ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر : کپوارہ میں تصادم ، 5 دہشت گرد ہلاک ، ایک فوجی اہلکار شہید ، دو دیگر زخمی

دہشت گردوں کے ایک گروپ نے گذشتہ روز کیرن سیکٹر میں سرحد کے اس پار داخل ہونے میں کامیابی حاصل کی ۔ تاہم فوج نے ان کی نقل وحرکت دیکھنے کے بعد وسیع تلاشی آپریشن شروع کیا تھا۔

  • UNI
  • Last Updated: Apr 05, 2020 04:52 PM IST
  • Share this:
جموں و کشمیر : کپوارہ میں تصادم ، 5 دہشت گرد ہلاک ، ایک فوجی اہلکار شہید ، دو دیگر زخمی
علامتی تصویر

شمالی کشمیر کے ضلع کپوارہ میں لائن آف کنٹرول کے کیرن سیکٹر میں فوج نے دراندازی کی ایک کوشش کو ناکام بنانے کے دوران پانچ دہشت گردوں کو ہلاک کردیا ہے ۔ تاہم جاری آپریشن میں فوج کے ایک جوان شہید جبکہ دو دیگر شدید طور پر زخمی ہوگئے ہیں۔ سری نگر میں قائم فوج کی پندرہویں کور کے آفیشل ٹوئٹر ہینڈل پر ایک ٹویٹ میں کہا گیا: 'کپوارہ کے رنگ ڈوری بیہک میں جاری آپریشن میں پانچ دہشت گرد مارے گئے۔ گذشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران دو الگ الگ آپریشنوں میں 9 دہشت گرد ہلاک کئے گئے ہیں۔ کپوارہ آپریشن میں ہمارے ایک جوان شہید اور دیگر دو شدید طور پر زخمی ہوئے ہیں ، جنہیں فوجی ہسپتال منتقل کیا گیا ہے'۔


فوج کے ایک ترجمان نے بتایا کہ دہشت گردوں کے ایک گروپ نے گذشتہ روز کیرن سیکٹر میں سرحد کے اس پار داخل ہونے میں کامیابی حاصل کی ۔ تاہم فوج نے ان کی نقل وحرکت دیکھنے کے بعد وسیع تلاشی آپریشن شروع کیا تھا۔  انہوں نے مزید کہا کہ گذشتہ رات طرفین کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ ہوا جس میں پانچ دہشت گرد مارے گئے۔ ہمارے بھی تین جوان زخمی ہوئے ، جن میں سے ایک زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ دیا ۔


قبل ازیں سیکورٹی فورسز نے ہفتہ کے روز ضلع کولگام کے کھور بٹہ پورہ منزگام میں ایک تصادم میں حزب المجاہدین سے وابستہ 4 مقامی دہشت گردوں کو ہلاک کردیا تھا ۔ جموں وکشمیر پولیس کا دعویٰ کیا ہے کہ دہشت گردوں کا یہ گروپ جنوبی کشمیر میں ہونے والی حالیہ شہری ہلاکتوں میں ملوث تھا۔

First published: Apr 05, 2020 04:50 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading