ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

محبوبہ مفتی کے بیان سے بھڑکے نوجوانوں نے پی ڈی پی دفتر پر بولا دھاوا ، ترنگا لہرانے کی کوشش

Protesters Try to Hoist National Flag PDP Office: سینکڑوں کی تعداد میں پہنچے نوجوانوں نے محبوبہ مفتی کے خلاف نعرے بازی کی اور وندے ماترم کا نعرہ لگایا ۔ نوجوانوں نے جب پی ڈی پی دفتر پر ترنگا لہرانے کی کوشش کی تو کثیر تعداد میں تعینات پولیس اہلکاروں نے انہیں روک دیا ۔ وہاں پر کافی دیر تک پی ڈی پی لیڈروں اور نوجوانوں کے درمیان بحث بھی ہوتی رہی ۔

  • Share this:
محبوبہ مفتی کے بیان سے بھڑکے نوجوانوں نے پی ڈی پی دفتر پر بولا دھاوا ، ترنگا لہرانے کی کوشش
محبوبہ مفتی کے بیان سے بھڑکے نوجوانوں نے پی ڈی پی دفتر پر بولا دھاوا ، ترنگا لہرانے کی کوشش ۔ (AP)

پی ڈی پی سربراہ محبوبہ مفتی کے ترنگا نہ تھامنے کے بیان پر اب سیاسی حملہ تیز ہوگیا ہے ۔ محبوبہ مفتی کے خلاف جموں و کشمیر میں مسلسل احتجاج ہورہے ہیں ۔ محبوبہ مفتی کے خلاف احتجاج کرنے کیلئے اتوار کو بھی کثیر تعداد میں نوجوان پی ڈی پی دفتر پہنچ گئے اور ان کے دفتر پر ترنگا لہرانے کی کوشش کی ۔ حالانکہ پولیس نے انہیں روک دیا ۔ سینکڑوں کی تعداد میں پہنچے نوجوانوں نے محبوبہ مفتی کے خلاف نعرے بازی کی اور وندے ماترم کا نعرہ لگایا ۔ نوجوانوں نے جب پی ڈی پی دفتر پر ترنگا لہرانے کی کوشش کی تو کثیر تعداد میں تعینات پولیس اہلکاروں نے انہیں روک دیا ۔ وہاں پر کافی دیر تک پی ڈی پی لیڈروں اور نوجوانوں کے درمیان بحث بھی ہوتی رہی ۔


پی ڈی پی مخالف نعرے بازی کے درمیان نوجوانوں کی قیادت کررہے امن دیپ سنگھ نے کہا کہ ترنگے کی بے حرمتی برداشت نہیں کریں گے ۔ امن دیپ سنگھ کی قیادت میں نوجوان دو پہیہ گاڑیوں پر آئے اور پی ڈی پی دفتر پر ترنگا لہرانے کی کوشش کی ۔ حالانکہ پی ڈی پی دفتر میں تعینات پولیس اہلکاروں نے انہیں روک دیا ۔


پولیس افسران نے لا اینڈ آرڈر کا حوالہ دے کر پرامن طریقہ سے نوجوانوں کو منتشر کرکے انہیں واپس بھیج دیا ۔ امن دیپ نے میڈیا سے بات چیت میں کہا کہ ہمارا کسی دائیں بازو کی پارٹی سے کوئی تعلق نہیں ہے ، ہم راشٹروادی ہیں اور ترنگے کیلئے کسی بھی بے حرمتی کو برداشت نہیں کریں گے ۔


امن دیپ نے کہا کہ پی ڈی پی دفتر کے صدر دروازہ کے پاس کی چہاردیواری پر ہفتہ کو قومی جھنڈا لہرایا تھا اور اس دوران ان کی پی ڈی پی کے دو سینئر لیڈروں سے بحث بھی ہوگئی تھی ۔ اس دوران امن دیپ نے کہا تھا کہ وہ اتوار کو پھر لوٹیں گے اور کثیر تعداد میں نوجوانوں کے ساتھ پی ڈی پی دفتر پر قومی پرچم لہرائیں گے ۔

خیال رہے کہ پی ڈی پی سربراہ محبوبہ مفتی نے جمعہ کو کہا تھا کہ جب تک جموں و کشمیر کو لے کر گزشتہ سال پانچ اگست کو آئین میں کی گئی تبدیلیوں کو واپس نہیں لیا جاتا ہے ، اس وقت انہیں الیکشن لڑنے اور ترنگا تھامنے میں کوئی دلچسپی نہیں ہے ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Oct 25, 2020 05:51 PM IST