ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

ملورہ پارمپورہ سرینگر میں انکاؤنٹر ختم، لشکر طیبہ کا ٹاپ کمانڈر ابرار ندیم اور ایک پاکستانی دہشت گرد ہلاک

پولیس نے جاری کردہ اپنے پریس بیان میں لکھا ہے کہ شاہراہ پر حملہ کرنے والے ملی ٹنٹنوں کے بارے میں مصدقہ اطلاع ملی۔ مصدقہ اطلاع پر جموں وکشمیر پولیس ، سی آر پی ایف اور آرمی نے مشترکہ طور پر شاہراہ پر ناکے لگائے۔

  • Share this:
ملورہ پارمپورہ سرینگر میں انکاؤنٹر ختم، لشکر طیبہ کا ٹاپ کمانڈر ابرار ندیم اور ایک پاکستانی دہشت گرد ہلاک
پولیس نے جاری کردہ اپنے پریس بیان میں لکھا ہے کہ شاہراہ پر حملہ کرنے والے ملی ٹنٹنوں کے بارے میں مصدقہ اطلاع ملی۔ مصدقہ اطلاع پر جموں وکشمیر پولیس ، سی آر پی ایف اور آرمی نے مشترکہ طور پر شاہراہ پر ناکے لگائے۔

ملورہ پارمپورہ سرینگر میں انکاؤنٹر ختم ہوگیا ہے اس انکاؤنٹر میں لشکر طیبہ کا ٹاپ کمانڈر ابرار ندیم اور ایک پاکستانی دہشت گرد کو ہلاک کیاگیا۔ملورہ میں یہ انکاؤنٹر کل دوپہر کے بعد شروع ہوا اور آج صبح سویرے یہ انکاؤنٹر اختتام پذیر ہوا۔ پولیس نے جاری کردہ اپنے پریس بیان میں لکھا ہے کہ شاہراہ پر حملہ کرنے والے ملی ٹنٹنوں کے بارے میں مصدقہ اطلاع ملی۔ مصدقہ اطلاع پر جموں وکشمیر پولیس ، سی آر پی ایف اور آرمی نے مشترکہ طور پر شاہراہ پر ناکے لگائے۔


کل ہی دوپہر پارم پورہ ناکے پر ایک گاڑی کو روکاگیا جس میں ابرار ندیم تھا۔ پچھلی سیٹ پر بیٹھے ابرار نے اپنا بیگ کھولنے کی کوشش کی اور ایک دستی بم نکالا۔ ناکہ پارٹی تیزی سے حرکت میں آگئی اور انہیں موقع پر ہی پکڑ لیا۔ ڈرائیور اور ابرار کو پولیس اسٹیشن لے جایا گیا جہاں ان کی پوچھ تاچھ شروع کی گئی۔ اس دوران اس کے قبضے سے ایک دستی بم اور ایک پستول برآمد ہوا۔ پولیس پریس بیان کے مطابق تفتیش کے دوران ابرار نے انکشاف کیا کہ اس نے اپنی اے کے 47 رائفل ملورہ میں واقع ایک مکان میں رکھی ہوئی ہے۔


اس کے فوراً بعد وہاں مشتبہ مکان کا سیکورٹی فورسز نے محاصرہ کیا۔ ابرارکو ہتھیار بازیاب کرنے کے لئے اس مکان میں لے جایا گیا۔ جب سیکورٹی فورسز کی پارٹی نے اسلحہ کو بازیاب کرنے کے لئے گھر میں داخل ہو رہی تھی تو اس کا ایک ساتھی جو پاکستانی تھا،جس کے بارے میں ابرار نے کچھ ظاہر نہیں کیاتھا گھر میں چھپ کر سیکورٹی فورسز پر فائرنگ کردی۔ اس دوران سی آر پی ایف کے تین اہلکار زخمی ہوگئے ۔


فائرنگ کے تبادلے میں پھر پاکستانی ملی ٹنٹ کے ساتھ لشکر طیبہ کا ٹاپ کمانڈر ابرار ندیم بھی ماراگیا۔ جائے وقوع سے گولہ بارود کے ساتھ دو اے کے 47 رائفلیں برآمد ہوئی ہیں۔ پولیس کے مطابق ابرار دیگر ملی ٹنٹنوں کے ساتھ ساتھ متعدد ہلاکتوں میں بھی ملوث تھا۔ ادھر لوگوں کو انکاؤنٹر کے مقام پر نہ جانے سے متعلق پولیس نے وہاں بینر چسپاں کئے جن پر لکھا کہ آگے خطرہ ہے۔کیونکہ اس مکان کے اس پاس بارود ہوسکتاہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Jun 29, 2021 01:58 PM IST