ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

گلمرگ میں عدالت کی ہدایت پر حکام کی کاروائی، غیرقانونی تعمیرات منہدم کی گئیں

ہوٹل ہل ٹاپ کو پہلے ہی حکام نے سرکاری اراضی پر غیر قانونی طور پر قبضہ جمانے کی پاداش میں سیل کردیا تھا۔ جس کے بعد نشاندہی کرکے غیرقانونی طور پر قبضے میں کی گئی اراضی اورکی گئی تعمیرات کو منہدم کیا گیا۔

  • Share this:
گلمرگ میں عدالت کی ہدایت پر حکام کی کاروائی، غیرقانونی تعمیرات منہدم کی گئیں
گلمرگ میں عدالت کی ہدایت پر حکام کی کاروائی، غیرقانونی تعمیرات منہدم کی گئیں

سیاحتی مقام گلمرگ میں عدالت کی ہدایت پر حکام نے غیر قانونی تعمیرات کو منہدم کر دیا۔ ساتھ ہی یہاں غیرقانونی طور پر قبضہ کئےگئے سرکاری اراضی کو بھی بازیاب کرنے پہل شروع کردی گئی ہے۔ گلمرگ میں  عدالت کے احکامات کی خلاف ورزی کی پاداش میں ہوٹل ہل ٹاپ کی جانب سے کی گئیں تعمیرات کو منہدم کیا گیا۔یہ کاروائی ایس ڈی ایم گلمرگ شبیرالحسن کی نگرانی میں انجام دی گئی۔ ان کےہمراہ ایکزیکیٹو آفیسرمیونسپل کمیٹی ٹنگمرگ ،گلمرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی کے اے ای ای کے علاوہ دیگر افسران بھی موجود تھے۔


گلمرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی اورمیونسپل کمیٹی ٹنگمرگ گلمرگ کی ٹیم نے کاروائی کرتے ہوئے ہوٹل ہل ٹاپ کی جانب سے غیر قانونی طور پر قبضہ کی ہوئی اراضی کو بھی بازیاب کیا۔ ایس ڈی ایم نےکہا کہ گلمرگ میں جس کسی نے بھی عدالت کے احکامات کی خلاف ورزی کی ہے، اس کے خلاف قانونی کاروائی ہوگی۔ انہوں نے مزیدکہا کہ جو بھی اراضی قبضے میں لے لی گئی ہے عدالت کے حکم کے مطابق  اسے بازیاب کیا جائے گا۔ گلمرگ میں گزشتہ کئی مہینوں سے کورٹ کمشنر دورہ کرکے اس بات کاپتہ لگاتے تھے کہ کہاں کہاں غیر قانونی طورپر سرکاری اراضی کو لوگوں نے قبضے میں لے رکھا ہے۔ اس دوران بھی کئی مرتبہ غیرقانونی تعمیرات کو منہدم کیا گیا۔


ہوٹل ہل ٹاپ کو پہلے ہی حکام نے سرکاری اراضی پر غیر قانونی طور پر قبضہ جمانے کی پاداش میں سیل کردیا تھا۔ جس کے بعد نشاندہی کرکے غیرقانونی طور پر قبضے میں کی گئی اراضی اورکی گئی تعمیرات کو منہدم کیا گیا۔گلمرگ میں رینوویشن کے لیے سرکار کی قائم کردہ بوکاکمیٹی کی جانب سے ہوٹلوں کو اجازت نامہ دیاجاتا تھاجس کا ناجائز فائدہ اٹھاکر ہوٹلئیر غیر قانونی طورپر سرکاری اراضی پر قبضہ جماتے تھے۔ جس کا پتہ آج تک حکام کو نہیں چلا اس میں یہ ضرور ہے کہ وقت پرکاروائی نہ ہونا آپسی تال میل کو ثابت کرتا ہے۔ اسی لئے شاید آج تک اس طرح کی کاروائی نہ ہوسکی۔


 
Published by: Nadeem Ahmad
First published: Nov 15, 2020 08:36 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading