ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں کشمیر : کئی ہفتوں سے جاری لاک ڈاؤن کی وجہ سے آوارہ جانور بھوک سے بے حال ، اب جے ایم سی نے اٹھایا یہ بڑا قدم

Jammu and Kashmir News : گزشتہ چار ہفتوں سے جموں و کشمیر میں لاک ڈاون نافذ ہے ، جس کی وجہ سے آوارہ کتے یا مویشیوں کو خوراک کی سخت پریشانی لاحق ہوگئی ہے ۔ یہ مویشی لوگوں کے ضائع کئے ہوئے کھانے پر منحصر تھے ۔ جے ایم سی کے اس کام کی لوگ بڑھ چڑھ کر ستائش کر رہے ہیں ۔

  • Share this:
جموں کشمیر : کئی ہفتوں سے جاری لاک ڈاؤن کی وجہ سے آوارہ جانور بھوک سے بے حال ، اب جے ایم سی نے اٹھایا یہ بڑا قدم
جموں کشمیر : کئی ہفتوں سے جاری لاک ڈاؤن کی وجہ سے آوارہ جانور بھوک سے بے حال ، اب جے ایم سی نے اٹھایا یہ بڑا قدم

جموں : جموں کشمیر میں لگاتار پچھلے کئی ہفتوں سے لاک ڈاون بدستور جاری ہے ، جس کی وجہ سے عام زندگی متاثر ہوئی ہے ۔ وہیں دوسری جانب گلیوں بازاروں میں بھٹکنے والے آوارہ بے زبان جانور خوراک نہ ملنے کی وجہ سے مرنے کی کگار پر پہنچ گئے ہیں ۔ اسی کے پیش نظر جموں میونسپل کارپوریشن (جے ایم سی) کے کمشنر اونی لواسا کی ہدایت پر جے ایم سی کے میونسپل ویٹرنری آفیسر ڈاکٹر سشیل کمار شرما نے روزانہ کی بنیاد پر جموں شہر کے آس پاس میں آوارہ جانوروں ، کتوں اور مویشیوں کو کھانا کھلانے کا کام شروع کیا ہے ۔


کووڈ 19 وبائی امراض کی وجہ سے موجودہ حالات کے پیش نظر لاک ڈاؤن کی وجہ سے تمام ریستوران ، کھانے پینے اور دیگر اسٹریٹ فوڈ پوائنٹس بند ہیں ، جس کی وجہ سے بہت سارے ایسے آوارہ کتے اور پرندے ، جو اپنی روز مرہ کی خوراک کی ضروریات کیلئے ان دکانوں پر انحصار کرتے تھے ، کھانے کے محتاج ہو گئے ہیں ۔ اسی کے پیش نظر جے ایم سی کے عہدیداروں نے ایسے جانوروں کو کھانا کھلانے کی مہم شروع کی ہے ۔


جے ایم سی اس بات کو یقینی بنا رہا ہے کہ کسی بھی آوارہ جانور یا پرندوں کو نہ چھوڑا جائے ۔ جے ایم سی گاڑیوں کے ذریعہ روزانہ ناروال منڈی سے ویجیٹیبل ویسٹ اٹھائے گی اور آوارہ مویشیوں کو مہیا کرائے گی جو کہ حدود میں آتے ہیں ۔  اس کے علاوہ آوارہ کتوں کو روزانہ کی بنیاد پر بسکٹ اور دیگر اشیائے مہیا کرایا جائے گا ۔ ساتھ ہی ساتھ  اس بات کو یقینی بنانے کیلئے کہ آوارہ جانوروں کی صحت پر بھی نظر رکھی جا رہی ہے ۔ جے ایم سی اپنی حدود میں میونسپل ویٹرنری افسر کی رہنمائی میں روزانہ صحت کی نگرانی کر رہا ہے ۔


قابلِ ذکر ہے گزشتہ چار ہفتوں سے جموں و کشمیر میں لاک ڈاون نافذ ہے ، جس کی وجہ سے آوارہ کتے یا مویشیوں کو خوراک کی سخت پریشانی لاحق ہوگئی ہے ۔ یہ مویشی لوگوں کے ضائع کئے ہوئے کھانے پر منحصر تھے ۔ جے ایم سی کے اس کام کی لوگ بڑھ چڑھ کر ستائش کر رہے ہیں ۔

جموں کے رہنے والے روہت نے بتایا بھوک ہر کسی کو لگتی ہے خواہ وہ انسان ہو یا جانور ہو ۔ ہمیں یہ سوچنا چاہئے کہ اتنے ہفتوں سے پورا جموں بند ہے اور جو جانور یہاں کے ہوٹل یا ریسٹورنٹ کے آس پاس کھانے کی تلاش میں بھٹکتے تھے آج وہ جانور کس طرح سے اپنی خوراک کا  انتظام کرتے ہوں گے ۔ معلوم نہیں کتنے ہی جانور بھوک سے مر گئے ہوں گے یا بھوک سے بے حال کہیں پڑے ہوں گے۔ اس بیچ جے ایم سی کا جانوروں کو کھانا کھلانے کا یہ قدم قابل تعریف ہے۔

وہیں جموں کے رہنے والے امتیاز نے کہا روزے اس لئے بھی رکھے جاتے ہیں ، تاکہ ہمیں دوسرے کی بھوک کا احساس ہو ۔ آج کے بعد میرے گھر سے جو بھی کھانا بچے گا ، اُس کو میں جے ایم سی کو دوں گا تاکہ وہ کسی بے زبان جانور کی پیٹ کی آگ کو بجھا سکے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: May 15, 2021 08:03 PM IST