ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

غیرملکی سفارت کاروں کے کشمیر دورہ پر عمر عبد اللہ کا طنز ، اپنے ملک کے اصلی سیاح کو بھیجئے

Jammu Kashmir News: جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی عمر عبد اللہ نے ٹویٹ کیا کہ کشمیر آنے کا شکریہ ، اب مہربانی کرکے اپنے ملکوں سے کچھ اصلی سیاحوں کو جموں و کشمیر بھیجئے۔

  • Share this:
غیرملکی سفارت کاروں کے کشمیر دورہ پر عمر عبد اللہ کا طنز ، اپنے ملک کے اصلی سیاح کو بھیجئے
عمر عبداللہ ۔ فائل فوٹو ۔

نیشنل کانفرنس کے لیڈر عمر عبد اللہ نے 24 غیر ملکی سفارتکاروں کے کشمیر دورہ پر جمعرات کو طنز کرتے ہوئے ان سے کہا کہ وہ اپنے ملک کے اصلی سیاحوں کو جموں و کشمیر بھیجیں ۔ جموں و کشمیر کے سابق وزیر اعلی عمر عبد اللہ نے ٹویٹ کیا کہ کشمیر آنے کا شکریہ ، اب مہربانی کرکے اپنے ملکوں سے کچھ اصلی سیاحوں کو جموں و کشمیر بھیجئے۔


اس سے پہلے کانگریس کے سینئر لیڈر سیف الدین سوز نے بدھ کو کہا تھا کہ سفارتکاروں کا دورہ تقریبا ہر سال ہوتا ہے اور یہ فضول کی قواعد ہے کیونکہ سرکار کو اس سے کوئی فائدہ نہیں ہوتا ۔ مرکز کے زیر انتظام جموں و کشمیر میں مین اسٹریم کے زیادہ تر لیڈران ، سفارتکاروں کے اس دورہ پر خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں ۔ اس نمائندہ وفد میں یوروپی ممالک اور اوآئی سی سے وابستہ کچھ دیگر سفارت کار شامل ہیں ۔




قابل ذکر ہے کہ پانچ اگست 2019 کو جموں و کشمیر کا خصوصی درجہ ختم کرکے اس کو مرکز کے زیر انتظام دو خطوں میں تقسیم کردیا گیا تھا ۔ مرکز کے اس فیصلہ کے بعد گزشتہ 18 مہینے میں غیر ملکی سفارتکاروں کا یہ تیسرا دورہ ہے ۔ نمائندہ وفد میں او آئی سی کے چار ممالک ملیشیا ، بنگلہ دیش ، سونیگل اور تاجکستان کے سفارتکار بھی شامل ہیں ۔

نمائندہ وفد میں فرانس ، یوروپی یونین ، برازیل ، اٹلی ، فن لینڈ ، کیوبا ، چلی ، پرتگال ، نیدرلینڈ ، بیلجیئم ، اسپین ، سویڈن ، کرغستان ، آئرلینڈ ، گھانا ، ایسٹونیا ، بولیویا ،  مالاوی ، ایریٹریا اور آئیوری کوسٹ کے سفارت کار شامل ہیں ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Feb 18, 2021 11:25 PM IST