ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں کشمیر میں  مئی کا مہینہ رہا سب سے زیادہ جان لیوا لیکن جاتے جاتے دے گیا کووڈ معاملات میں راحت

جموں کشمیر میں مئی کے مہینے میں کووڈ سے 1624 اموات ہوئیں اور 1 لاکھ 14ہزار سے زیادہ نئے کووڈ معاملے درج کئے گئے لیکن  مہینے کے آخری دن کووڈ کیسوں میں بڑی کمی دیکھنے کو ملی۔

  • Share this:
جموں کشمیر میں  مئی کا مہینہ رہا سب سے زیادہ جان لیوا لیکن جاتے جاتے دے گیا کووڈ معاملات میں راحت
COVID-19

جموں کشمیر میں کووڈ معاملات اور اموات کے معاملے میں مئی 2021 کا مہینہ سب سے زیادہ جان لیوا ثابت ہوا۔ اس مہینے میں یہاں کُل 1624 اموات کووڈ 19کی وجہ سے ہوئیں۔ ان اموات میں سے سب سےزیادہ 1019جموں صوبے میں ہوئیں اور 605 کشمیر صوبے میں۔ گورنمنٹ میڈیکل کالج جموں تو جیسے اموات کا مرکز ہی بن گیا تھا۔ جموں میں تقریبن 60فیصد اموات یہیں پر واقع ہوئیں۔ اس دوران 1 لاکھ 14ہزار تین سو بیاسی نئے کووڈ معاملے درج کئے گئے یعنی روزانہ نئے معاملوں کی اوسط تین ہزار آٹھ سو سے زیادہ رہی ہے۔

اس تشویش کُن صورتحال کے بیچ ایک اچھی خبر یہ رہی کہ 31 مئی کو 42 دن کے بعد سب سے کم نئے کووڈ معاملے درج کئے گئے۔ اس دن کُل 1525اور 37اموات درج کی گئیں جو اپریل 19 کے بعد چوبیس گھنٹے میں ابھی تک کے سب سے کم کیس ہیں۔ سرینگر اور جموں صوبے میں مئی کے ابتدائی ایام میں سب سے زیادہ معاملے درج کئے گئے تھے جو اب کافی کم ہوگئے ہیں۔ ماہرین کا کہنا ہئے کہ۔کووڈ معاملوں میں کمی لاک ڈاون کی وجہ سے ہوئی ہئے۔ معروف ماہر امراض سینہ نوید نذیر کا کہنا ہے کہ لاک ڈاون کی وجہ سے انفیکشین کافی حد تک قابو میں آیا ہئے لیکن ان کا کہنا ہے کہ لاک ڈاون کوئی مستقل حل نہیں ہے۔ ماہرین کے مطابق کووڈ مخالف ٹیکہ کاری اور قواعد وضوابط پر مکمل عمل آوری سے ہی کووڈ پھیلانے والے وائرس کو قابو میں کیا جاسکتا ہے۔


جموں کشمیر کو حالانکہ ملک کے باقی علاقوں سے زیادہ کووڈ ویکسین ملے لیکن اس کی تقسیم صحیح طریقہ سے نہیں ہوئی جسکے چلتے سرینگر میں 45سال سے زاید عمر کے زمرے میں ابھی تک 44.49 فیصد افراد ہی ٹیکہ لے سکے۔ جموں ،گاندربل اور شوپیاں اضلاع میں اس زمرےمیں سو فیصد ٹیکہ کاری ہوئی ہیے۔ کل سے جموں کشمیر میں جزوی طور کاروبار اور ٹرانسپورٹ بحال کردیا گیا ہئے لیکن ضلع انتظامیہ کو قواعد وضوابط پر سختی سے عمل کروانے کی تلقین کی گئی ہے۔

Published by: Sana Naeem
First published: Jun 02, 2021 04:18 PM IST