ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

لچھن پورہ کا خان محلہ گجر اور پسماندہ ہونے کی وجہ سے عدم توجہی کا شکار، جدید دور میں بھی بجلی نصیب نہیں

لچھن پورہ کا خان محلہ گجر اور پسماندہ ہونے کی وجہ سے عدم توجہی کا شکار ہے ۔ بجلی نہ ہونے کی وجہ سے ان کے بچے تعلیم سے بھی محروم رہ جاتے ہیں ۔

  • Share this:
لچھن پورہ کا خان محلہ گجر اور پسماندہ ہونے کی وجہ سے عدم  توجہی کا شکار، جدید دور میں بھی بجلی نصیب نہیں
لچھن پورہ کا خان محلہ گجر اور پسماندہ ہونے کی وجہ سے عدم توجہی کا شکار ہے ۔

وسطی ضلع بڈگام کے بیروہ کھاگ کے لچھن پورہ میں گجربستی کا خان محلہ کو دور قدیم سے لیکر آج کے دور جدید تک بجلی نصیب نہیں ہوئی ۔یہاں حکومت کی جانب سے ہر گھر میں بجلی فرہم کرنے کا دعویٰ سراب ثابت ہورہا ہے۔ لچھن پورہ کا خان محلہ گجر اور پسماندہ ہونے کی وجہ سے عدم  توجہی کا شکار ہے ۔ سوبھاگیہ سکیم کے تحت ہر گھر تک بجلی پہنچانے پر مرکزی حکومت کی جانب ایوارڈ حاصل کرنے والے جموںوکشمیر میں آج بھی درجنوں دیہات تک بجلی نہیں پہنچی ہے ۔انہی دیہات میں وسطی ضلع بڈگام کھاگ کالچھن پورہ خانہ محلہ شامل ہیں جہاں آج تک بجلی نہیں پہنچی ہے۔ لچھن پورہ کی یہ گجر بستی کھاگ تحصیل کوارٹر سے چند ہی کلومیٹر کی دوری پر ہے لیکن انہیں ابھی بھی بجلی جیسی سہولیت سے محروم رکھا گیا ہے اور یہ لوگ اس ڈیجیٹل دور میں بھی بجلی کا بلب دیکھنے کو ترس رہیں ہیں۔

اگرچہ سال دوہزار اٹھارہ میں سوبھاگیہ سکیم کے تحت حکومت کی جانب سے ہر گھر میں بجلی فرہم کرنے کا دعویٰ کیا گیا اور دوہزار انیس میں جموں کشمیر کو سوبھاگیہ سکیم کے تحت سو فیصد بجلی فراہم کرنے کیلئے ایوارڈ سے نوازا گیا لیکن ابھی بھی کھاگ کے لچھن پورہ تک بجلی نہیں پہنچ سکی ہے اور حکومت کے بلند بانگ دعوے کھوکھلے ثابت ہوئے ہیں۔پینتیس گھرانوں پر مشتمل گجر بستی کا یہ خان محلہ مشعل ،شمع ، روایتی لالٹین اور کوئی کوئی اپنی حیثیت کے مطابق سولر کا استعمال کرتے ہیں۔ لچھن پورہ کے لوگوں کا کہناہے کہ انہیں یہ پتہ نہیں بجلی کیسی ہوتی ہے ۔ بجلی نہ ہونے کی وجہ سے ان کے بچے تعلیم سے بھی محروم رہ جاتے ہیں ۔


بجلی نہ ہونے کی وجہ سے ان کے بچے تعلیم سے بھی محروم رہ جاتے ہیں ۔


ان لوگوں کا کہناہے کہ آج تک انہوں نے مقامی لیڈران ، انتظامیہ کے افسران اور ہر دفتر پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ جب بھی یہ لوگ کسی لیڈر یا آفیسر کے پاس اپنی مشکلات لیکر جاتے ہیں تو انہیں جھوٹی یقین دہانیوں کے سوا کچھ بھی حاصل نہیں ہوتا ہے۔

انہیں گجر کہہ کر پیٹ پیچھے لات مار کر دفاتر سے باہر نکالا جاتا ہے ۔اس حوالے سے جب نیوز ایٹین اردو کے ہمارے نمائندے منیر حسین حرہ نے جب فون پر محکمہ بجلی کے ایکزکیٹو انجینئر محمد حسین سے پوچھا تو ان کا جواب کچھ یوں تھا۔ادھر چیف انجینئر سے بھی جب فون پوچھا تو انہوں نے لاتعلقی کااظہار کرکے اس معاملے کو حل کرنے کا یقین دلایا۔اگرچہ حکومت کی جانب سے بنیادی سہولیات کی فراہمی کےلئے خاطرخواہ اقدامات کے دعوے کیے جارہے ہیں لیکن زمینی سطح پر صورتحال دعوؤں کے برعکس ہے۔ ان تصویروں سے صاف ظاہر ہوتا ہے کہ سوبھاگیہ سکیم بھی لوگوں کا مقدر نہ بدل سکی ۔کھاگ لچھن پورہ کے لوگ سرکار سے مطالبہ کررہے ہیں کہ خانہ محلہ میں بجلی فراہم کی جائے ۔
Published by: Sana Naeem
First published: Apr 26, 2021 11:11 PM IST