உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں وکشمیر: کولگام انکاونٹر میں لشکر طیبہ سے وابستہ پاکستانی دہشت گرد سمیت دو ہلاک

    جموں وکشمیر: جنوبی کشمیر کے دیوسرکولگام میں انکاونٹر

    جموں وکشمیر: جنوبی کشمیر کے دیوسرکولگام میں انکاونٹر

    کولگام میں دہشت گردوں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان ہوئے ایک طویل تصادم میں لشکر طیبہ سے وابستہ ایک پاکستانی سمیت دو دہشت گرد مارے گئے جبکہ ان کے قبضے سے بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود ضبط کیا گیا ہے۔

    • Share this:
    کولگام: کولگام میں دہشت گردوں اور سیکورٹی فورسز کے درمیان ہوئے ایک طویل تصادم میں لشکر طیبہ سے وابستہ ایک پاکستانی سمیت دو دہشت گرد مارے گئے جبکہ ان کے قبضے سے بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود ضبط کیا گیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق سیکورٹی فورسز کو علاقے میں دہشت گردوں کے چھپے ہونے کی اطلاع ملی اور یہاں ایک انکاونٹر شروع ہوا جو کہ دیر گئے اختتام پذیر ہوا۔

    اس انکاونٹر میں لشکر طیبہ کا حیدر نامی پاکستانی دہشت گرد ہلاک ہوا جبکہ ایک شہباز شاہ نامی مقامی دہشت گرد بھی مارا گیا۔ پولیس نے ٹوئٹ کرتے ہوئے بتایا کہ حیدر گزشتہ دو  سالوں سے شمالی کشمیر میں کافی سرگرم تھا اور بانڈی پورہ میں پولیس اہلکاروں کی ہلاکت اور دیگر حملوں میں ملوث تھا اور تب سے نہایت ہی مطلوب تھا۔





    یہ بھی پڑھیں۔

    جموں وکشمیر: پلوامہ میں دہشت گردوں کے خلاف پوسٹر چسپاں پائے گئے

    حیدر نامی دہشت گرد نے گذشتہ سال ١٠ نومبر کو پولیس اہلکاروں پر حملہ کیا اور اسی طرح ١١ فروری کو بھی سیکورٹی فورسز پر حملہ کیا جبکہ شہباز شاہ بھی حالیہ دنوں اقلیتی فرقہ سے تعلق رکھنے والے ستیش کمار ساکنہ کاکرن کولگام کے قتل میں ملوث تھا۔

    پولیس ان دونوں کی ہلاکتوں کو اہم کامیابی سے تعبیر کر رہی ہے۔ کولگام پولیس، فوج اور سی آر پی ایف سمیت دیگر سیکورٹی فورسز نے اس آپریشن کو انجام دیا۔ واضح رہے کہ اس سے قبل بھی ضلع کولگام میں سیکورٹی فورسز نے آپریشنز میں غیر ملکی دہشت گردوں کو ہلاک کیا۔
    Published by:Nisar Ahmad
    First published: