உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    سی آر پی ایف کی فائرنگ میں 1شخص کی گولی لگنے سے موت، محبوبہ مفتی نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے کیا کارروائی کا مطالبہ

    Youtube Video

    پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے فائرنگ میں ملوث فورسز اہلکاروں کے خلاف کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔ پیپلز کانفرنس کے سجاد لون، جنید عظیم متو و دیگر لیڈران نے بھی واقعے کی مذمت کی ہے۔

    • Share this:
    اننت ناگ کے مونگہال علاقہ میں سی آر پی ایف   Central Reserve Police Force (CRPF)) کی فائرنگ سے ایک شخص کی گولی لگنے سے موت ہو گئی۔ یہ واقعہ گزشتہ رات کو پیش آیا۔ مہلوک کی شناخت ججر کوٹلی جموں کے یاسر علی کے طور پر ہوئی ہے جو کہ عارضی طور پر میر بازار اننت ناگ میت سکونت پزیر تھا۔ ادھر فائرنگ کے تناظر میں پولیس کا ایک بیان سامنے آیا ہے جس کے مطابق سی آر پی ایف کی 40 بٹالین کی جان کی جانب سے مونگہال پل کے قریب ایک ناکہ قائم کیا گیا تھا۔

    اس دوران وہاں سے بغیر نمبر کی ایک اسکارپیو گاڑی گزری جس کو سکیورٹی فورسز نے روکنے کا اشارہ کیا حالانکہ گاڑی میں سوار افراد نے یہ سگنل نظرا انداز کیا جس کے بعد سی آر پی ایف اہلکاروں نے اپنے بچاؤ کے پیش نظر گاڑی پر فائرنگ کر دی اور اس میں سوار ایک شخص کی موت واقع ہو گئی۔


    بتایا جا رہا ہے کہ گاڑی کا ڈرائیور اس دوران فرار ہو گیا ادھر پی ڈی پی صدر محبوبہ مفتی نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے فائرنگ میں ملوث فورسز اہلکاروں کے خلاف کاروائی کا مطالبہ کیا ہے۔ پیپلز کانفرنس کے سجاد لون، جنید عظیم متو و دیگر لیڈران نے بھی واقعے کی مذمت کی ہے۔


    واقعے کے فوری بعد پولیس اور دیگر سیکورٹی ایجنسیاں جاۓب واردات پر پہنچ گیئں ۔ اس دوران مونگہال کی اس جگہ کا باریک بینی سے جائزہ لیا گیا جہاں پر فائرنگ کا یہ واقعہ پیش آیا اور پولیس حقائق و صورتحال کا بھی جائزہ لے رہی ہے۔
    Published by:Sana Naeem
    First published: