உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    Jammu and Kashmir : پلوامہ میں خارپشت نامی جنگلی جانور بادام صنعت کو پہنچا رہے ہیں نقصان

    Jammu and Kashmir : پلوامہ میں خارپشت نامی جنگلی جانور بادام صنعت کو پہنچا رہے ہیں نقصان

    Jammu and Kashmir : پلوامہ میں خارپشت نامی جنگلی جانور بادام صنعت کو پہنچا رہے ہیں نقصان

    J&K News : ضلع پلوامہ کے پائر اور نیوہ اور گوسو کے علاوہ ملحقہ دیہات میں قائم بادام کے باغات میں گزشتہ کئی برسوں سے خارپُشت نامی جنگلی جانور درختوں کو کُریدتا ہے ، جس کی وجہ سے کئی بادام کے درخت سوکھ رہے ہیں ۔ جس سے بادام کے کاشتکاروں کو کافی نُقصان کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔

    • Share this:
    پلوامہ : وادی کشمیر کی اہم میوہ صنعت بادام کو جنگلی جانور نقصان پہنچا رہے ہیں ۔ ہر سال وادی کشمیر میں سرما کے آنے کے ساتھ ہی ضلع پلوامہ کے بادام کے باغات میں خارپُشت نامی جنگلی جانور کی جانب سے بادام کے درختوں کو نقصان پہنچانے کا سلسلہ شروع ہوجاتا ہے ۔ ضلع پلوامہ کے پائر اور نیوہ اور گوسو کے علاوہ ملحقہ دیہات میں قائم بادام کے باغات میں گزشتہ کئی برسوں سے خارپُشت نامی جنگلی جانور درختوں کو کُریدتا ہے ، جس کی وجہ سے کئی بادام کے درخت سوکھ رہے ہیں ۔ جس سے بادام کے کاشتکاروں کو کافی نُقصان کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔

    نیوہ پلوامہ کے بادام کاشتکار فاروق احمد میر نے نیوز 18 اردو کو کہا کہ گزشتہ دس برسوں کے دوران پلوامہ کی کریواس پر موجود بادام کے باغات میں خارپشت اور دیگر جنگلی جانوروں کی تعداد میں کافی اضافہ ہوا ہے ۔ جبکہ جنگلی جانوروں کے  اس نقصان سے بچنے کیلئے ہرسال اب کاشتکار بادام کے درختوں کے نیچے حصے پر کوور کرتے ہیں ۔ تاکہ نقصان سے بچا جاسکھیں ۔

    اس بارے میں جب نیوز18 اردو نے وائلڈ لایف وارڈن برائے پلوامہ شوپیاں انتصار سُہیل سے رابطہ کیا تو اُنہوں نے کہا کہ بادام کے باغات سے خارپُشت جنگلی جانور کو باغات سے دور رکھنے کے لیے کچھ تدابیر کی ضرورت ہے ، جس میں درختوں کے آس پاس آئرس نامی پھول کی کاشت کرنا اور کالی مرچ کا پیسٹ درخت کے نیچے لگانا لازمی ہے۔

    جموں کشمیر کے پلوامہ ضلع کو بادام کی کاشت میں کلیدی اہمیت حاصل ہے ۔ پلوامہ میں اس وقت تقریبا چھ ہزار ہیکٹر آراضی پر بادام کے باغات پھیلے ہیں ۔ پہلے ہی بادام صنعت کو دشواریوں کا سامنا ہے ۔ کاشت میں ابھی تک نئی ٹیکنالوجی کو متعارف نہ کرنے سے پیداواری صلاحیت پر برے اثرات مرتب ہورہے ہیں ۔

    نیز بادام کی قیمتوں میں آرہی کمی سے بھی صنعت زوال پذیر ہورہی ہے ۔ اب گزشتہ کئی برسوں سے جنگلی جانوروں کی جانب سے بادام کے درختوں کو نقصان پہنچانے سے اس خشک میوہ صنعت سے وابستہ کاشتکاروں کو مالی نقصان ہورہا ہے ۔

    قومی، بین الاقوامی اور جموں وکشمیر کی تازہ ترین خبروں کےعلاوہ تعلیم و روزگار اور بزنس کی خبروں کے لیے نیوز18 اردو کو ٹویٹر اور فیس بک پر فالو کریں ۔
    Published by:Imtiyaz Saqibe
    First published: