ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

جموں و کشمیر میں عدالتوں میں جسٹس ڈیلیوری سسٹم کو مزید فعال بنانے کی ضرورت : جسٹس علی محمد ماگرے

Jammu and Kashmir News : جسٹس ماگرے نے کہا کہ نہ صرف جموں و کشمیر بلکہ لداخ میں نئے کورٹ کمپلیکسز کی تعمیر و عدالتوں میں قائم بنیادی ڈھانچے کو مضبوط بنانے کے لئے اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں ۔ تاکہ جسٹس ڈیلیوری سسٹم کو مزید فعال بنایا جا سکے۔

  • Share this:
جموں و کشمیر میں عدالتوں میں جسٹس ڈیلیوری سسٹم کو مزید فعال بنانے کی ضرورت : جسٹس علی محمد ماگرے
جموں و کشمیر میں عدالتوں میں جسٹس ڈیلیوری سسٹم کو مزید فعال بنانے کی ضرورت : جسٹس علی محمد ماگرے

جموں و کشمیر: جموں و کشمیر ہائی کورٹ کے جج جسٹس علی محمد ماگرے نے کہا ہے کہ عدالتوں میں قائم بنیادی ڈھانچے کو مزید مستحکم و مضبوط بنانے کے لیے کوششیں جاری ہیں ۔ تاکہ عوام کو جلد انصاف کی فراہمی ممکن بن سکے ۔ پہلگام میں ایڈیشنل اسپیشل موبائل مجسٹریٹ کہ عدالت کا سنگ بنیاد ڈالنے کے بعد جسٹس ماگرے نے ان باتوں کا اظہار کیا ۔ ان کے ہمراہ اننت ناگ کے پرنسپل ڈسٹرکٹ سیشن جج نصیر احمد ڈار و دیگر متعلقین بھی تھے ۔ جسٹس علی محمد ماگرے نے کہا کہ عدالتوں میں جج صاحبان کی کوشش ہوتی ہے کہ لوگوں کو جلد انصاف ملے ، جس کے لیے جسٹس ڈیلیوری سسٹم کو مزید مستحکم و مضبوط بنانے کی اشد ضرورت ہے ۔ لیکن بعض اوقات عدالتوں میں قائم کمزور بنیادی ڈھانچے کی وجہ سے اس طرح کے کاموں میں متعلقین کو کافی دشواریوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔


جسٹس ماگرے نے کہا کہ نہ صرف جموں و کشمیر بلکہ لداخ میں نئے کورٹ کمپلیکسز کی تعمیر و عدالتوں میں قائم بنیادی ڈھانچے کو مضبوط بنانے کے لئے اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں ۔ تاکہ جسٹس ڈیلیوری سسٹم کو مزید فعال بنایا جا سکے۔ انہوں نے کہا کہ عدالتوں میں بعض اوقات ججوں اور وکلاء و دیگر متعلقین کو جسٹس ڈیلیوری سسٹم کے تعلق سے کافی دشواریاں پیش آتی ہیں ، لیکن اس کے باوجود بھی لوگوں کو ہر صورت جلد انصاف فراہم کرنے کی پہل کی جاتی ہے ۔ جبکہ کئی علاقوں میں کورٹ کمپلیکسز کی عدم موجودگی کی وجہ سے تمام متعلقین اور عوام کو بھی پریشانی ہوتی ہے ۔ جس کو مدنظر رکھتے ہوئے اب ان مسائل کا ازالہ ممکن بنانے کے لیے کوششیں کی جا رہی ہیں ۔


جسٹس ماگرے نے کہا کہ عدالتوں میں کیسوں کے جلد نپٹارے اور افہام و تفہیم کے ذریعہ معاملات کو حل کرنے کی غرض سے جموں و کشمیر اور لداخ میں 10 جولائی کو خصوصی لوک عدالتوں کا قیام عمل میں لایا جا رہا ہے ، جس کا مقصد صرف اور صرف لوگوں کو ہنگامی بنیادوں پر انصاف فراہم کرنا ہے ۔


اس موقع پر پرنسپل ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنز جج اننت ناگ نصیر احمد ڈار نے کہا کہ پہلگام میں اسپیشل موبائل مجسٹریٹ کورٹ کے قیام سے عوام کو ضرور ایک راحت نصیب ہوگی ۔ کیونکہ یہ پہلگام کے لوگوں کی ایک دیرینہ مانگ تھی ۔ انہوں نے کہا کہ اس عدالت کے قیام سے یقینی طور پر جسٹس ڈیلیوری سسٹم میں مزید بہتری آئے گی اور لوگوں کیلئے جلد سے جلد انصاف کی رسائی حاصل ہوگی ۔
Published by: Imtiyaz Saqibe
First published: Jul 03, 2021 08:57 PM IST