ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر : مقدس کٹرا میں نوراتر فیسٹول جاری ، دو دنوں میں 25 ہزار سے زیادہ عقیدت مندوں نے کئے ماتا ویشنو دیوی کے درشن

ماتا ویشنو دیوی کے سی ای او رویش کمارنے کہا کہ کوڈ کو دیکھتے ہوئے خاطر خواہ انتظامات کیے گئے ہیں ۔ کٹرا کے ریلوے اسٹیشن پر جو بھی یاتری پہنچ رہا ہے ، اس کا ٹیسٹ کیا جارہاہے ۔

  • Share this:
جموں و کشمیر : مقدس کٹرا میں نوراتر فیسٹول جاری ، دو دنوں میں 25 ہزار سے زیادہ عقیدت مندوں نے کئے ماتا ویشنو دیوی کے درشن
جموں و کشمیر : مقدس کٹرا میں نوراتر فیسٹول جاری ، دو دنوں میں 25 ہزار سے زیادہ عقیدت مندوں نے کئے ماتا ویشنو دیوی کے درشن

جموں : جموں کے کٹرا میں ویشنو دیوی گھپا میں گزشتہ روز سے نوراترا فیسٹول کا آغاز ہوگیا ۔ کل پہلے دن سرکار کے جاری کردہ اعداد و شمار کے مطابق چودہ ہزار عقیدتمندوں نے گھپا کا درشن کیا اور ماتا ویشنو دیوی سے امن اور بھائی چارے کی دعا مانگی ۔ آج بھی یہ سلسلہ جاری رہا اور تقریباً ساڑھے بارہ ہزار عقیدتمندوں نے ماتا ویشنو دیوی گھپا کا درشن کیا ۔ یہ فیسٹول نو روز تک جاری رہے گا اور اس دوران ملک بھر سے کافی تعداد میں یاتریوں کے کٹرا پہنچنے کی امید ہے۔ بتادیں کہ گزشتہ سال ساٹھ ہزار کے قریب یاتریوں نے یہاں حاضری دی تھی ۔


گزشتہ روز اڑتالیس عقیدت مند کورونا وائرس پازیٹیو پائے گئے ۔ انہیں یا تو مختلف ہوٹلوں میں رکھا گیا یا تو کچھ لوگوں کو گھر واپس بھیجا گیا۔ ماتا ویشنو دیوی کے سی ای او رویش کمارنے کہا کہ کوڈ کو دیکھتے ہوئے خاطر خواہ انتظامات کیے گئے ہیں ۔ کٹرا کے ریلوے اسٹیشن پر جو بھی یاتری پہنچ رہا ہے ، اس کا ٹیسٹ کیا جارہاہے ۔ جموں ریلوے اسٹیشن پر بھی ٹیسٹ کئے جاتے ہیں اور ساتھ ہی گاڑیوں کے ذریعہ سے جو بھی یاتری آتے ہیں ، انہیں لکھن پور میں کوڈ ٹیسٹ کئے جاتے ہیں ۔ جو بھی منفی پائے جاتے ہیں انہیں ماتا ویشنو دیوی کے درشن کے لیے جانے کی اجازت دی جاتی ہے۔


انہوں نے مزید کہاکہ جگہ جگہ سینٹائزئشن کی جارہی ہے اور ساتھ ہی ماسک بھی تقسیم کئے جاتے ہیں ۔ اس کے علاوہ دیگر انتظامات بھی کئے گئے ہیں ۔ یاتریوں کے ساتھ ساتھ ہر ایک کیلئے ماسک لازمی قرار دیا گیا ہے ۔ اس کے بغیر کسی کو بھی چلنے کی اجازت نہیں دی جاتی ہے ۔ ایس ڈی ایم کٹرا اشوک کمار کا کہنا ہے کہ بہتر گھنٹے پہلے اگر کسی نے کورونا ٹیسٹ کیا ہے ، اسے یہاں دوبارہ ٹیسٹ کرانے کی ضرورت نہیں ہے اور وہی لوگ یہاں آسکتے ہیں ۔ انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے یہاں یاتری کم تعداد میں آرہے ہیں تاہم کورونا وائرس کے خاتمے کے بعد یہاں دوبارہ وہی چہل پہل ہوگی ۔


نوراترا کے مقدس تہوار پر بزنس سے جڑے لوگوں کا روزگار بھی کافی بڑھ جاتا تھا ۔ تاہم اس بار کورونا وائرس کی وجہ سے یہ بھی متاثر ہے ۔ ہوٹل مالکان کا کہنا ہے کہ اس مرتبہ کورونا وائرس کی وجہ سے ان کے بزنس ٹھپ پڑے ہوئے ہیں ۔ راج کمار نامی ہوٹل مالک نے بتایا کہ بہت سارے لوگوں نے پہلے ہوٹلوں کی بکنگ کی تھی ، لیکن کوڈ کے بڑھتے معاملات سے بیشتر بکنگ کینسل کردی گئی ، جس کی وجہ سے ہوٹل مالکان کو کافی نقصان اٹھانا پڑا ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Apr 15, 2021 05:00 PM IST