ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں کشمیر پردیش کانگریس کو لگا ایک اور جھٹکا، میونسپل کونسل اننت ناگ کے صدر اورکانگریس کے دیگر 18 کونسلر ہوئے جے کے اپنی پارٹی میں شامل

جموں وکشمیر کانگریس کو اس وقت ایک بڑا جھٹکا لگا جب میونسپل کونسل اننت ناگ کے 18کانگریس کونسلروں سمیت 23 کونسلروں نے جموں کشمیر اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کرلی۔

  • Share this:
جموں کشمیر پردیش کانگریس کو لگا ایک اور جھٹکا، میونسپل کونسل اننت ناگ کے صدر اورکانگریس کے دیگر 18 کونسلر ہوئے جے کے اپنی پارٹی میں شامل
میونسپل کونسل اننت ناگ کے صدر اورکانگریس کے دیگر 18 کونسلر ہوئے جے کے اپنی پارٹی میں شامل

جموں کشمیر: جموں وکشمیر کانگریس کو اس وقت ایک بڑا جھٹکا لگا، جب میونسپل کونسل اننت ناگ کے 18 کانگریس کونسلروں سمیت 23 کونسلروں نے جموں کشمیر اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کرلی۔ جبکہ کانگریس کے سابق جنرل سکریٹری اور میونسپل کونسل اننت ناگ کے صدر ہلال احمد شاہ نے بھی جموں کشمیر اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کرلی۔ اس سلسلے میں سری نگر میں پارٹی کے بانی اور صدر سید الطاف بخاری اور پارٹی سینئر لیڈران رفیع احمد میر اور عبدالرحیم راتھر کی موجودگی میں ایک سادہ تقریب بھی منعقد ہوئی تھی۔


دوسری جانب جموں وکشمیر کانگریس کے صدر غلام احمد میر نے میونسپل کونسل اننت ناگ کے مختلف کونسلرز کےذریعہ جے کے اپنی پارٹی میں شمولیت پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئےکونسل کے صدر ہلال احمد شاہ اور دیگر کونسلروں کے استعفیٰ کا مطالبہ کیا ہے۔ غلام احمد میرکے مطابق ان کونسلروں اور صدر کو انڈین نیشنل کانگریس کی علامت پر منتخب کیا گیا ہے، اس لئے انہیں اخلاقی بنیادوں پر استعفیٰ دینا چاہئے۔ جے کے پی سی سی کے ترجمان نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ کونسل کے صدر ہلال احمد شاہ اور دیگر کونسلروں نے استعفیٰ دیئے بغیر ہی دوسری پارٹی میں شمولیت اختیار کرلی۔ کیونکہ یہ کونسلر کانگریس ٹکٹ پر منتخب ہوئے تھے اور اخلاقی بنیادوں پر انہیں اب استعفیٰ پیش کرنا چاہئے۔


پی سی سی کے ترجمان نے کہا کہ ہلال احمد شاہ اور دیگرکونسلروں نے غیر اخلاقی طریقہ اپنایا ہے جبکہ کچھ ماہ پرانی جموں کشمیر اپنی پارٹی کے عزائم سے یہاں کے عوام بخوبی واقف ہیں۔ یہ انتہائی بدقسمتی کی بات ہے کہ کچھ مہینوں کی پرانی پارٹی کو حقیقت میں لوگوں کی حمایت حاصل نہیں ہے۔ ترجمان کے مطابق جموں کشمیر اپنی پارٹی ہارس ٹریڈنگ کے ذریعے یہاں کے سیاستدانوں کو اپنے ساتھ ملا رہی ہے اور آنے والے وقت میں اس پارٹی کو اس کا خمیازہ عنقریب ہی بھگتنا پڑے گا۔ ادھر میونسپل کونسل اننت ناگ کے صدر ہلال احمد شاہ کانگریس چھوڑنے اور اپنی پارٹی میں شامل ہونے کا بھر پور دفاع کرتے نظر آ رہے ہیں۔ نیوز 18 سے بات کرتے ہوئے ہلال احمد شاہ نے کہا کہ جموں کشمیر میں سیاسی خلاء کو پُر کرنے کے لئے اپنی پارٹی ایک مناسب سیاسی پلیٹ فارم ہے۔


شاہ کا کہنا ہے کہ انہوں نے کونسل کے 23 ممبران کے ساتھ حتمی مشاورت اور سوچ سمجھ کے بعد ہی جموں کشمیر اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کرنے کا فیصلہ لیا ہے۔ کیونکہ انہیں اور دیگر کونسلروں کو امید ہے کہ لوگوں کے روز مرہ و دیرینہ مسائل کو حل کرنے کی اشد ضرورت ہے اور لوگوں کی آواز کو ایوان بالا تک پہنچانے کے لئے ایک مضبوط سیاسی پلیٹ فارم کی ضرورت ہے جوکہ اس وقت جموں کشمیر اپنی پارٹی کے پاس موجود ہے۔ ہلال شاہ نے مزید کہا کہ انہیں پارٹی لیڈر سید الطاف بخاری پر پورا اعتماد ہے کہ وہ یہاں کے لوگوں کی آوازکو عملی طور پربلند کرسکتے ہیں اور عوام کو درپیش مسائل و مشکلات کا ازالہ ممکن بنانےکی خاطر وہ اپنی انتھک کوششوں کے ساتھ آگے بڑھ رہے ہیں اور یہی وجہ ہےکہ تمام کونسلروں نے ان کے زمانہ بشانہ چلنے کا فیصلہ لیا ہے جو کہ عوامی مفادات کے عین مطابق ہے۔
Published by: Nisar Ahmad
First published: Mar 07, 2021 11:52 PM IST