ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر: ہمالین کیو آر ٹی کو مزید مستحکم کرنے کیلئے اقدامات کی اشد ضرورت

جموں و کشمیر کا جغرافیائی مرکز رامسو مشکل ترین پہاڑوں کے آغوش میں قومی شاہراہ کے سب سے مشکل سیکٹر حادثات اور ناگہانی مشکلات کا نہ تھمنے والے سلسلہ کا شاہد علاقہ رہا ہے۔

  • Share this:
جموں و کشمیر: ہمالین کیو آر ٹی کو مزید مستحکم کرنے کیلئے اقدامات کی اشد ضرورت
جموں و کشمیر کا جغرافیائی مرکز رامسو مشکل ترین پہاڑوں کے آغوش میں قومی شاہراہ کے سب سے مشکل سیکٹر حادثات اور ناگہانی مشکلات کا نہ تھمنے والے سلسلہ کا شاہد علاقہ رہا ہے۔

ہمالین کیو آر ٹی رامسو گزشتہ تین دہائیوں سے جانفشانی کے ساتھ حادثات قدرتی آفات یا پھر انسانی مشکلات ہر دم اس ٹیم نے رضاکارانہ طور سے سماج کی خدمت انجام دی ہے تاہم اس وقت اس ٹیم کی صورتحال کیا ہے اور ہمالین کیو آر ٹی کو مزید مستحکم کرنے کیلئے اقدامات کی اشد ضرورت ہے۔  جموں و کشمیر کا جغرافیائی مرکز رامسو مشکل ترین پہاڑوں کے آغوش میں قومی شاہراہ کے سب سے مشکل سیکٹر حادثات اور ناگہانی مشکلات کا نہ تھمنے والے سلسلہ کا شاہد علاقہ رہا ہے۔ تاہم جب تمام راستے بند ہو جاتے سڑک حادثات میں مشکل ترین جگہوں پر سے ریسکیو کرنا ہوتا تو ایک ٹیم جسکا نام ہمالین کیو آر ٹی ہے جنہوں نے اپنی زندگی کا مقصد مشکل ترین حالات میں انسانی خدمات کو انجام دینا بنایا ہوا ہے انہیں معلوم ہے کہ کسی بھی ادراہ کے جائے واردات پر پہچنے سے قبل اس ٹیم کو اپنا کردار ادا کرنا ہے انسانی جانوں کے زیاں اور مشکل ترین حالات میں انسانی خدمت کو انجام دینا ہمالین کیو آر ٹی اپنا اولین فرض سمجھ کر گزشتہ تیس سالوں سے ادا کرنے والی ٹیم ابھی تک انتظامیہ کے پاس رجسٹر نہیں ہے۔


وہیں ہر مشکل میں انتظامیہ و عوام کی مدد کرنے والی ٹیم کے پاس ساز و سامان کی شدید قلت ہے۔ٹرانسپورٹ کی عدم دستیابی ک وجہ سے حادثات کے وقت ٹیم نے کئی کلومیٹر تک پیدل سفر کر کے ریسکیو آپریشن کا کام انجام دیا ہے۔ سڑک بند ہو مسافر کو دریا پار کروانا ہو یا پھر مشکل حالات میں زخمیوں و لاشوں کو جائے حادثات سے نکالنا ہو ہمالین کیو آر ٹی کے ممبران نے اپنی جانوں کی پرواہ کئے بغیر اپنا فرض ادا کیا ہے۔ اب ان کے انتظامیہ سے چند مطالبات بھی ہے اگر سماج اس بے لوث ٹیم کی خدمات سے مستفید ہونا چاہتا تو انہیں فعال اور مستحکم ٹیم بنانے کیلئے کئی طرح کے اقدامات بھی کرنے ہونگے جن میں سب سے اول رجسٹریشن دوسرا جدید ترین ساز و سامان سے لیس کرنا اور ٹرانسپورٹ کیلئے کیو آر ٹی رامبن و بانہال والینٹیرس کی طرز پر گاڑی مہیا کرانا ہوگا۔




انتظامیہ کی جانب سے محض یوم جمہوریہ اور یوم آزادی کی تقریبات پر ان نوجوانوں کو سرٹیفیکیٹ دیکر حوصلے افزائی کرنے سے زیادہ اس وقت یہ ضروری ہے کہ ہمالین کیو آر ٹی ٹیم کو مضبوط بنا کر سماج کیلئے ایک مثال کے طور پر پیش کہا جائے تاکہ آنے والی نسل کے اندر بھی خدمت خلق کا جذبہ ابھر سکے۔دوسروں کیلئے جینے کے مقصد سے اس ٹیم نے تین دہائیوں سے جو خدمت انجام دی ہے وہ چاہتے ہے کہ نوجوان نسل بھی اس طرح ہی رضاکارانہ کاموں میں شمولیت اختیار کرے تاکہ مصیبت اور مشکل کے دور میں انسانیت کے فرائض انجام دئے جاسکے۔

انتظامیہ کی بھی ذمہ داری بنتی ہے جو ٹیم انکے شانہ بہ شانہ کھڑے ہوکر دن رات سماج کے خدمت کا کام رضاکارنہ طور سے انجام دے رہے ان کی ضروریات کا خاص خیال رکھا جائے ساز و سامان سے لیس کرنے کے ساتھ ساتھ انہیں ہر وہ سہولت بہم پہنچائیں جو مشکل حالات اور انکے اپنے اہل خانہ کیلئے سود مند ثابت ہو۔وہیں سماج کا بھی فرض ہے کہ ہمالین کیو آر ٹی جیسی ٹیموں کی حوصلہ افزائی کرے تاکہ نئی پیڑھی بھی ایسے رضاکارانہ کاموں میں حصہ لے اور انسانی خدمت کا جذبہ زندہ جاوید رہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Mar 20, 2021 09:23 PM IST