا ہے۔

      سنگھ نے پولیس ہیڈکوارٹر میں کرائم سے متعلق جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں جموں و کشمیر میں امن اور استحکام کی برقراری کے لیے مزید کوششیں کرنی ہوں گی۔ میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے ڈی جی پی نے کہا کہ پولیس اور دیگر حکومتی ذرائع کی مشترکہ کوششوں سے سیکورٹی فورسز کے حوالے سے پچھلے تین سال کے دوران نمایاں بہتری آئی ہے۔

      انہوں نے افسران کو دہشت گردی پر مبنی سرگرمیوں کو محدود کرنے کے لیے خاص طور پر سرحدی پٹیوں میں مشق کو بڑھانے کی ہدایت دی۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت ہم نے جموں و کشمیر میں سرگرم دہشت گردوں کی تعداد کو کم کر دیا ہے اور جموں و کشمیر کو دہشت گردی سے محفوظ رکھنے کے لیے ہم پرعزم ہیں۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      بلیک آؤٹ فٹ میں Akanksha Puri کی اب تک کی سب سے بولڈ تصویریں، میکا سنگھ نے یوں دیا ردعمل

      ڈی جی پی نے دہشت گردی کو ختم کرنے کی ہر ممکن کوششوں پر زور دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ تفتیش کاروں کو خود کو بہترین تفتیشی مہارتوں سے آراستہ کرنا ہوگا اور دہشت گردی اور منشیات کی اسمگلنگ کے مقدمات میں سزاؤں کو یقینی بنانے کے لیے ہر ضروری اقدام کرنا ہوگا۔ انہوں نے ہدایت دی کہ ہر ضلع میں نتائج پر مبنی تحقیقات کو یقینی بنانے کے لیے ایک افسر کو ذمہ داری دی جائے گی۔

      یہ بھی پڑھیں: 

      Trade with Pakistan: پاکستان کے ساتھ تجارت ممکن نہیں! ’پہلےسرحدپاردہشت گردی کوکیاجائےختم‘

      منشیات کے خلاف جنگ تیز کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے ڈی جی پی نے کہا کہ اس سے نہ صرف نوجوان متاثر ہوتے ہیں بلکہ منشیات کی اسمگلنگ سے بھی دہشت گردی کی ایک بڑی رقم حاصل کی جا رہی ہے۔
      Published by:Mohammad Rahman Pasha
      First published: