ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

لاوے پورہ سرینگر: CRPF جوانوں پر ملیٹنٹنوں کے حملے میں سب انسپکٹر سمیت 2 اہلکار ہلاک، کئی زخمی

خبر ہے ملیٹنٹ ایک رائفل بھی اڑا لے گئے۔ تاہم اس کی تصدیق نہیں ہوئی ہے۔ سرینگر بارہمولہ نیشنل ہائی وے پراس طرح حملے ہونااس بات کا اشارہ کرتی ہے کہ وادی میں ملی ٹنسی ابھی بھی موجود ہیں۔جو سیکورٹی فورسز کے لیے ایک بڑاچلینج ہے۔

  • Share this:
لاوے پورہ سرینگر: CRPF جوانوں پر ملیٹنٹنوں کے حملے میں سب انسپکٹر سمیت 2 اہلکار ہلاک، کئی زخمی
CRPF جوانوں پر ملیٹنٹنوں کا حملہ

جموں۔کشمیر: لاوے پورہ سرینگر میں ملی ٹنٹنوں کاسی آر پی ایف پارٹی (Central Reserve Police Force (CRPF)) پر دن دھاڑے حملہ ،سب انسپکٹر سمیت دو اہلکار ہلاک ہو گئے ہیں۔ حملہ آور ملی ٹنٹنوں کو جلد کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔ سرینگر کے مضافات میں لاوئے پورہ کے مقام پر سرینگر بارہمولہ نیشنل ہائی وے پر ملی ٹنٹنوں نے سی آر پی ایف پارٹی کو نشانہ بنا کر حملہ کیا جس کے نتیجے میں سی آر پی ایف کے دو اہلکارشہید ہو گئے جبکہ دو شدید طور پر زخمی ہوگئے۔

حملے کے فورا بعد پورے علاقے میں تلاشی کارورائیاں عمل میں لائی گئی اورملی ٹنٹنوں کو ڈھونڈ نکالنے کیلئے تلاشی مہم تیزکردی گئی ہے ۔ڈی آئی جی سی آر پی ایف کشورپرشاد نیوز18اردو کوبتایا کہ لاوے پورہ میں ان کی پارٹی پٹرولنگ کررہی تھی اسی دوران ملی ٹنٹنوں نے یہ کارستانی انجام دی۔ انہوں نے بتایا کہ یہ ملی ٹنٹ یہ پیدل آئے ہیں حملہ کرنے کے بعد فرار ہوگئے۔


انہوں نے بتایا کہ فرار ہونے کے تھوڑی دوری پر ان ملی ٹنٹنوں نے گاڑی کا استعمال بھی کیا ہوگا۔ڈی آئی جی نےمزید بتایا کہ حملے میں ملوث ملی ٹنٹنوں کو جلد ہی کیفر کردار تک پہنچایا جائے گا۔ لاوئے پورہ علاقے میں جب یہ واردات ہوئی اس وقت وہاں سنسنی کا ماحول پھیل گیا۔سرینگر بارہمولہ نیشنل ہائی وے پر اس دوران ٹریفک میں بھی خلل پڑا۔ ادھرزخمی سی آر پی ایف اہلکاروں کو علاج ومعالجہ کی غرض سے اسپتال میں داخل کیاگیا۔


خبر ہے ملیٹنٹ ایک رائفل بھی اڑا لے گئے۔ تاہم اس کی تصدیق نہیں ہوئی ہے۔ سرینگر بارہمولہ نیشنل ہائی وے پراس طرح حملے ہونااس بات کا اشارہ کرتی ہے کہ وادی میں ملی ٹنسی ابھی بھی موجود ہیں۔جو سیکورٹی فورسز کے لیے ایک بڑاچلینج ہے۔
Published by: Sana Naeem
First published: Mar 25, 2021 08:45 PM IST