ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر میں مذہبی آہنگی کی انوکھی مثال ، مسلمانوں نے ادا کی پنڈت کی آخری رسومات

متوفی کے بیٹے پنڈت منو جی نے مسلم برادری کا شکریہ ادا کرتے ہوئے بتایا کہ جس طرح لاک ڈاؤن کے چلتے انھوں نے میرے والد کی پہلے خبر گیری کی اور بعد ازاں ان کی آخری رسومات ادا کیں ، وہ کشمیریت اور ہندو مسلم بھائی چارے کی زندہ مثال ہے ۔

  • Share this:
جموں و کشمیر میں مذہبی آہنگی کی انوکھی مثال ، مسلمانوں نے ادا کی پنڈت کی آخری رسومات
جموں و کشمیر میں مذہبی آہنگی کی انوکھی مثال ، مسلمانوں نے ادا کی پنڈت کی آخری رسومات

جنوبی کشمیر کا سب ضلع ترال ہمیشہ ہندو مسلم بھائی چارے کا گہوارہ رہا ہے ۔  وہیں آج اس وقت ہندو مسلم بھائی چارے کی ایک اور مثال دیکھنے کو ملی ، جب بوچھو نامی گاوں میں ایک  بزرگ پنڈت جگن ناتھ کی موت واقع ہوئی ۔ پنڈت کی موت پر مسلم برادری نے سخت دکھ کا اظہار کیا اور ان کی آخری رسومات بھی انجام دیں ۔ ایک مقامی مسلم جاوید جمیل نے نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ جگن ناتھ ایک ملنسار انسان تھے ۔ انہوں نے کہا کہ 1990 میں جب کشمیری پنڈتوں نے وادی سے ہجرت کی تھی ، جگن ناتھ نے اپنے علاقے میں ہی رہنے کو ترجیح دی اور آج تک وہ اپنے ہی گاوں میں مسلمانوں کے ساتھ رہ رہے تھے ۔


جاوید نے مزید بتایا کہ علاقہ سے جن پنڈت گھرانوں نے ہجرت کی ہے ، ان کے مکانات ابھی بھی یہاں  بحفاظت موجود ہیں ۔ مسلمان ان کے مکانات اور ان کی اراضی کی دیکھ بھال کر رہے ہیں ۔ انہوں نے امید ظاہرکی کہ جلد ہی پنڈت وادی واپس آئیں گے۔


اس موقع پر متوفی کے بیٹے پنڈت منو جی نے مسلم برادری کا شکریہ ادا کرتے ہوئے بتایا کہ وہ مسلمانوں کے بےحد مشکور ہیں ۔ جس طرح لاک ڈاؤن کے چلتے انھوں نے میرے والد کی پہلے خبر گیری کی اور بعد ازاں ان کی آخری رسومات ادا کیں ، وہ کشمیریت اور ہندو مسلم بھائی چارے کی زندہ مثال ہے ۔انہوں نے مزید بتایا کہ کشمیر میں یہ روایتی بھائی چارہ برسوں پرانا ہے ۔


واضح رہے کہ سب ڈسٹرکٹ ترال میں پنڈت برادری کی کافی تعداد رہائش پذیر تھی ۔ تاہم 90 کی دہائی میں نامساعد حالات کے بعد اکثر بیرون وادی ہجرت کر گئے ۔ تاہم کچھ کنبے ترال اور نزدیکی دیہات میں ابھی بھی مسلم برادری کے ساتھ شانہ بہ شانہ زندگی بسر کررہے ہیں ۔ گزشتہ سال گنیش بل لاری یار ترال میں پنڈت اور مسلم برادری نے مل کر ایک مندر کی تعمیر کی ، جس کا کام تقریبا پایہ تکمیل تک پہچ گیا ہے اور جلد ہی اس مندر میں پوجا پاٹ شروع ہوجائے گی ۔
First published: May 23, 2020 10:24 PM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading