உங்கள் மாவட்டத்தைத் தேர்வுசெய்க

    جموں کشمیر کے دو اضلاع میں انکاؤنٹر، اننت ناگ میں لشکر طیبہ کا کمانڈر نثار ڈار ماراگیا، کولگام میں پاکستانی دہشت گرد کے چھپے ہونے کا شبہ

    Youtube Video

    Lashkar-e-Taiba commander killed in Anantnag: پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کر دیا۔ اسی دوران دوسری طرف سے فائرنگ شروع ہو گئی۔ سیکیورٹی فورسز نے جوابی فائرنگ کرکے دہشت گرد کو ہلاک کردیا۔ خبر رساں ایجنسی اے این آئی کے مطابق دہشت گرد کا نام نثار ڈار تھا۔

    • Share this:
      سری نگر۔ جموں و کشمیر کے دو اضلاع اننت ناگ اور کولگام میں دہشت گردوں کی موجودگی کی اطلاع پر سکیورٹی فورسز نے سنیچر کی صبح تلاشی آپریشن شروع کیا۔ اس دوران انکاؤنٹر میں دہشت گرد تنظیم لشکر طیبہ کا ایک کمانڈر مارا گیا۔ اس کا نام نثار ڈار بتایا گیا ہے۔ سکیورٹی فورسز کو یہ کامیابی اننت ناگ انکاؤنٹر میں ملی۔ بڑے دہشت گردوں کی موجودگی کے پیش نظر اننت ناگ کے کئی علاقوں میں احتیاط کے طور پر انٹرنیٹ بند کر دیا گیا تھا۔ جیش محمد کے دہشت گردوں کے کولگام میں چھپے ہونے کا شبہ ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ تفتیش کا کام جاری ہے۔

      وہیں چک صمد دمحال ہانجی پورہ کولگام میں آج صبح دہشت گردوں اور سکیورٹی فورسز کے درمیان جھڑپ ہوئی جس میں ابھی تک لشکر طیبہ سے وابستہ ایک دہشت گرد کے ہلاک ہونے کی تصدیق ہوئی ہے۔ اطلاعات کے مطابق سکیورٹی فورسز کو آج صبح علاقے میں دہشت گردوں کے چھپے ہونے کی اطلاع موصول ہوئی تھی جس کے بعد کولگام پولیس ، فوج ، سی آر پی ایف نے علاقے کا محاصرہ کیا اس دوران یہاں چھپے ملی ٹینٹوں نے سکیورٹی فورسز پر فائرنگ کی جس دوران انکاؤنٹر شروع ہوا۔ پولیس نے اپنے ٹویٹ میں کہا ہے کہ ابھی تک آپریشن میں لشکر طیبہ سے وابستہ ایک دہشت گرد کو ہلاک کر دیا گیا ہے جبکہ آپریشن جاری ہے۔ سکیورٹی فورسز نے پورے علاقے کو اپنی تحویل میں لیا ہے۔ اس دوران ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ فوج کے دو جوان بھی جھڑپ میں زخمی ہوئے ہیں جنہیں اسپتال میں داخل کرایا گیا یے۔

      اننت ناگ کے سرہامہ علاقے میں گشت کے دوران پولیس اور سیکورٹی فورسز کی ایک مشترکہ ٹیم کو دہشت گرد کی موجودگی کی اطلاع ملی۔ پولیس نے علاقے کو گھیرے میں لے کر سرچ آپریشن شروع کر دیا۔ اسی دوران دوسری طرف سے فائرنگ شروع ہو گئی۔ سیکیورٹی فورسز نے جوابی فائرنگ کرکے دہشت گرد کو ہلاک کردیا۔ خبر رساں ایجنسی اے این آئی کے مطابق دہشت گرد کا نام نثار ڈار تھا۔ وہ لشکر طیبہ کا کمانڈر تھا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق کشمیر کے آئی جی وجے کمار نے بتایا کہ ہلاک ہونے والا لشکر کمانڈر نثار قتل سمیت کئی مقدمات میں مطلوب تھا۔ وہ مئی 2021 سے علاقے میں سرگرم تھا۔

       یہ بھی پڑھیں: وادی میں کچھ عناصر اب بھی موجود، جو نہیں چاہتے کشمیری پنڈتوں کی واپسی، Kashmiri Migrants ایسے حملوں نہیں ڈرنے والے

      Published by:Sana Naeem
      First published: