ہوم » نیوز » جموں وکشمیر

سیاحتی مقام گلمرگ میں رشی کپور نے بابی فلم کی چھوڑیں یادگاریں، رشی کپور کی یادیں آج بھی کشمیریوں کے دلوں میں تازہ

گلمرگ کی قدرتی خوبصورتی دیکھنے کے لئے دنیا بھر سے سیاح آتے ہیں۔ گلمرگ پہنچ کر جب یہاں کی تاریخ پر بات ہوتی ہے تو بالی وڈ کی فلموں کا ذکر ضرور ہوتا ہے جن میں رشی کپور کی فلم بابی ہے۔

  • Share this:
سیاحتی مقام گلمرگ میں رشی کپور نے بابی فلم کی چھوڑیں یادگاریں، رشی کپور کی یادیں آج بھی کشمیریوں کے دلوں میں تازہ
رشی کپور گلمرگ میں: فائل فوٹو

گلمرگ۔ بالی ووڈ اداکار رشی کپور  نے سیاحتی مقام  گلمرگ  میں 1973میں اپنے والد راج کپور  کے بینر میں فلم "بابی "میں بطور ہیرو کام کیا۔ ان کے ساتھ  بطور ہیروئن ڈمپل کپاڈیا تھیں ۔ رشی کپور کی یادیں آج بھی کشمیریوں کے دلوں میں  تازہ ہیں ۔گلمرگ میں قائم ہوٹل ہائی لینڈ پارک کے اندر موجود ہٹ میں  فلم بابی کی شوٹنگ ہوئی تھی۔ اس ہٹ کو بابی ہٹ کا ہی نام دے دیا گیا تھا ۔ مقامی لوگ جنہوں نے اس زمانے میں رشی کپور کو بہت ہی قریب سے دیکھا تھا کہتے ہیں کہ رشی کپور  ایک اچھے ، مخلص  اور ہنس مکھ  انسان تھے ۔


گلمرگ کی قدرتی خوبصورتی دیکھنے کے لئے دنیا بھر سے سیاح آتے ہیں۔ گلمرگ پہنچ کر جب یہاں کی تاریخ پر بات ہوتی ہے تو بالی وڈ کی فلموں کا ذکر ضرور ہوتا ہے جن میں رشی کپور کی فلم بابی ہے۔جس جگہ پر یہ فلم بنی ہے اس جگہ پر خاص طور پر ہندوستانی سیاح اسے  ضرور دیکھنے آتے ہیں اور خوب فوٹو گرافی کرتے ہیں ، یہاں تک کہ بابی ہٹ میں کچھ شوقین لوگ رہنے کو  بھی ترجیح  دیتے ہیں ۔ اس زمانے میں بہت سے کشمیری لوگوں نے رشی کپورکو بہت ہی قریب سے دیکھا ہے۔ ان میں مشہور ماہر تعلیم و شعبہ سیاست کے پروفیسر  عبدالجبار بھی ہیں۔


گلمرگ کی قدرتی خوبصورتی دیکھنے کے لئے دنیا بھر سے سیاح آتے ہیں۔


پروفیسر عبدالجبار نے نیوز 18 اردو کو بتایا جب گلمرگ کی حسین وادیوں میں  رشی کپور نے بابی فلم کی شوٹنگ کی تو  وہ زمانہ بڑ ا شاندار تھا۔ انہوں نے بتایا  کہ رشی کپور  نے  اس فلم میں جو گانا گایا "ہم تم اک کمرے میں بند ہو اور چابی کھو جائے " کافی مشہور ہو گیا اور اس زمانے میں گلمرگ میں ہر ایک  کی نوک زبان پر وہ گانا ہوتا تھا ۔گلمرگ سے جانے کے بعد کشمیری اسی گانے سے رشی کپور کو آج بھی یاد کرتے  ہیں ۔

پروفیسر نے بتایا کہ  گلمرگ کی قدرتی خوبصورتی سے رشی کپور کافی متاثر تھے ۔ ان کاخاندان ہر وقت گلمرگ آتا تھا ۔پروفیسر عبدالجبار نے مزید بتایا  کہ رشی کپور نے سرینگر کے امر سنگھ کالج میں بھی امیتابھ بچن کے ساتھ ایک فلم  بنائی تھی۔ اس زمانے میں وہ امر سنگھ کالج میں بطور پروفیسر تعینات تھے۔ اس وقت بہت قریب سے ان کی ملاقات رشی کپور اور امیتابھ بچن سے ہوئی تھی۔ رشی کپور کو  مختلف زبانوں جن میں انگریزی اور اردو شامل ہیں پر کافی  عبور حاصل تھا۔ پروفیسر عبدالجبار کا مزید کہنا ہے کہ  کپور کے گھرانے نے فلمی دنیا کو بہت کچھ دیا ہے ۔فلمی دنیا کے جتنے بھی اداکاروں نے گلمرگ میں اپنی اداکاری دکھائی ان میں رشی کپور کی اداکاری جداگانہ ہے۔ رشی کپور کی موت پر ان کے چاہنے والے کشمیریوں نے بھی ان کو خراج عقیدت پیش کیا ہے۔

 
First published: May 01, 2020 10:30 AM IST
corona virus btn
corona virus btn
Loading